تازہ ترین

حیدربیگ کھئی پورہ سڑک کی حالت ناگفتہ بہ | 2018سے کام بند،محکمہ تعمیرات پر لیت و لعل کا الزام

بارہمولہ//ضلع بارہمولہ کے حیدربیگ پٹن سے کھئی پورہ ٹنگمرگ تک سڑک رابطہ گزشتہ ایک دہائی سے خستہ حال ہے جس کے نتیجے میں ٹرانسپورٹروں اور عام لوگوں کے ساتھ ساتھ طلاب کو زبردست مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ مقامی آبادی کا کہنا ہے کہ 21 کلو میٹر پر مشتمل یہ سڑک کا فاصلہ ہے جو ٹنگمرگ تک تقریباً 30 دیہات سے گزرتی ہے ۔لوگوں کا کہنا ہے کہ اس سڑک کو انتظامیہ نے ہمیشہ نظر انداز کیا گیا ۔ ایک مقامی باشندے غلام حسن نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ حیدر بیگ سے کھئی پورہ تک اس سڑک کے تقریبا 17 کلومیٹرخستہ حال ہوچکے ہیں اور سڑک پڑ جگہ جگہ بڑے کھڈ بن چکے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ کئی بار یہ معاملہ اعلیٰ افسران کی نوٹس میں لایا گیا لیکن اُس کا کوئی فائدہ نہیں ہوا۔ انہو ں نے مزید کہا کہ اگر چہ اس سڑک پر مرمت کرنے کا سلسلہ چند سال قبل شروع کیا گیا تھا لیکن پھر اچانک 2018 میں فنڈز کی عدم فراہمی کی وجہ سے روک دیا

نالہ سندھ سے تعمیراتی مواد نکالنے کا سلسلہ جاری

گاندربل// نالہ سندھ میں گنگرہامہ، وحید پورہ، ملہ پورہ،سرڑ، بابوسی پورہ، نونر، وایئل،وسن ،پرنگ اور اکہال سے لیکر سونمرگ تک جے سی بی مشینوںسے تعمیراتی مواد نکالنے کا کام شدومد سے جاری ہے جس کے سبب نالہ سندھ کا وجود خطرے میں ہے۔ کئی مقامات پر نالہ سندھ کے  حفاظتی بنڈ تک اکھاڑ لئے گئے ہیںجس کے نتیجے میںرہائشی علاقوں میں سیلاب کے دوران جانی و مالی نقصان ہونے کا خدشہ لاحق ہوگیا ہے۔ضلع ترقیاتی کمشنر گاندربل شفقت اقبال نے اس سلسلے میں کہا کہ ایک ٹیم تشکیل دے کر خود غرض عناصر کے خلاف کارروائی کی جائے گی ۔

نارواو بارہمولہ محکمہ بجلی سے برہم | غیر اعلانیہ کٹوتی شیڈول کی وجہ سے مشکلات درپیش

بارہمولہ//موسم سرما کی آمد کے ساتھ ہی بارہمولہ ضلع کے نارواو علاقے میں بجلی کی عدم دستیابی سے مشکلات میں اضافہ ہوا ہے۔ شیری ،فتح گڈ ھ ،ہیون، کالے بن، ملہ پورہ ،ڈانگر پورہ ،لرڈورہ،تاری پورہ، آ ڈورہ ،نملن، گلستان ،بدمولہ ،پالہ دجی گوری وان ،زنڈفرن ،زوگیار،شالہ ٹینگ ،کچہامہ گانٹہ مولہ اور کئی دیہات کے لوگوں کا کہنا ہے کہ شام ہوتے ہی ان علاقوں میں اندھیرا چھا جاتا ہے جبکہ کئی علاقوں میں بجلی آتے ہی چلی جاتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ صورتحال کو بہتر بنانے کیلئے کارگر اقدامات نہیں کر رہا ہے جس کے نتیجے میں  محکمہ کے تئیں عوام میں غم و غصہ پایا جارہا ہے۔لوگوں کا کہنا ہے کہ کسی بھی علاقے میں بجلی کا کوئی شیڈول مرتب نہیں ہے اور کسی کو معلوم ہی نہیں کہ بجلی کب آئے گی اور کب چلی جائے گی ۔ کئی لوگوں نے کہا کہ وہ باقاعدگی کے ساتھ فیس بھی ادا کر رہے ہیں لیکن اس کے باوجود وہ بجلی کی عدم دست

