میئر بننے کے ایک روز بعد جنید متواپنی پارٹی میں شامل

سرینگر// سرینگر میونسپل کارپوریشن کیلئے حال ہی میں منتخب ہوئے میئر جنید عظیم متو نے اپنی پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا۔پارٹی سربراہ الطاف بخاری نے متو کا خیر مقدم کیا۔انہوں نے کہا  اپنی پارٹی ضلع ترقیاتی کونسل انتخابات میں مکمل طور پر شرکت کر رہی ہے اور وادی میں ایک سو سے زائد نشستوں پراپنے اُمیدوار کھڑا کرہی ہیں۔بخاری نے کہاحکومت اس بات کو یقینی بنائے کہ روشنی اراضی گھپلے کی تحقیقات کے دوران’’ گنہگاروں‘‘ اور ’’ معصوموں‘‘ کے درمیان انصاف کی لکیر کھنچے۔ جمعہ کو سرینگر میں اپنی پارٹی کے دفتر میں سرینگر میونسپل کارپوریشن کے میئر جنید عظم متو نے پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا۔اس موقعہ پر منعقدہ پریس کانفرنس کے دوران اپنی پارٹی کے سربراہ الطاف بخاری نے کہاکہ متو کو شہرسرینگر کے لوگوں کی خدمت کرنے کے لئے پارٹی کارکنوں اور اِس کے عہدیداران ک

ترال اور شوپیان کے کئی دیہات کامحاصرہ ، گھرگھرتلاشی

ترال//ترال اور شوپیان کے کئی دیہات کا جمعہ کو فورسزنے محاصرہ کرکے گھرگھر تلاشی لی ،تاہم اس دوران کسی کو گرفتار کئے جانے کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔جمعہ صبح سب ضلع ترال کے مندورہ اور نارستان علاقوں کو فوج کے42آر آر،سی آر پی ایف180 بٹالین اور پولیس اہلکاروںنے محاصرے میں لیا اور علاقے میں گھر گھر تلاشی کارروائیوں کا سلسلہ شروع کیا ۔ صبح ساڑے نو بجے تک جاری تلاشی کارروائی کے دوران تاہم کسی کی گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی ہے۔ ادھر شوپیان میں44راشٹریہ رائفلز،1RR، سی آر پی ایف کی178 بٹالین اور پولیس کے سپیشل آپریشن گروپ نے مشترکہ طور پہنو، اورربن علاقوں کو محاصرے میں لے کر جنگجو مخالف آپریشن شروع کیا۔مقامی لوگوں نے بتایا فورسز نے یہاں دونوں گائوں کو دوران شب ہی محاصرے میںلیا تھا اور صبح ہوتے ہی گھرگھرتلاشی کارروائی کا سلسلہ شروع کیا ۔اس دوران یہاں بھی دن کے گیارہ بجے کے قریب تک کارروائیوں ک

’روشنی ایکٹ میں ملوث نہیں ہوں‘

سرینگر//سینئرکانگریس رہنمااور سابق وزیر تاج محی الدین نے روشنی ایکٹ سکینڈل میں ملوث ہونے کے الزام کو رد کرتے ہوئے اس معاملے کی سی بی آئی کے ذریعے تحقیقات کاخیرمقدم کیا ہے ۔کے این ایس کے مطابق کانگریس کے سینئر رہنما اور سابق وزیر تاج محی الدین ،جن کا نام مبینہ طور روشنی ایکٹ اسکینڈل میں آیا،نے جمعہ کو بتایا کہ روشنی ایکٹ سکینڈل میں ملوث نہیں ہیں ۔انہوں نے اس معاملے کی سی بی آئی کے ذریعے تحقیقات کئے جانے کا خیرمقد م بھی کیا۔تاج محی الدین نے کہا کہ ماضی میں اس معاملہ کو ویجی لینس آرگنائزیشن نے نمٹاکر بند کیاتھاجس کو اب موجودہ حکومت نے سی بی آئی کو سونپ دیاہے۔انہوں نے کہا کہ مجھے امید ہے کہ سی بی آئی حقائق کو اصل شکل میں سامنے لائے گی۔انہوں نے کہا کہ اس قانون کے تحت کوئی بھی اراضی ان کے نام منتقل نہیں ہوئی ہے ۔    

