تازہ ترین

سانبہ میں ہندو پاک سرحد پر

جموں// (یو این آئی) بھارت اور پاکستان کے درمیان سال رواں کے ماہ فروری میں جنگ بندی معاہدے پر ہونے والے اتفاق یا عمل درآمد سے اگرچہ جموں و کشمیر کی سرحدوں پر امن کا ماحول سایہ فگن ہے لیکن ضلع سانبہ میں بین الاقوامی سرحد پر لگنے والے سالانہ بابا چملیال میلے کے انعقاد پر ابھی کوئی حتمی فیصلہ نہیں لیا گیا ہے ۔سال گذشتہ بھی کورونا کی وجہ سے اس سالانہ میلے ، جو بھارت اور پاکستان کے درمیان امن و آشتی کی علامت مانا جاتا ہے ، کا انعقاد نہیں ہوسکا اور محدود عقیدت مندوں نے ہی مزار پر حاضری دے کر چادر چڑھائی تھی۔مشہور صوفی سنت بابا دلیپ سنگھ منہاس معروف بہ بابا چملیال کا مزار ضلع سانبہ میں بین الاقوامی سرحد پر واقع ہے یہاں ہر سال ماہ جون کی آخری جمعرات کو ایک میلہ لگتا ہے جس میں ہزاروں کی تعداد میں عقیدت مند شرکت کرتے ہیں۔بی ایس ایف ذرائع نے یو این آئی کو بتایا کہ چملیال میلے کے انعقاد کے متعلق سر

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ

جموں //پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں مسلسل اضافے کو لیکر جموں کے تمام خطوں میں کانگریس لیڈران نے احتجاج کرتے ہوئے دھرنا دیا او ر مرکزی سرکار پر الزام عائد کیا کہ سرکار ایندھن کی قیمتوں میں کمی کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے ۔جموں میں علامتی احتجاج درج کرنے کے موقع پر جموں وکشمیر پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر غلام احمد میر نے میڈیا کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں پٹرول کی قیمت چالیس روپیے فی لیٹر ہونی چاہئے تھی جو آج سو روپیے فی لیٹر ہے ۔انہوں نے کہا کہ مہنگائی کے خلاف پارٹی ملک گیر علامتی احتجاج درج کررہی ہے تاکہ مودی سرکار جاگ سکے ۔ان کا کہنا تھا کہ ایک طرف لوگ کورونا وبا سے پریشان ہیں تو دوسری طرف مہنگائی نے ان کا جینا حرام کر دیا ہے ۔موصوف صدر نے کہا کہ ملک کے غریبوں سے پیسہ لوٹا جا رہا ہے لیکن ملک میں نہ ہسپتال بنائے جا رہے ہیں اور نہ ہی لوگوں کو آکسیجن اور ویکسین فراہم کئ

کشن ریڈی 13 جون کو تروپتی بالاجی مندر کا سنگ بنیاد رکھیں گے

جموں// مرکزی وزیر مملکت برائے امور داخلہ جی کشن ریڈی امکانی طور پر 13 جون کو جموں کا دورہ کریں گے اور یہاں سرکاری زمین پر بننے والے تروپتی بالاجی مندر کا سنگ بنیاد رکھیں گے ۔ذرائع نے بتایا کہ ریڈی جموں سری نگر قومی شاہراہ پر واقع سدھرا ٹائون میں تروپتی بالاجی مندر کا سنگ بنیاد رکھنے کے بعد واپس دہلی کے لیے روانہ ہوں گے ۔انہوں نے بتایا کہ مندر کی سنگ بنیاد کی تقریب میں لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا، انتظامیہ کے سینیئر عہدیدار، بی جے پی لیڈران اور دیگر معزز افراد شرکت کریں گے ۔ان کا مزید کہنا تھا’’اس مندر کے بننے سے جموں میں مذہبی سیاحت کو مزید فروغ ملے گا'۔واضح رہے کہ جموں و کشمیر حکومت نے رواں برس یکم اپریل کو مندر کی تعمیر کے لئے ترومالا تروپتی دیوستھانم (ٹی ٹی ڈی) کو 496 کنال اور17 مرلہ اراضی الاٹ کرنے کو منظوری دی۔ٹی ٹی ڈی اس اراضی پر پلگرم سہولیات کمپلیکس، ویدا پاٹ شالہ،