کشمیر میں ریل سروس 7ماہ سے بند | مسافروں کو پریشانی،بحال کرنے کا مطالبہ

سرینگر//کشمیر ریل سروس گزشتہ سات ماہ سے مسلسل بند پڑی ہے جس کے نتیجے میں کشمیر ریلوے کو اب تک کروڑو ں روپے کا خسارہ برداشت کرنا پڑا ہے ۔ اس دوران مسافروں نے مطالبہ کیا ہے کہ ریل سروس کو اب شروع کیا جائے ۔ وادی میںچلنے والی ریل سروس گزشتہ سات ماہ سے مکمل طور ٹھپ ہے ۔ لاک ڈاون کی وجہ سے جہاں تمام کاروباری ادارے اور ٹرانسپورٹ کی سرگرمیاں معطل کی گئیں وہیں ریل سروس کو بھی عارضی طور معطل رکھا گیا ۔ اگرچہ ہندوستان کے دیگر تمام شہروں اور ریاستوں کے درمیان ریل خدمات بحال کی گئیں لیکن بین کشمیر چلنے والی ریل ہنوز بند ہے ۔ ریل خدمات معطل رہنے کے نتیجے میں مسافروں کو شدید دشواریوںکا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔ مسافروں نے اس سلسلے میں کہا ہے کہ ریل میں سفر کرنے سے انہیں کافی سہولت ہوتی تھی۔انہوں نے کہا کہ جہاں پیسے کی بچت ہوتی تھی وہیں وہ اپنی اپنی منزلوں پر وقت پر پہنچتے تھے ۔ بارہمولہ بانہال ریل سروس&

پوسٹ گریجویشن کا انتظام کیا جائے | کشمیر یونیورسٹی حکام سے فائن آرٹس طلاب کامطالبہ

سرینگر//کشمیر یونیورسٹی کے’فائن آرٹس‘شعبہ میں زیر تعلیم طلاب چار سال تک زیرتعلیم رہنے کے بعد پوسٹ گریجویشن کی سہولت کشمیر میں نہ ہونے کی وجہ سے پریشانیوں میںمبتلا ہیں ۔انہوں نے یونیورسٹی حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ پوسٹ گریجویشن کے ساتھ ساتھ اس شعبہ سے وابستہ افرادکے لئے روز گار کا انتظام کیا جائے ۔یہ طلاب کشمیر یونیورسٹی کے شعبہ’فائن آرٹس‘میں 4سالہ کورس مکمل کرنے کے قریب ہیں۔کئی طلاب نے بتایا کہ پوسٹ گریجویشن کے بعد اس کورس کی افادیت اور اہمیت بڑھ جاتی ہے ۔انہوں نے یونیورسٹی حکام اور سرکار سے اپیل کی کہ ان کے لئے پوسٹ گریجویشن کا بھی انظام کیا جائے تاکہ ان کا مستقبل تابناک بنے ۔انہوںنے جموں و کشمیر اور مرکزی سر کار سے فائن آرٹس کے تربیت یافتہ نوجوانوں کے لئے روز گارکا انتظام بھی کیا جائے ۔  

ترال میں محکمہ صحت کا حال بے حال ،کہلیل ہسپتال میں طبی و نیم طبی عملے کی قلت | منظور شدہ22اسامیوںمیںصرف9تعینات،2ایم بی بی ایس ڈاکٹروں کی کرسیاںخالی