سرینگر لداخ شاہراہ کوآج گاڑیوں کیلئے کھول دیئے جانے کاامکان

گاندربل//جمعرات کو زوجیلا پر پسیاں اور برفانی تودے گرآنے کی وجہ سے سرینگر لداخ شاہراہ جمعہ کوپانچوں روزبھی ٹریفک کیلئے بند رہی جبکہ شمالی ضلع کپوارہ کے سرحدی علاقوں کو جانے والی سڑکوں پر سے بھی برف ہٹاکر اُنہیں گاڑیوں کی آمدورفت کیلئے بحال کیا گیا۔23نومبرکو ہوئی برف باری کے نتیجے میں حکام نے434کلومیٹرطویل سرینگرلداخ شاہراہ کواحتیاطی طور گاڑیوں کی نقل وحمل کیلئے بند کردیاتھاجس کی وجہ سے کرگل ،دراس اور سونہ مرگ کے مختلف مقامات پرسینکڑوں مال اور مسافر گاڑیاں درماندہ ہوگئیں تھی۔اس شاہراہ کوآمدورفت کے قابل بنانے کیلئے پروجیکٹ وجیک اور بارڈس روڈس آرگنائزیشن نے ہنگامی بنیادوں پر جمعہ کوبرف ہٹانے کا کام مکمل کیاجس کے بعد دراس اور گومری سے200فوجی گاڑیوں کو سونہ مرگ کیلئے روانہ کیاگیا۔آئی جی پی ٹریفک کشمیر پی نمگیال نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ سنیچروار کو اگر موسم صاف رہا اورسڑک پر پھسلن پید

کورونا وائرس| 8شہری فوت ، متوفین کی تعداد1676

سرینگر //جمعہ کو جموں کشمیرمیں کوروناوائرس سے مزید آٹھ افراد فوت ہوگئے ۔جموں و کشمیر میں پچھلے24گھنٹوں کے دوران 27ہزار 476تشخیصی ٹیسٹ کئے گئے جن میں 565کی رپورٹیں مثبت آئیں اور اسطرح متاثرین کی مجموعی تعداد108871تک پہنچ گئی ہے جن میں 43ہزار648جموں جبکہ کشمیر میں یہ تعداد65ہزارکا ہندسہ پار کرکے 65223ہوگئی۔ جمعہ کومزید 8افراد کورونا وائرس سے فوت ہوگئے۔متوفین کی مجموعی تعداد1676ہوگئی۔ ان میں 579 جموںجبکہ کشمیر میں فوت ہونے والے افراد کی تعداد1097ہوگئی ہے۔نئے 565معاملات میں  238کشمیر جبکہ327متاثرین کا تعلق جموں صوبے سے ہے۔ کشمیر صوبے کے 238متاثرین میں 88سرینگر،35بارہمولہ، 23بڈگام، 21پلوامہ، 29کپوارہ، 8اننت ناگ، 9بانڈی پورہ، 14گانڈربل، 5کولگام اور 6شوپیان سے تعلق رکھتے ہیں۔ جموں صوبے کے 327متاثرین میں 142جموں، 19راجوری، 49ادھمپور، 36ڈوڈہ، 17کٹھوعہ، 1پونچھ، 15سانبہ، 28کشتواڑ، 13رام بن

پلوامہ کے شہری پر سیفٹی ایکٹ کالعدم

سرینگر// جموں کشمیر ہائی کورٹ نے2018میں جنوبی کشمیر کے پلوامہ سے تعلق رکھنے والے ایک نوجوان پر عائد پی ایس اے کو کالعدم قرار دیا۔ نثار احمد قاضی ساکن ٹکن پلوامہ پر عائد پی ایس ائے معاملے میں سنگل بنچ احکامات کو یک طرف کرکے جسٹس سنجیو کمار اور جسٹس راجنیش اوسوال کی سربراہی والے ڈبل بینچ نے قاضی پر عائد پی ایس کو منسوخ کیا۔ نظار احمد قاضی نے ایڈوکیٹ جی این شاہین کی وساطت سے سنگل بینچ جج کے احکامات کو ڈبل بینچ میں چلینج کرنے کیلئے اپیل کی تھی،جس میں نظربند رکھنے والے حکام کے ان بنیادوں پر اعتراض کیا تھا کہ انہیں(حکام)کو معلوم  ہے کہ نظربند اس وقت پہلے ہی جیل میں تھا اور ضمانت کیلئے عدالت کا دروازہ نہیں کھٹکھٹایا تھا۔  