کلچرل اَکیڈیمی جموں کے زیر اہتمام فنکاروں کیلئے ٹیکہ کاری مہم

جموں//حکومت کی طرف سے شروع کی جانے والی ٹیکہ کاری مہم کے ایک حصے کے طور پر اَکیڈیمی آف آرٹ ، کلچر اینڈ لنگویجز نے اَکیڈیمی آف آرٹ ، کلچر اینڈ لنگویجز جموں میں ملازمین ، نوجوان فنکاروں ، ادباء اور دیگر وابستہ کارکنوں کے لئے ایک ٹیکہ کاری مہم کے کیمپ کا اِنعقاد کیا۔کلچر اکیڈیمی جموں کے  کے ایل سہگل ہا ل میں آج 18 برس عمر سے 44 برس کی عمر تک کے گروپ میں آنے والے 200نوجوان فنکاروں اور دوسرے فرنٹ لائن ورکروں کو کووِڈ حفاظتی ٹیکے لگائے گئے ۔ حفاظتی ٹیکہ کاری مہم کلچرل اکیڈیمی کے سیکرٹری راہل پانڈے کی ہدایت پر چلائی جارہی ہے۔جموں ضلع اور دنسال میں کام کرنے والے فنکاروں کو بھی ٹیکے لگائے گئے۔بیداری کیمپ اور دیگر ثقافتی سرگرمیوں کے لئے کام کرنے والے فنکاروں اور دیگر اَفراد کو مہم کے دوران ویکسین کی پہلی خوراک دی گئی۔وہ لوگ جو اِنسداد کووِڈ۔19 ویکسین کے ساتھ ٹیکے لیتے ہیں جن میں مصنفی

جموں میں 6.60 لاکھ افراد ، فرنٹ لائن کارکنوں کو ٹیکے لگائے گئے

جموں// ضلع جموں میں فرنٹ لائن ورکرز اور بزرگ افراد سمیت 6 لاکھ 60 ہزار سے زیادہ افراد کوکووڈ کے ٹیکے لگائے گئے ہیں۔ایک عہدیدار نے بتایا کہ محکمہ صحت نے دیہی اور شہری دونوں علاقوں میں جموں ضلع میں 45 سے زیادہ عمر اور 60 سال کی عمر والے اور فرنٹ لائن کارکنوں کو کوڈ 19 سے 6 لاکھ اور 60ہزار افراد کو اب تک کووڈ ویکسین کی خواراکیں دی ہیں۔ایک عہدیدار نے بتایا "یہ ویکسی نیشن جموں کے ضلع بھر میں کامیابی کے ساتھ چلائی جارہی ہے اور محکمہ صحت ، آنگن واڑی ورکر ، آشا کارکنوں ، پنچوں اور سرپنچوں کی شمولیت اور ہم آہنگی کے ساتھ یہ جارحانہ طور پر تمام بلاکس میں پنچایت کی سطح پر جارہی ہے"۔عہدیدار نے بتایا کہ 45 سال سے زیادہ عمر کے لوگوں کو خاص طور پر دیہی علاقوں میں اب بھی ویکسین دی جارہی ہے حالانکہ ضلع میں 100 فیصد ویکسی نیشن پہلے ہی مکمل ہوچکی ہے۔عہدیدار نے بتایا کہ شوپیان ، گاندربل اور جم

