ناشری ٹنل کے آر پار کئی گھنٹوں تک ٹریفک جام

بانہال// جموں سرینگر شاہراہ پر کئی گھنٹوں تک ٹریفک جام لگ گیا۔ ناشری ٹنل کے آرپار اور شیر بی بی رامسو کے علاقوں میں ٹریفک جام میں پھنسی گاڑیوں کو کئی گھنٹوں بعد ہی ٹریفک جام سے چھٹکارا مل گیا۔ کئی مسافروں نے کشمیر عظمی کو فون پر بتایا کہ وہ جمعرات کی صبح 8بجے جموں سے نکلے لیکن ادہمپور سے رام بن تک کا سفر طے کرنے میں 6سے 7 گھنٹے لگ گئے۔ سروسز سلیکشن میں بورڈ کے امتحانات میں شامل ہونے کے بعد واپس بانہال آنے والے امیدواروں نے کہا کہ وہ صبح سات بجے جموں سے بس میں سوار ہو کر نکلے لیکن شام سات بجے وہ رامسو کے نزدیک ٹریفک جام میں ہی پھنسے تھے۔ اس دوران بانہال کے شابن باس علاقے میں جمعرات کی صبح جموں سے کشمیر آنے والی ایک ٹرک کیچڑ میں پھنس گئی اور ٹریفک متاثر ہوا۔ بعد میں ٹرک کو ایک طرف کھینچ کر شاہراہ جو بحال کیا گیا۔ ادھر ضروری مرمت کے پیش نظر آج یعنی جمعہ کو سرینگر جموں شاہراہ ٹریفک کی

ڈوڈہ میں روزگار میلہ،نجی کمپنیوں میں 280امیدواروں کی بھرتی

 ڈوڈہ //انتظامیہ کی جانب سے محکمہ سکل ڈیولپمنٹ و محکمہ روزگار و کونسلنگ مرکز کے اشتراک سے ضلع صدر مقام ڈوڈہ میں ایک روزہ روزگار میلہ کا انعقاد کیا گیا جس دوران مختلف نجی کمپنیوں میں 280 امیدواروں کی بھرتی کی گئی جبکہ 45 تعلیم یافتہ نوجوانوں کو 3.5کروڑ روپے کا کم شرح پر قرضے فراہم کئے گئے۔ایک روزہ روزگار میلے کا افتتاح ڈپٹی کمشنر ڈوڈہ ڈاکٹر ساگر ڈی ڈوئی فوڈے نے ڈی ڈی کونسل چیرمین دھنتر سنگھ کوشل کی موجودگی میں کیا۔اس دوران مختلف سرکاری محکموں کی جانب سے اسٹالز لگاکر مرکزی معاونت والی سکیموں کی نمائش کی گئی. اس موقع پر بولتے ہوئے ڈی سی نے بے روزگار نوجوانوں پر زور دیا کہ وہ نجی کمپنیوں کی طرف توجہ مرکوز کریں جہاں پر روزگار کے کافی وسائل دستیاب رہتے ہیں۔ انہوں نے نوجوانوں سے اپیل کی کہ وہ وہ اپنی سوچ کو تبدیل کریں اور روزگار حاصل کرنے کے بجائے روزگار دینے والوں میں سے بن جائیں۔انہوں

گورنمنٹ مڈل اسکول گھمبیر مغلاں کی حالت انتہائی خراب

منجاکوٹ// گورنمنٹ مڈل اسکول گھمبیر مغلاں کی حالت انتہائی خستہ ہوچکی ہے۔سکول میںواشنگ روم، کھیل کے میدان، سائنس لیبارٹری، کمپیوٹر لیبارٹری، لائبریری، وغیرہ کی مناسب سہولیات نہیںہیں۔چیئرمین جے اینڈ کے ہیومن ڈیولپمنٹ فاؤنڈیشن راجوری سعید مغل نے کہا کہ حکومت کے پاس پارک اور باغات بڑھانے، اور کمیونٹی ہالوں، سرکاری دفاتر، شاپنگ کمپلیکس اور مالز کی تعمیر کے لئے زمین اور فنڈز دستیاب رہتے ہیں لیکن جب بات اسکول کی عمارتوں کی تعمیر کی ہو تو اس کے پاس نہ زمین ہوتی ہے اور نہ ہی فنڈز ہوتے ہیں جس سے اسکولی بچوں کو تعلیم حاصل کرنے میں سخت دشواریوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ لوگوں اور سعید مغل نے گورنر انتظامیہ اور ڈپٹی کمشنر راجوری سے مطالبہ کیا کہ اسکول کی عمارت کے کام پر توجہ دی جائے تاکہ بچے اپنی تعلیم کو جاری رکھ سکیں۔