ضلع ترقیاتی کونسل اور پنچائتی چنائو

۔8سر پنچ اور 79پنچ نشستو ں کیلئے بالترتیب 20اور 96امیدوار مد امقابل  کپوارہ//ضلع ترقیاتی کونسل انتخا بات کیلئے شمالی ضلع کپوارہ کی 3 نشستو ں کے لئے آج ووٹ ڈالے جارہے ہیں جن میں انتخابی حلقہ کرالہ پورہ ،ٹنگڈار اور کلاروس شامل ہے ۔کرالہ پورہ نشست بلاک کرالہ پورہ ،میلیال اور کیرن پر مشتمل ہے جبکہ ٹنگڈار نشست ٹیٹوال اور ٹنگڈار بلا ک اور کلاروس نشست مژھل اور کلاروس بلا کوں پر مشتمل ہیں ۔سرکاری اعداد و شمار کے مطابق ان 3 نشستو ں کیلئے کل 76554رائے دہندگان ہیں ۔کرالہ پورہ حلقہ میں 21757رائے دہندگان اپنے من پسند امیدواروں کے لئے ووٹ ڈالے گے جن میں 11276مرد اور 10483خواتین شامل ہیںاوریہاں کل 10امیدوار میدان میں ہیں، جن میں پیپلز الائنس کا 1،اپنی پارٹی 1،بی جے پی 1اور7آ زاد امیدوار شامل ہیں ۔کلاروس حلقہ میں 21115رائے دہند گان اپنے ووٹ کا استعمال کریں گے جن میں11242مرد اور 9872خواتین و

محبوبہ مفتی کی نظربندی بوکھلاہٹ: پیپلز الائنس امیدوار

ترال //پیپلز ایلائنس کے آری پل ترال ڈی ڈی سی امیدوار منظور احمد گنائی نے پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی کو پلوامہ جانے کے پروگرام کو ناکام بنانے اور گھر میں نظر بند رکھنے پر سخت برہمی کااظہار کیا ہے۔ انہوںنے کہاکہ بھاجپا بوکھلاہٹ کی شکار ہے اوراب وہ گپکار اتحاد کے لیڈران کو گھروںسے باہر جانے نہیں دیتی ۔انہوںنے کہاکہ اب ان لوگوں کو انتخابات سے قبل ہی ہار کا احساس ہوا ہے ۔انہوں نے کہا کہ جہاں ہم جاتے ہیں وہاں لوگ پی ڈی پی صد کو یاد کرتے ہیںجو ان کی کامیابی کی ضمانت ہے ۔انہوںنے حاجن اور ستورہ ترال میں عوامی ریلیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ جیت کی صورت میں آری پل ترال میں تعمیر و ترقی کے حوالے سے نقشہ بدل دوں گا ۔   

رنگ روڑ کی تعمیر کیخلاف ناراضگی

گاندربل//لارسن گاندربل میں لگاتار تیسرے روزبھی خواتین نے گاندربل صفاپورہ شاہراہ پراحتجاجی دھرنا دیتے ہوئے ٹریفک کی نقل و حرکت روک دی۔دھرنے میں شامل افراد رنگ روڑ کی سروے رپورٹ اور ملکیتی اراضی میں نشان ڈالنے کے خلاف مظاہرے کررہے تھے۔گالندر سے نارہ بل اورنارہ بل سے ہوتے ہوئے ضلع گاندربل کے منیگام تک 60 کلومیٹر مسافت والے رنگ روڑ کی تعمیر کا منصوبہ عملانے کے لئے ریاستی سرکار نے دو ہزار کروڑ سے زیادہ لاگت کا تخمینہ لگایا ہے جس پر سروے رپورٹ مکمل کرکے نشان دہی کا عمل شروع کردیا گیا ہے جس کے تحت تولہ مولہ،لارسن،کھرانہہامہ،ریپورہ ،واتل باغ میں موجود ملکیتی اراضی سے رنگ روڑ کی تعمیر کا عمل شروع کیا جارہا ہے۔ مظاہرین نے لارسن کے مقام پر رنگ روڑ کی تعمیر کے خلاف احتجاج کیا۔مظاہرین میں شامل خواتین نے بتایا کہ دو سال قبل رنگ روڑ کی تعمیر کا منصوبہ بنایا گیا تھا جسے واکورہ سے ہوتے ہوئے منیگام بائی

جراثیم کش ادویات کا معیار جانچنے کیلئے لیبارٹریاں قائم کی جائیں گی:نوین چودھری

سر ینگر//پرنسپل سیکریٹری باغبانی نوین کمار چودھری نے باغبانی او رکسانوںکو فراہم کی جانے والی معیاری پیسٹ سائیڈس سے متعلق جائزہ لینے کے لئے اَفسران کی ایک میٹنگ کی صدارت کی۔میٹنگ میں ناظم باغبانی ، ناظم زراعت ، ناظم انفورسمنٹ اور دیگر اَفسران نے شرکت کی۔اِس میٹنگ میں باغوں اور کاشتکاروں کو ناقص کیڑے مار اَدویات کی فراہمی کے بارے میں عوامی شکایات پر تبادلہ خیال کیا گیا جس کے بارے یہ کہا جاتا ہے کہ یہ سکیب بیماری کی ایک اہم وجہ ہے جس نے سیب کے معیار اور اس کی پیداوار کو متاثر کیا۔دورانِ میٹنگ بتایا گیا کہ کسانوں کو کیڑے مار اَدویات کی درآمد اور فراہمی کے معیار کو جانچنے کے لئے این اے بی ایل کے ذریعہ تصدیق شدہ لیبارٹریاں قائم کی جائیں گی۔ مزید یہ کہ موجودہ لیبارٹریوں کی اَپ گریڈیشن پر بھی غور و خوض ہوا۔دریں اثناء پرنسپل سیکرٹری نے اَفسران کو ہدایت دی کہ کیڑے مار ادویات کی خریداری پہلے سے