جے کے سیمنٹس لمیٹڈ کے ملازمیں 28 ماہ سے تنخواہ سے محروم، جموں میں احتجاج

 جموں، 10 جون (یو این آئی) جموں و کشمیر سیمنٹس لمیٹڈ ملازمین اپنے مطالبات خاص کر تنخواہوں کی واگذاری کو لے کر بر سر احتجاج ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ وہ گذشتہ 28 ماہ سے تنخواہوں سے محروم ہیں جس کی وجہ سے ان کے گھروں میں چولھا جلنا مشکل ہوگیا ہے۔احتجاج کے دوران جمعرات کو یہاں جموں وکشمیر کیجول لیبررس فرنٹ کے نمائندے تنویر حسین نے میڈیا کے ساتھ بات کرنے کے دوران کہا کہ یہ لوگ یہاں بارہ دنوں سے احتجاج کر رہے ہیں لیکن انتظامیہ کا کوئی بھی افسر ان کے پاس نہیں آیا۔انہوں نے کہا کہ جے کے سیمنٹس کے ملازمین گذشتہ 28 ماہ سے تنخواہوں سے محروم ہیں۔موصوف نے کہا کہ کورونا میں بھی تنخواہ نہ ملنے سے ان ملازموں کے گھر کیسے چلیں گے محکمہ اس کے بارے میں کوئی فکر نہیں کر رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ جے کے سیمنٹس اگر گھاٹے میں ہے تو صرف مخصوص ملازموں کو ہی باہر کا راستہ کیوں دکھایا گیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ حکومت

نیشنل کانفرنس جموں صوبے کا ورچیول اجلاس

سرینگر//نیشنل کانفرنس حدبندی کے خلاف نہیں ہے لیکن اس کیلئے جو طریقہ کاراپنایا جارہا ہے،وہ صحیح نہیں ہے۔ اس بات کااظہار نیشنل کانفرنس کے صدرڈاکٹر فاروق عبداللہ نے صوبہ جموں کے ارکین کے ایک ورچیول اجلاس کے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ نیشنل کانفرنس ہرصورت میں لوگوں کے مفادات کاتحفظ کرے گی اور ہم نے5اگست2019کے مرکزی حکومت کے فیصلوں کو عدالت عظمیٰ میں چیلینج کیا ہے اوراُمید ہے کہ وہاں آئین اور قانون کی بالادستی کو قائم رکھ کر جموں کشمیرکے عوام سے چھینے گئے جمہوری اور آئینی حقوق بحال کئے جائیں گے۔ ڈاکٹرفاروق عبداللہ نے کہا کہ مغل روڈ سرینگر اور جموں دونوں خطوں کے درمیان شہ رگ کی حیثیت رکھتی ہے اور جموں سرینگر شاہراہ پر بہت زیادہ دبائو اور اس کے آئے روزبند رہنے کی وجہ سے یہ ضروری بن گیا ہے کہ مغل شاہراہ پر ساراسال ٹریفک کی آمد ورفت کے بحال رکھنے کو یقینی بنانے کیلئے رکاوٹوں کو دورک

لوگ بجلی کا ناجائز استعمال کرنے سے گریز کریں:چیئرمین

جموں//جموں پاور ڈسٹری بیوشن کارپوریشن لمیٹڈ (جے پی ڈی سی ایل) نے صارفین سے اپیل کی کہ وہ بجلی کا مناسب استعمال کریں اور جب ضرورت نہ ہو تو اپنے گھروں ، دفاتر اور کاروباری مراکز میں تمام لائٹس ، گیجٹس ، آلات کو بند رکھیں۔مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین جے پی ڈی سی ایل جگ موہن شرما اور کارپوریشن کے منیجنگ ڈائریکٹر انجینئر گورمیت سنگھ نے لوگوں سے خصوصی طور پر شام 7 بجے سے رات 11 بجے کے دوران ، ایئرکنڈیشنر ، مائکروویو ، برقی کک ٹاپس وغیرہ جیسے بھاری بجلی آلات کا استعمال کم سے کم کرنے کی تاکید کی۔کارپوریشن اتھارٹیز نے مزید کہا کہ بجلی نظام کے بوجھ کو کم کرنے کے لئے ایک سے زیادہ اے سی یونٹوں کے استعمال سے گریز کریں ، علاوہ ازیں اپنے بلوں کو کم کریں اور بجلی کو جے پی ڈی سی ایل کے ساتھ معاہدے کی حد تک استعمال کریں۔انہوں نے لوگوں کو معاشرے کے بے ایمان عناصر کے ذریعہ بجلی چوری کے