ترال)کہلیل(//جنوبی کشمیر کے سب ضلع ترال میں محکمہ صحت کی بد نظمی اور حکومت کی عدم توجہی کے باعث بیشتر طبی مراکز میں طبی او نیم طبی عملہ دستیاب نہ ہونے کی وجہ سے یہاں قائم کئے گئے ہسپتال عوام کے لئے بے فائدہ ثابت ہو رہے ہیںاور لوگوں کو علاج و معالجے کے لئے دور دور کے ہسپتالوں کا رخ کرنا پڑ رہا ہے ۔ لعلپورہ کہلیل ترال میں قائم سب سے قدیم ہسپتال میں طبی و نیم طبی عملے 22اسامیوںکی جگہ کل9ملازمین تعینات ہیں۔ستم ظریقی یہ ہے کہ ہسپتال میں 2ایم بی بی ایس ڈاکٹروں کی کرسیاں گزشتہ کئی سال سے خالی پڑی ہیں ۔جنوبی کشمیر کے سب ضلع ترال کے لعل پورہ کہلیل ترال میں گزشتہ کئی دہائیوں سے قائم پبلک ہیلتھ سنٹر (پی ایچ سی)میں تعینات 22طبی و نیم طبی ملازمین میں گزشتہ کئی دہائیوں سے کل9نو ملازمین ،جن میں ایکISMڈاکٹر جو ہفتے میں یہاں 3دن تعینات رہتی ہے، کے علاوہ ایک ڈینٹسٹ کے علاوہ7دیگر نیم طبی عملے کے ملازمین

ڈاک کے ذریعے خط بھیجنا ختم | سینکڑوں لیٹر بکس برسوں سے تالا کھلنے کے منتظر

سرینگر //ترقی کے اس جدید دور میںپرانی روایات میں تبدیلیاں آنے سے جہاں بہت کچھ بدل چکا ہے، وہیں ڈاکیہ کے ذریعے آنے والے خط اور ڈاک ڈبہ جیسی اصطلاحات میں بھی کمی ہوئی ہے ۔شہروں ،قصبوں اور گائوں دیہات میں نصب ڈک ڈبے برسوں سے تالا بند پڑے ہیں کیونکہ نہ کہیں ڈاک آتی ہے نہ خط اور نہ ہی صبح کے وقت ڈاکیہ سائیکل پر خاکی وردی میں ملبوس ہو کر ڈاک لے کر گھر گھر پہنچتا ہے بلکہ اس نے بھی وردی اُتار کر دیگر لوگوں کی طرح اس جدید دور میں اپنا کام انجام دینا شروع کر دیا ہے ۔وہیں یہ تاثر بھی غلط ثابت ہو گیا ہے کہ انٹر نیٹ کے جدید دور میں ڈاک خانہ کا کام متاثر ہو گیا ہے ،بلکہ آن لائن شاپنگ سے لیکر سپیڈ پوسٹ اور رجسٹرڈ لیٹرنگ کے کام میںاضافہ ہو گیا ہے ۔کشمیر وادی کے شہروں اور قصبوں میں ہزاروں ایسے ڈاک ڈبے ہیں جو زنگ آلودہ ہو چکے ہیں، تاہم محکمہ ڈاک کو یہ اُمید ہے کہ ان ڈبوں میں کوئی نہ کوئی ڈاک یا پھر

مزید خبرں

لوک ادب کسی بھی خطے کی ثقافتی جمالیات کا عکاس:منوج سنہا |  درخشاں اندرابی کا شعری مجموعہ’’ ا￿حساسن ہُن￿د شیشہِ خانہ ‘‘ کااجراء سری نگر// لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے آج مرکزی وقف کونسل کی رکن ، چیئرپرسن وقف ڈیولپمنٹ کمیٹی وزارتِ برائے اقلیتی امور حکومتِ ہند ڈاکٹر درخشاں اندرابی کا ایک شعری مجموعہ’ ا￿حساسن ہُن￿د شیشہِ خانہ ‘ عنوان سے جاری کیا۔ لیفٹیننٹ گورنر نے ڈاکٹر اندرابی کو سرزمین جموںوکشمیر کے روحانی اور عالمانہ روایت کی عکاسی کرنے اور مختلف سماجی مسائل اَپنے کلام میں اُٹھانے کے لئے سراہا۔ اُنہوں نے کہا کہ لوک ادب کسی بھی خطے کی ثقافتی جمالیات کا عکاس ہوتا ہے جس کو ترقی اور تحفظ دینے کی ضرورت ہے۔اُنہوں نے ڈاکٹر اَندرابی کو اَپنی شاعری مجموعہ کا دوسری زبانوں میں ترجمہ کرنے کی صلا ح دی تاکہ ملک کے باقی لوگ بھی اس کو پڑھ سکیں۔اِس موقعہ پر ب