گول میں سڑکوں کی حالت انتہائی ا بتر

 گول//گول سب ڈویژن میں اکثر سڑکوں کی حالت نہایت ہی ابتر ہے جس وجہ سے نہ صرف عام لوگ پریشان ہیں بلکہ ٹرانسپورٹ سے وابستہ طبقہ بھی کافی مصیبتوں کا سامنا کر رہا ہے ۔ حالیہ دنوں میں محکمہ تعمیرات عامہ نے گول سلبلہ روڈ پر جے سی بی سے نالیاں کھود کر رکھیں اور چند دنوں کے بعد پھر ان نالیوں کو اسی مشین سے بھر دیں ۔ یہ بات سمجھنے سے قاصر ہے کہ محکمہ ایسا کیوں کر رہا ہے ۔ کئی مقامات پر سڑک کے بیچوں بیچ مٹی ڈال کر رکھی جس وجہ سے پیدل چلنے والوں کو بھی کافی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔ اس طرح سے باقی سڑکوں بالخصوص وہ سڑکیں جو پی ڈبلیو ڈی کے تحت ہیں دہائیوں سے ان سڑکوں کی نالیاں نہیں بن پا رہی ہیں ۔ ہر سال محکمہ اور انتظامیہ سے لوگ استدعا کرتے آئے ہیں لیکن اس کی طرف کوئی توجہ نہیں دیتا ہے ۔گول بائی پاس روڈ ، گول داچھن روڈ ، پرتمولہ لنک ، گراٹ موڑ سے مکجی روڈ تمام روڈوں کی حالت نہایت ہی خ

شاہراہ پر بھاری پسی گر آئی

بانہال//  جموں سرینگر شاہراہ پر بدھ کو گاڑیوں کی آمدورفت کم از کم 8 گھنٹوں تک بند رہی۔ڈی ایس پی ٹریفک بانہال شمشیر سنگھ نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ بدھ کی علی الصبح تین بجے بانہال کے نزدیک شابن باس کے مقام پر ایک بھاری پسی کیساتھ بہت سارا ملبہ سڑک پر گر آیا اور ایک ٹینکر بھی پسی کے ملبے میں دھنس گیا۔ انہوں نے کہا کہ تعمیراتی کمپنی کی مشینری کی مدد سے خالی ٹینکر کو کھینچ کر ملبے سے باہر نکالا گیا اور سڑک کے باقی حصے پر گرے بھاری ملبے کو صاف کرنے کا آغاز کیا گیا جس میں 8گھنٹے لگ گئے۔ملبہ صاف کرنے کے بعد ٹریفک کو دن کے گیارہ بجے دوبارہ بحال کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ بانہال پسی اور جواہر ٹنل کے درمیان شاہراہ بند ہونے کی وجہ سے درماندہ ٹریفک کو بدھ کی شام تک نکالا گیا۔ آج ٹریفک کو جموں سے سرینگر کی طرف آنے کی اجازت ہوگی۔   

رام بن ضلع میں ٹھوس فضلہ ٹھکانے لگانے کی سہولت نہیں

رام بن//صوبہ جموں کے ضلع رام بن کی تین میونسپل کمیٹیوں بٹوت، رام بن اوربانہال میں ٹھوس فضلہ کو ٹھکانے لگانے کی سہولت کی عدم دستیابی کی وجہ سے جابجا کوڑاکرکٹ خاص کرپالی تھین اور پلاسٹک کے ڈھیر نظر آتے ہیں اور خاص طور پر چناب اور بشلڑی نالہ کے کناروں کو کوڑا دان بنایاگیاہے۔رہائشیوں کے ایک گروپ نے بتایا کہ میونسپل کمیٹی رام بن اس مسئلے کو حل کرنے کے لئے کچھ نہیں کر رہی ہے سوائے اس کے کہ تمام کوڑے کو دریائے چناب کے پشتے میں پھینک دیا جا رہا ہے جو ماحول کو تباہ کرنے کے لئے تشویش کا باعث بن رہا ہے۔لوگوں نے شکایت کی ہے کہ صوبہ جموں کے اربن لوکل باڈی (یو ایل بی) کے حکام ان شہروں میں کچرے کے ڈھیر پھینکنے کے لئے زمین کی نشاندہی کرنے میں بری طرح ناکام رہے ہیں۔میونسپل کمیٹی کے ملازمین نے ہمیں بتایا کہ ہم بے بس ہیں کیونکہ ہمارے پاس شہروں سے جمع شدہ کوڑا کرکٹ سڑک کے کنارے پھینکنے کے سوا کوئی چارہ ن

قومی شاہراہ کے فلائی اوورمقامات،کام کی پیشرفت کا جائزہ لیاگیا

 رام بن //ڈپٹی کمشنر رام بن مسرت اسلام نے کام کی پیشرفت کا جائزہ لینے کے لئے رام بن میں فلائی اوور سائٹ کا دورہ کیا۔ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ہربنس لال ، ایگزیکٹو انجینئر پی ایچ ای ،پی ڈبلیو ڈی کے انجینئرز ، این ایچ اے آئی اور گیمون تعمیرات کمپنی کے نمائندے بھی ان کے ساتھ تھی۔معائنہ کرنے کے بعد ڈی سی نے نیشنل ہائے وے اتھارٹی افسران کو ہدایت کی کہ وہ جاری کردہ تمام ہدایات اور فیصلوں پر عمل درآمد کریں۔انہوںنے گیمن کو ہدایت کی کہ وہ چار گلیاروںپر تعمیراتی کاموں کو تیز کرے۔بعدازاں ڈی سی نے موٹر وہیکل کے ڈرائیونگ ٹیسٹ کیلئے ٹرائل سائٹ کا دورہ کیا اور محکمہ کی مختلف سرگرمیوں کا جائزہ لیا۔  