مئی میں 16388 کوئنٹل مفت راشن تقسیم : ڈی سی کٹھوعہ

 کٹھوعہ// ڈپٹی کمشنر کٹھوعہ راہول یادو نے کہا کہ ضلعی انتظامیہ نے سرکاری امدادی سکیم کے تحت مئی کے مہینے میں 16ہزار388 کوئنٹل مفت راشن تقسیم کیا ہے جس سے پردھان منتری غریب کلیان یوجنا (پی ایم جی کے وائی) کے تحت ضلع کی 3.40 لاکھ افراد مستفید ہو ئے ہیں۔ڈپٹی کمشنر ڈی سی آفس کمپلیکس میں میڈیا بریفنگ دے رہے تھے۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی کوشش کے تحت ضلع کے 5800 رجسٹرڈ تعمیراتی کارکنوں کو مئی اور جون کے مہینے کے لئے امدادی طور پر ہر ایک کی 1000 روپے کی دو قسطیں موصول ہوئی ہیں تاکہ کوڈ کے اوقات میں مزدور طبقے کو مدد فراہم کی جاسکے۔راہول یادو نے انکشاف کیا کہ سکشام اسکیم کے تحت مالی امداد اور اسکالرشپ فراہم کرنے کے لئے 29 مستفید افراد کی شناخت کی گئی ہے جس کا مقصد کوڈ متاثرین کے وارڈوں میں مدد فراہم کرنا ہے۔ڈی سی نے کہا کہ مثبت شرح میں مسلسل کمی واقع ہورہی ہے اور یہ ضلع جموں وکشمیر کے تمام

سانبہ میں 45 ڈگری سینٹی گریڈ درجہ حرارت کے باوجود سیب کے باغات تیار

 جموں//جموں و کشمیر میں سیب کے باغات اب صرف وادی کشمیر تک ہی محدود نہیں بلکہ صوبہ جموں کی سرزمین پر بھی سخت ترین گرمی کے باوصف سیب کے باغ تیار ہونے لگے ہیں۔ صوبہ جموں کے ضلع سانبہ میں ایسے سیب کے باغ تیار ہیں جو 45 ڈگری سینٹی گریڈ سے زیادہ درجہ حرارت میں بھی  پھل  دے رہے ہیں۔ضلع سانبہ کے ایک گاؤں 'راجڈی'، جو جموں سے صرف 22 کلو میٹر دوری پر واقع ہے، میں ایسے سیب کے باغات تیار ہیں جن کے پھل بازاروں میں سستے داموں دستیاب ہیں۔ایک مالک باغ نے میڈیا کو بتایا کہ اس جگہ کے بغیر 45 ڈگری سینٹی گریڈ سے زیادہ درجہ حرارت میں سیب کے باغات اور کہیں نہیں ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہم نے یہاں چار ایسے باغات لگائے ہیں اور مزید باغ لگانے کا منصوبہ ہے۔ان کا کہنا تھا کہ میرے باغ میں پانچ سو پیڑ لگے ہیں جن سے دو ڈھائی سو کوئنٹل سیب نکلتے ہیں۔موصوف نے کہا کہ کشمیر میں سیب ماہ اکتوبر کے آس پ

ریاسی میں اغواکاری اور عصمت ریزی کا ملزم گرفتار

ریاسی// پولیس تھانہ ارناس کی ٹیم نے اغوا اور عصمت دری کے ملزم کو گرفتار کیا جو جنوری 2021 سے زیرزمین تھا۔ملزم غلام حسن ولد محمد حسین ساکن تھب تھانول تحصیل ٹھاکرکوٹ (ارناس) ریاسی، جو21 سال کی روبینہ (نام تبدیل) کے اغوا اور بار بار اس کے ساتھ دوسرے ساتھیوں کے ساتھ مل کردوران حراست میں عصمت ریزی کرنے کے فرد جرم ایف آئی آر نمبر 05/2021 مورخہ 14 جنوری 2021 زیر دفعہ 366 ، 376 آئی پی سی تھانہ ارناس کے سلسلے میں فراری تھا۔ ایک ملزم کو فوری طورگرفتار کرلیا گیا تھا جب ملزم غلام حسین نے زیر زمین جاکر تحقیقات سے انکار کیا تھا اور جنوری 2021 میں ایف آئی آر کے اندراج کے بعد سے اسے حراست میں نہیں لیا جاسکا تھا کیونکہ وہ جنوبی کشمیر میں شوپیاں اور کولگام کے عسکریت پسندی سے متاثرہ اضلاع میں اپنے ٹھکانوں کو تبدیل کررہا تھا۔محتاط انداز میں منصوبہ بندی کرنے اور مربوط کوششوں سے ریاسی پولیس نے ملزم کی