کیرن سیکٹر میں کواڈ کاپٹر گرایا گیا

کپوارہ//فوج نے کہا ہے کہ کیرن سیکٹر میں لان آف کنٹرول پر ایک ڈرون کیمرہ گرایا گیا۔یہ واقعہ ہفتہ کے روز شمالی ضلع کپوارہ کے کیرن سیکٹر میں رونما ہوا ۔فوج کی جانب سے جاری کئے گئے ایک بیان میں کہاگیا کہ ہندوستانی فوج نے پاکستانی فوج کا ایک ڈرون کیمرہ(Quadcopter) گرایا گیا۔فوج نے کہا کہ ڈرون کیمرہ نے فضائی حدود کی خلاف ورزی کی تھی ۔فوج کا کہنا ہے کہ کواڈ کاپٹر صبح 8بجکر 10منٹ پر کنٹرول لائن  عبور کرگیا جسے اگلی چوکی پر تعینات فوجی اہلکار نے فائر کر کے گرایا۔کواڈ کاپٹر کنٹرول لائن کے70میٹر اندر گرا۔ ادھر شام ساڑھے 6 بجے پاکستان نے دیگوار پونچھ میں لائن آف کنٹرول پر بھارتی فوج کی چوکیوں کو نشانہ بنایا۔دفاعی ترجمان نے کہا کہ بھارت کی جانب سے جوابی کارروائی کی گئی۔اسکے علاوہ پاکستانی رینجرس نے سانبہ سیکٹر میں راج پورین گائوں میں گولہ باری کی۔ اسکے علاوہ ہیرا نگر سیکٹر میں فقیرا اور منیا

سوپور میں جنگجوئوں مخالف آپریشن ،گھر گھر تلاشیاں

سوپور //سیکورٹی فورسز نے ہارون زینہ گیر سوپور نامی گائوں کامحاصرہ کیا اور بڑے پیمانے پر تلاشیاں لیں۔فورسز کو بستی میں جنگجوئوں کی موجودگی کی اطلاع ملی تھی جس کے بعد 22آر آر، سی آر پی ایف اور پولیس نے بستی کو محاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی لی ،  جو کئی گھنٹوں تک جاری رہی،تاہم کسی کی گرفتار عمل میں نہیں لائی گئی اور نہ ہی کوئی قابل اعتراض چیز برآمد ہوئی ۔یاد رہے واڈورہ سوپور کے دو نوجوانوں عابد مشتاق وار اور معراج الدین وار نے تین روز قبل فورسز کے سامنے سرنڈر کیا۔ وہ جنگجوئوں کیساتھ شامل ہوئے تھے تاہم جب انہوں نے خود سپردگی کی تو ان کے پاس کوئی اسلحہ نہیں تھا۔  

۔4افسران کے تبادلے

 سرینگر// یوٹی انتظامیہ نے سیول ایڈمنسٹریشن میں 4افسران کے تبادلے عمل میں لائے۔ ایڈیشنل سیکریٹری جی اے ڈی کی طرف سے جاری احکامات کے مطابق محکمہ جل شکتی کے ایڈیشنل سیکریٹری پنکج مگوترہ کو تبدیل کرکے محکمہ زراعت میں ایڈیشنل سیکریٹری کے عہدے پر تعینات کردیا گیا ہے۔ وہ محکمہ باغبانی کے ایڈیشنل سیکریٹری کا اضافی چارج بھی سنبھالیں گے۔ تعیناتی کا انتظار کررہے محمد شاہد سلیم کو ایڈیشنل سیکریٹری ہائوسنگ اینڈ اربن ڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ تعینات کیا گیا ہے۔ پاور ڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ کے ایڈیشنل سیکریٹری ارون کشور کوتوال کو تبدیل کرکے ایڈیشنل سیکریٹری جل شکتی محکمہ تعینات کیا گیا ہے۔ شکایتی سیل کے ایڈیشنل سکیریٹری ڈاکٹر دیس راج بھگت ، جن کے پاس پلاننگ ڈیولپمنٹ کا اضافی چارج بھی تھا کو تبدیل کرکے ایڈیشنل سیکریٹری پاور کے عہدے پر تعینات کرنے کو منظوری دی گئی۔  