کولگام میں3حفاظ کی دستار بندی

سرینگر// ضلع کولگام کے ایک دینی مدرسہ میں ایک تقریب پرتین حفاظ کی دستار بندی کی گئی۔دارالعلوم مفتاح المدارس پاریون کولگام میں  نماز ظہر تاعصر ایک مجلس تکمیل حفظ کے نام سے منعقد ہوئی جس میں ضلع کولگام اور اسکے مضافات سے علماء وائمہ مساجد کے علاوہ لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے شرکت کی۔ اس موقع پر مدرسہ ہذا سے فراغت حاصل کرنے والے تین حفاظ کی دستاربندی سرکردہ عالم دین مولانا احمد سعید قاسمی کے ہاتھوں کی گئی۔ اس مجلس میں مفتی غلام محی الدین رحیمی مہتمم دارالعلوم ہاکھورہ ، امیر انجمن علماء وائمہ مساجدجموں وکشمیر حافظ عبد الرحمن اشرفی ( ناظم دارالعلوم سید المرسلین چوگام قاضی گنڈ) ،مفتی شیرازاحمد قاسمی مہتمم دارالعلوم رحمانیہ سلیالو ،مولانا عبد الجبار مہتمم دارالعلوم صدیقہ مٹی بگ ،مفتی توصیف احمد ،قاری امتیاز احمد ،مفتی نواز احمد،مولانااشرف مہتمم دارالعلوم حفظ قرآن پمپ ،قاری یاسین احمد وغیر

اونتی پورہ میں پولیس کی جانب سے سیفٹی کٹ تقسیم کئے

سرینگر// اونتی پورہ پولیس نے علاقے کے117 غریب اور ضرورتمند خاندانوں میںکوووڈ۔19کی بچاو سے محفوظ رہنے کیلئے سیفٹی کٹ تقسیم کئے۔تھانہ پولیس اونتی پورہ میںمنعقدہ تقریب پر ایس ایس پی اونتی پورہ طاہر سلیم نے ایس ڈی پی ، ڈی ایس پی اور ایس ایچ او کی قیادت میں ضرورتمند افرادمیںیہ کٹ تقسیم کئے گئے۔انہوں نے اس موقع پر بتایا کہ کورونا وائرس سے بچنے کیلئے سماج کے ہرایک فرد کواپنا رول ادا کرنا چاہئے اور ضرورت مند لوگوں کو خاص خیال رکھنا ضروری ہے تاکہ وہ بھی محفوظ رہ سکیں۔  

مزید خبرں

وادی میں 4.5شدت کازلزلہ سرینگر//وادی کشمیر میں جمعرات کی شب زلزلے کے جھٹکے محسوس کئے گئے ۔ وادی میں آنے والے زلزلہ کی شدت ریکٹر پیمانے پر 4.5ریکارڈ کی گئی ۔ زلزلہ کا مرکز افغانستان اور پاکستان کے وسط کا علاقہ سوات اور گرد ونواح تھا۔زلزلے کی گہرائی 40 کلومیٹر تھا۔ ادھر دوران شب آئے زلزلہ کے نتیجے میں لوگوں میں خوف و دہشت کی لہر پھیل گئی ۔   کولگام کی زخمی دوشیزہ سکمز میں انتقال کرگئیں پرویز احمد +خالد جاوید   سرینگر //پونیوہ کولگام سے تعلق رکھنے والی لڑکی جمعہ کو سکمز صورہ میں انتقال کرگئیں۔ میڈیکل سپر انٹنڈنٹ ڈاکٹر فاروق احمد جان نے بتایا ’’مذکورہ لڑکی کے گلے پر پھانسی کے نشان اور چھاتی پر زخم تھے ۔ وہ انتہائی نگہداشت والے وارڈ میں زیر علاج تھیں‘‘۔انہوں نے کہا کہ آئی سی یو میں لڑکی کی حالت کافی عرصے سے نازک بنی ہوئی تھی&lsquo

تازہ ترین