سانبہ میں 45 ڈگری سینٹی گریڈ درجہ حرارت کے باوصف سیب کے باغات تیار

جموں// جموں و کشمیر میں سیب کے باغات اب صرف وادی کشمیر تک ہی محدود نہیں بلکہ صوبہ جموں کی سرزمین پر بھی سخت ترین گرمی کے باوصف سیب کے باغ تیار ہونے لگے ہیں۔ صوبہ جموں کے ضلع سانبہ میں ایسے سیب کے باغ تیار ہیں جو 45 ڈگری سینٹی گریڈ سے زیادہ درجہ حرارت میں بھی پھل دے رہے ہیں۔ ضلع سانبہ کے ایک گاو¿ں 'راجڈی'، جو جموں سے صرف 22 کلو میٹر دوری پر واقع ہے، میں ایسے سیب کے باغات تیار ہیں جن کے پھل بازاروں میں سستے داموں دستیاب ہیں۔  

بکرم چوک اولڈ ریلوے سٹیشن کو ورثہ کے طور پر تیار کیا جائے گا

جموں//ڈویژنل کمشنر جموں ڈاکٹر راگھا لنگر نیکہا کہ حکومت مندروں کے شہر میں آنے والے سیاحوں کو راغب کرنے کے لئے تاریخی بکرم چوک ریلوے اسٹیشن کو ایک ورثہ کی جگہ کے طور پر تیار کرنے کا منصوبہ بنا رہی ہے۔وہ ریلوے اسٹیشن کے سائٹ کے دورے پر تھے جو 1897 میں تعمیر کیا گیا تھا لیکن تقسیم کے بعد سیالکوٹ سے ریلوے لنک ٹوٹ جانے کے بعد اسے چھوڑ دیا گیا تھا۔صوبائی کمشنر نے تزئین و آرائش کی ضروریات کا اندازہ کیا اور بحالی منصوبے کو عملی شکل دینے کے لئے ابتدائی کام شروع کرنے کے لئے ہدایات جاری کیں۔ان کے ہمراہ ڈائریکٹر ٹورزم جموں ، ایڈیشنل سی ای او جموں اسمارٹ سٹی لمیٹڈتحصیلدار جموں ساؤتھ کے علاوہ جے ڈی اے کے عہدیدار اور دیگر متعلقہ افسران بھی تھے۔ڈیو کام نے کہا "سیاحت کے فروغ کے لئے نئے پرکشش مقامات کی ترقی او ر موجودہ بنیادی ڈھانچے کی بہتری حکومت کے ترجیحی شعبوں میں سے ایک ہے۔"دورے کے دورا

اکھنور سیکٹرمیں فوجی اہلکار کی پر اسرار ہلاکت

 جموں //جموں کے ضلع اکھنور علاقے میں لائن آف کنٹرول کے قریب آرمی کیمپ میں تعینات ایک فوجی اہلکار منگل کے روز پراسرار گولیوں سے ہلاک ہوا۔فوجی حوالداراکھنور کے جوگوان میں واقع آرمی کیمپ میں تعینات تھا ، جہاں اس کی لاش پراسرار حالت میں گولیوں کے زخموں سے لت پت ہوئی پائی گئی۔یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ مذکورہ اہلکار نے خود کشی کی تھی یا کوئی اور واقعہ ہوا ہے۔ پولیس نے معاملے کی تحقیقات شروع کردی ہے۔      