میں نے ترنگے کی توہین نہیں کیبھاجپا توہین کی مرتکب ہوئی ہے: محبوبہ مفتی

سری نگر// پی ڈی پی صدر اور سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ میں نے ترنگے کی توہین نہیں کی ہے بلکہ اس کی توہین بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) لیڈروں نے اس دن کی تھی جب انہوں نے کٹھوعہ میں ایک نو سالہ بچی کی عصمت دری کرنے والوں کے حق میں اس ترنگے کو لہرایا تھا۔بتادیں کہ پی جے پی کے جموں و کشمیر یونٹ نے محبوبہ مفتی کے اس بیان کہ میں تب تک کوئی جھنڈا نہیں اٹھاؤں گی جب تک نہ جموں وکشمیر کا جھنڈا واپس ملے گا، کو گستاخی سے تعبیر کرتے ہوئے ان کی گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے۔محبوبہ مفتی نے اس کے ردعمل میں اپنے ایک ٹویٹ میں کہا،’’جھنڈا تنوع اور پرامن بقائے باہمی کا مظہر ہوتا ہے۔ اگر کسی نے ترنگے کی توہین کی ہے تو وہ بی جے پی ہے جو اقلیتی فرقوں کو دبا رہی ہے اور نفرت کے بیج بو رہی ہے۔ بی جے پی لیڈروں نے جھنڈے کی اس دن توہین کی تھی جب انہوں نے نو سالہ بچی کی عصت دری کرنے والوں کے ح

جے کے بینک چیئرمین اورکل ہندبیوپار منڈل کے درمیان میٹنگ

سرینگر// فیڈریشن آف آل انڈیا بیوپار منڈل کے سرکردہ کارکنوں اور جموں و کشمیر بینک کے چیئرمین و منیجنگ ڈائریکٹر راجیش کمار چھبر کے درمیان  آن لائن میٹنگ منعقد ہوئی ۔  فیڈریشن نے کئی تجاوز بینک کے سامنے پیش رکھیں جن کا بینک چیئرمین نے خیر مقدم کیا۔ جے کے بینک چیئرمین نے فیڈریشن کے زعماء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بینک تمام کاروباری حلقوں کی ترقی کا خواہاں ہے اور انکی تجاویز پر مکمل غور و خوض کیا جائیگا۔ انہوں نے کہا کہ GECLاسکیم کے تحت  بینک نے بہتر کارکردگی دکھائی اور تمام سرکاری اسکیموں کی عمل آوری میں بینک پیش پیش رہا۔ انہوں  نے کہا کہ بینک نے 47 ہزار سے زائد افراد میں اس اسکیم کے تحت لگ بھگ 1681کروڑ روپے واگزار کئے ہیں جس میں سے 1387.40کروڑ روپے صرف جے اینڈ کے یو ٹی میں تقسیم کئے گئے ۔فیڈریشن کے صدر نے جے کے بینک کے موجودہ نظام کار کو سراہتے ہوئے کہا کہ بینک کی ک

منشیات مخالف مہم

کپوارہ/اشرف چراغ //کپوارہ پولیس کی جانب سے تحت پولیس لائنز کپوارہ میں ایک بیداری پروگرام کا انعقاد کیا گیا جس میں سو سے زائد طلاب نے شرکت کی جس میں ایڈیشنل سپر انٹنڈنٹ پولیس افروز احمد کے علاوہ ڈی ایس پی ہیڈ کواٹر مدثر احمد ،ایس ڈی پی او لولاب اور انسپکٹر ظہور احمد کے علاوہ دیگر افسران موجود تھے ۔ایڈیشنل ایس پی نے کہا کہ منشیات کا مکمل خاتمہ کرنے کے لئے سماج کے ہر طبقے کو آگے آ نا ہو گا اور اس بدعت پر قابو پانا وقت کی اہم ضرورت ہے ۔پروگرام میں دیگر مقررین میں پروفیسر فیا ض احمد ،ڈاکٹر سیف اور ایڈوکیٹ نادیہ نے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔انہوں نے کہا کہ نوجوان نسل کو بچانے کے لئے منشیات کی بدعت پر قابو پانا ضروری بن گیا ہے اور عوام میں ایک جانکاری مہم چلانی ہے کیونکہ نو عمر لڑکے کس طرح سے منشیات کے عادی ہوجاتے ہیںاور پھر آہستہ آہستہ اس کے اثرات پورے خاندان اور سماج پر پڑتے ہیں۔ انہو ں