جموں میں شراب کی دکانوں کے خلاف لوگوں کا احتجاج زور پکڑنے لگا

جموں// جموں و کشمیر کے سرمائی دارالحکومت جموں میں شراب کی نئی دکانیں کھولنے کے خلاف مقامی لوگوں کا احتجاج ہر گزرتے دن کے ساتھ زور پکڑ رہا ہے۔ سروال، گجر نگر، چوک چبوترا اور دیگر علاقوں کے بعد منگل کو شکتی نگر میں بھی لوگ سڑکوں پر آئے اور شراب کی دکان کھولے جانے کے خلاف احتجاج کیا۔ احتجاجی 'شراب کی دکانیں بند کرو بند کرو'، 'شراب کی دکانیں نہیں کھلنے دیں گے نہیں کھلنے دیں گے' جیسے نعرے لگا رہے تھے۔    

جموں میں ایل او سی کے نزدیک کیمپ سے فوجی اہلکار کی لاش برآمد

جموں// جموں کے اکھنور سیکٹر میں لائن آف کنٹرول کے نزدیک ایک کیمپ میں منگل کی صبح ایک فوجی جوان کی پراسرار طور پر گولیوں سے چھلنی لاش برآمد کی گئی۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ جوگون اکھنور علاقے میں منگل کی صبح ایک کیمپ میں ایک فوجی جوان کی پراسرار طور پر گولیوں سے چھلنی لاش برآمد کی گئی۔ انہوں نے بتایا کہ پولیس نے اس ضمن میں ایک کیس درج کر کے تحقیقات شروع کی ہیں۔  

ڈی سی ادھم پور نے کووڈ 19 ریلیف کی دوسری قسط جاری کردی

ادھم پور // ڈپٹی کمشنر اودھم پوراندوکنول چب نے 12595 فعال رجسٹرڈ تعمیراتی کارکنوں کے لئے ایک ہزار روپے کی کووڈ ریلیف کی دوسری قسط کے طور پر1,25,95,000روپے کی قسط جاری کردی۔یہ رقم رجسٹرڈ کارکنوں کو ڈی بی ٹی موڈ کے ذریعہ فراہم کی گئی ہے۔جموں و کشمیر حکومت نے ایل جی کے حکم پر رجسٹرڈ تعمیراتی کارکنوں کو مئی اور جون 2021 کے مہینے میں دو قسطوں میں ہر ایک کو 2000 روپے ادا کرنے کا فیصلہ کیا تھا تاکہ کووڈ پابندیوں کے درمیان کام کی عدم موجودگی میں انہیں کچھ سہولت فراہم کی جائے۔اس موقع پر ڈپٹی کمشنر اودھم پور نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کووڈ ریلیف کی پہلی قسط ڈی بی ٹی کے ذریعہ مئی ، 2021 کے مہینے میں لیبر ڈیپارٹمنٹ نے پہلے ہی فراہم کی ہے۔مذکورہ بالا کے علاوہ 2لاکھ50ہزار روپے کی امداد موت کے بعد امداد کے طور گڈی دیوی (انحصار) بیوہ مرحوم کاکو رام رجسٹرڈ کارکن آر / او گاؤں بدھول تحصیل رام نگر کے

برسات کی آمد سے قبل انسداد سیلاب اقدامات کا جائزہ لیاگیا

کٹھوعہ//ڈپٹی کمشنر (ڈی سی) کٹھوعہ راہول یادو نے ڈی سی آفس کمپلیکس کے کانفرنس ہال میں بلائے گئے اجلاس میں بارش کے موسم سے قبل ضلع میں سیلاب سے بچاؤ کے اقدامات کا جائزہ لیا ۔ڈی سی نے آنے والے مون سون کے سیزن کے دوران کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لئے بین شعبہ جاتی رابطہ کی اہمیت کی نشاندہی کی۔ انہوں نے ہم آہنگی کے ساتھ کام کرنے کے لئے سیلاب سے بچاؤ کے اقدامات پر عملدرآمد کے کام سے وابستہ ہر شخص پر زور دیا تاکہ سیلاب سے متاثرہ علاقوں کے رہائشیوں خصوصاًلوگوں کی جان و مال کی حفاظت کی جاسکے۔ڈی سی نے سیلاب سے بچاؤ کے کوآرڈینیشن کمیٹیاں تشکیل دینے کی ہدایت کی تاکہ سیلاب سے بچاؤ کے انتظامات کی نگرانی کی جاسکے اور بحرانی بحالی کے انتظام کے گروپ کے طور پر کام کیا جاسکے۔یہ فیصلہ کیا گیا کہ پولیس کنٹرول روم کٹھوعہ میں کنٹرول روم اور سب اسٹیک ہولڈرز تک سیلاب کے سلوک سے متعلق معلومات کی

جموں ۔اکھنور روڈ کی توسیع کے منصوبے کو تیز کرنے کی ہدایت

جموں//ڈویڑنل کمشنر جموں ڈاکٹر راگھو لنگر نے اتوار کے روز جموں۔اکھنور روڈ کو وسیع کرنے کے منصوبے پر کام کی پیشرفت کا معائنہ کیا۔صوبائی کمشنرنے بھگوتی نگر سے اکھنورتک کا سارا دورانیہ لیا اور پٹیل نگر ، پلورا ، مٹھی ، دومانہ ، مشری والا ، بھٹیرہ اور اکھنور سمیت متعدد مقامات پر تمام پیکیجز پر کام کی پیشرفت کا معائنہ کیا۔انکے ساتھ ایگزیکٹو ڈائریکٹر (پی) این ایچ ڈی سی ایل رتن کمار سنگھ،جنرل منیجر (پی)این ایچ آئی ڈی سی ایل کرنل ایس پی ایس سمگوان، ایس ڈی ایم نارتھ جموں ، مڑھ ، اکھنور ، ڈی ایم او جموں ، تحصیلدار متعلقہ ، سائٹ انجینئر اور دیگر متعلقہ افسران موجودتھے۔این ایچ ڈی سی ایل کے عہدیداروں نے ڈیو کام کو وقاری سڑک منصوبے پر کام کی موجودہ حیثیت کے علاوہ اب تک حاصل ہونے والی پیشرفت اور آئندہ کے منصوبے کے بارے میں بھی آگاہ کیا۔انہیںبتایا گیا کہ فلائی اوور کے لئے مجموعی طور پر 133 گھاٹوں می

کووڈ سے صحت یابی کے بعد بلیک فنگس معاملات میں بتدریج اضافہ | جموں میںمیکورمائکوسس سے 4 افرادلقمہ اجل ، جموں و کشمیر میں 19 کیس رپورٹ

جموں//جموں میں مکورمائکوسس (بلیک فنگس) کے واقعات میں بتدریج اضافہ ہوا ہے جس میں چار جانیں ضائع ہوچکی ہیں اور 19 معاملات مختلف اضلاع سے سامنے آئے ہیں جن میں زیادہ تر جموں ضلع سے ہیں۔ابھی تک ضلع سرینگر سے سیاہ فنگس کے دو واقعات کی اطلاع ملی ہے اور وادی کشمیر کے کسی بھی اضلاع سے کوئی اور کیس رپورٹ نہیں ہوا ہے۔جموں ، کٹھوعہ اور پونچھ اضلاع میں کالے فنگس کے23کیسوں میں سے 4 مریضوں کی موت ہوچکی ہے جبکہ 19 کا علاج جاری ہے۔گوکہ جموں و کشمیر اب بھی کوویڈ 19 کی دوسری لہر پر قابو پا رہا ہے جس نے UT میں 4051 جانیں لی ہیںتاہم اب ضلع جموں میں سیاہ فنگس کیسوں میں بتدریج اضافے نے صحت کے حکام کو تشویش میں مبتلا کردیا ہے اور انھوں نے مناسب صحت کی فراہمی کے ذریعہ صورتحال پر قابو پانے کے لئے بھی تیاریاں کرلی ہیں۔ اگرچہ عہدے دار تازہ ترین واقعات اور اموات کے بارے میں بات کرنے کو تیار نہیں تھے ، لیکن ایک می