زچہ و بچہ ہسپتال کنگن 15برسوں سے تشنۂ تکمیل

کنگن// کنگن میں زچہ وبچہ ہسپتال گذشتہ پندرہ برس سے تشنۂ تکمیل ہے جس کی وجہ سے کنگن اور مضافاتی علاقوں کی خواتین کو سرینگر کا رخ کرنا پڑتا ہے۔100 بیڈ پر مشتمل اس ہسپتال کا سنگ بنیاد 2005میںرکھا گیا اور اس وقت کی سرکار نے عوام کو یقین دلایا تھا کہ تین برسوں کے اندراندرہسپتال پر کام مکمل ہوگا ۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ کئی بار ضلع انتظامیہ اور سرکار سے اس سلسلے میں اقدامات کی اپیل کی گئی لیکن کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔ 15برس قبل 27.55کروڑ روپئے اس ہسپتال کی تعمیر کے لئے مختص کئے گئے تھے لیکن آج ٹھیکیدار کا کہنا ہے کہ فنڈس کی عدم دستیابی کے باعث کام رکا پڑا ہے۔ علاقے کے لوگوں نے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا سے مطالبہ کیا کہ اسپتال کو قابل استعمال بنانے کیلئے سرعت سے کام شروع کیا جائے تاکہ لوگوں کو مزید مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔ چیف میڈکل افسر گاندربل ڈاکٹرمعراج الدین صوفی نے اس ضمن میں کشمیر

بلتی محلہ کنگن سڑک خستہ حال

کنگن//بلتی محلہ کلن گنڈ میں گذشتہ آٹھ برس سے میکڈم نہ بچھانے کی وجہ سے مقامی آبادی کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔مقامی لوگوں نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ سرینگر لیہ شاہراہ سے بلتی محلہ کلن تک 2.5کلو میٹر سڑک کو آٹھ برس قبل پی ایم جی ایس وائی نے تعمیر کیالیکن آج تک اس سڑک پر میکڈم بچھانے کیلئے کوئی اقدام نہیں کیا گیا جس کی وجہ سے مقامی لوگوں کو عبورو مرور میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ مقامی لوگوں نے بتایا کہ گذشتہ ہفتہ بلتی محلہ کلن میں ایک رہائشی مکان آگ کی ایک واردات میں خاکستر ہوگیا کیونکہ سڑک کی خستہ حالی کی وجہ سے فائر سروس کی گاڑی کو وہاں پہنچنے میں دشواریوں کا سامنا کرنا پڑا۔ مقامی لوگوں نے ضلع انتظامیہ گاندربل سے مطالبہ کیاہے کہ سڑک پر فوری طور میکڈم بچھایا جائے تاکہ موسم سرما کے دوران لوگوں کو مزید مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے۔

دیرسویرمرکزکو دفعہ370کوبحال کرنا ہی پڑے گا: سوز

سرینگر//سابق مرکزی وزیرپروفیسر سیف الدین سوزنے پیپلزڈیموکریٹک پارٹی کی صدر محبوبہ مفتی کے اِس بیان کاخیرمقدم کیا ہے جس میں موصوفہ نے کہا ہے کہ ریاست جموں کشمیرکاجھنڈا یونین کے پرچم کے ساتھ لہراتارہا ہے۔ایک بیان میں سوز نے اس امر کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ پہلے ایوان اسمبلی میں اُس وقت کے رہنماشیخ محمد عبداللہ نے آئین سازاسمبلی کے اراکین کی وساطت سے کہا تھا کہ کشمیرکاجھنڈادراصل کشمیریوں کی سیاسی جدوجہدکاغمازہے اور یہ ہمیشہ قومی پرچم کے ساتھ لہراتا رہے گا۔انہوں نے کہا کہ اس پس منظر میں محبوبہ مفتی کے دعویٰ کی دلیل کشمیریوں کی جدوجہد ہے ۔پس مرکزمیں نریندرمودی کی زیرقیادت حکومت کاریاست جموں کشمیرکادرجہ ختم کرکے ریاست کے جھنڈے کوکالعدم کرناغیرآئینی اور قانونی لحاظ سے غلط ہے۔انہوں نے کہا کہ اس لئے یہ ضروری ہے کہ جب تک مرکزی حکومت ریاست کی پوزیشن بحال کرکے دفعہ370 کا اثر و نفوذقائم نہیں کرتی

ملازمین کی جبری سبکدوشی کے قانون پرسیاسی اورٹریڈ یونین رہنما برہم

سرینگر//سول سروس قواعد میں ترمیم کرکے ملازمین کو بائیس سال نوکری مکمل کرنے یااڑتالیس برس کا ہونے پر سبکدوش کئے جاسکنے کے سرکاری فیصلے کی سیاسی اور ٹریڈ یونین رہنمائوں نے شدید مذمت کرتے ہوئے اس کی فوری منسوخی کا مطالبہ کیا ہے۔جموں کشمیر پردیش کانگریس کمیٹی نے ملازمین کی سبکدوشی سے متعلق حکومت کے حالیہ فیصلے کی مذمت کی ۔پارٹی نے ملازمین کی سبکدوشی سے متعلق نئے ضابطوں کو ملازم کش قرار دیتے ہوئے ان کے بھیانک نتائج سے آگاہ کیا۔پارٹی کے جموں کشمیرصدر غلام احمد میر نے کہا کہ اس اقدام کے دوررس نتائج ظاہر ہوں گے اور اس کا مقصد جموں کشمیرکے ملازمین کو خوفزدہ کرنا ہے کو کسی طور برداشت نہیں کیاجائے گا۔میر نے کہا کہ ان اقدامات کا مقصد لوگوں میں نفسیاتی خوف پیدا کرنا ہے اورانہیں مختلف طریقوں سے ڈرانا ہے تاکہ لوگوں کو حقیقی آواز کو دبایا جائے ۔غلام احمد میرنے کہا کہ یہ نوٹیفیکیشن ملازمین میں عدم تح

وادی میں موسم فی الحال خشک رہے گا:محکمہ موسمیات

سرینگر//وادی کشمیر میں موسم سرد ہونا شروع ہو چکا ہے ۔سنیچر کو بعد دوپہر مطلع ابر آلودہ رہنے کے نتیجے میں سردی میں معمولی اضافہ دیکھنے کو ملا ہے،تاہم محکمہ موسمیات نے وادی کے موسم کے بارے میں پیشن گوئی کرتے ہوئے کہا ہے کہ وادی میں اتوار کے روز اگرچہ دن بھر موسم  خشک رہ سکتا ہے تاہم شام کے بعدبالائی علاقوں میں ہلکی بوندا باندی کاامکان ہے ،تاہم پیر پنچال کے آر پار موسم خشک رہے گا ۔محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ سرینگر میں دن کا زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 22.9ڈگری تک جا پہنچا ہے جبکہ رات کا کم سے کم درجہ حرارت 2.7ڈگری تک رہا ۔اسی طرح پہلگام میں دن کا زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 21.0اور رات کا کام سے کم درجہ حرارت 0.5ڈگری تھا۔ سیاحتی مقام گلمرگ میں زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 12.2ڈگری اور رات کا کم سے کم درجہ حرارت 3.5ڈگری ریکارڈ کیا گیا  ۔ محکمہ موسمیات کے ڈپٹی ڈائریکٹر مختار احمد نے ک

دراس اور منی مرگ میں ہلکی برف باری

کنگن//وادی میں جاری شدید سردی کی لہر کے بیچ سنیچروار شام سے دراس اور منی مرگ میں ہلکی برفباری کا سلسلہ شروع ہوا جس کی وجہ سے سردی کی لہر میں مزید اضافہ ہوا۔وادی میں ایک ہفتہ سے جاری سردی کی لہر میں اضافہ ہوا ہے۔ اس دوران سنیچروار کی شام سے منی مرگ، دراس اور اس کے مضافات میں ہلکی برفباری شروع ہوگئی اور ان علاقوں کے لوگوں نے گرم ملبوسات کا استعمال شروع کیا۔ ایس ایچ او دراس منظور حسین میر نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ منی مرگ اور دراس میں شام سے ہلکی برفباری شروع ہوگئی ،تاہم سرینگر لداخ شاہراہ پر گاڑیوں کی آمدورفت جاری ہے۔  

تازہ ترین