جواہر ٹنل کے قریب ٹرک میں ڈرائیور کی پراسرار موت

بانہال+سرینگر//جواہرٹنل کے قریب سرینگر جموں شاہراہ پراتوار کی شب ایک ٹرک ڈرائیور کی پراسرارحالات میں موت واقع ہوئی جبکہ منورآباد میں مدھیہ پردیش کاایک سیاح حرکت قلب بند ہونے سے فوت ہوا ۔معلوم ہوا ہے کہ جواہرٹنل پر تعینات بانہال پولیس کے اہلکاروں نے ایک ٹرک میں ڈرائیور کو بے ہوشی کی حالت میں پاکر اُسے فوری طور ایمرجنسی اسپتال بانہال پہنچایا جہاں ڈاکٹروں نے اُسے مردہ قراردیا۔ڈرائیور کی شناخت منظور احمد لون ولدعبدالرحمن لون ساکن ڈالگیٹ سرینگر کے طور ہوئی ۔پولیس قانونی لوازامات پوراکرنے کے بعد میت کو ورثا کے سپردکیا۔بتایا جاتا ہے کہ بظاہر ڈرائیور کی موت دل کادورہ پڑنے سے واقع ہوئی ہے تاہم پولیس نے کیس درج کرکے تحقیقات شروع کردی ہے۔ منور آبادسرینگر میں مدھیہ پردیش کا سیاح پیر کی صبح حرکت قلب بند ہونے سے فوت ہوگیا۔منور آباد سرینگر میں موجود ابن غنی نامی ہوٹل میں مدھیہ پردیش سے آئے ہوئے س

چناب کے پہاڑوں پر ہلکی برفباری، میدانی علاقوں میں بارش

کشتواڑ+ڈوڈہ//چناب خطہ کے بالائی و میدانی علاقوں میں دوسرے روز بھی برفباری وبارشوں کا سلسلہ جاری رہا جسکے سبب عوام کو سخت مشکلات سے دوچار ہونا پڑا۔ کشتواڑ میںجہاں کل دن بھر میدانی علاقوں میں ہلکی بارش ہوئی وہیں سنیچر کو بھی بارشوں کا سلسلہ دوپہر تک جاری رہا جسکے بعد موسم میں ہلکی بہتری ہوئی۔ ضلع کے بالائی علاقوں میں بھی کئی انچ برفباری درج کی گئی جس کے سبب سردی کی شدت میں بھی اضافہ ہوا۔اور درجہ حررات میں متواتر گرواٹ درج کی گئی۔جبکہ دوسرے روز بھی سنتھن ٹاپ پر کشتواڑ اننت ناگ قومی شاہراہ سے برف ہٹانے کا کام متاثر رہا۔ بارشوں سے زمین دار طبقہ نے خوشی کی سانس لی ہے۔ میدانی علاقوں میں موسلادھار بارشوں سے متعدد سڑکیں زیر آب آئیں جبکہ قصبہ کی کئی گلی کوچے گندے پانی سے بھرگئے جبکہ جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر لگ گئے ۔قصبہ و دیگر علاقہ جات میں بجلی کی آنکھ مچولی سے عوام کو سخت مشکلات سے دوچار ہونا

درجہ چہارم امتحانات:پہلے مرحلے میں 2726 امیداورں نے حصہ لیا

 کشتواڑ// درجہ چہارم کی اسامیوں کے لئے ضلع انتظامیہ نے  پہلے مرحلے کے تحت آج شفاف طور امتحانات منعقد کئے جو ضلع ترقیاتی کمشنر کشتواڑ اشوک شرما کی نگرانی میں ہوئے۔ضلع ترقیاتی کمشنر کشتواڑ اشوک کمار نے ایڈیشنل ضلع ترقیاتی کمشنر کشتواڑ پون پریہار کے ساتھ مل کر مختلف امتحانی مراکز کا معائنہ کیا اور وہاں سیکورٹی و دیگر انتظامات کا جائزہ لیا۔ جبکہ امتحانی مراکز اور آس پاس کے حفاظتی انتظامات کا بھی جائزہ لیا۔ایڈیشنل ضلع ترقیاتی کمشنر کشتواڑ جو ضلع اوبزروربھی ہے، نے بتایا کہ آج کل 12 نامزد امتحانی مراکز قائم کئے گئے تھے جن میں  کل 3646 امیدواروں میں سے 2726 امیدوارں نے شرکت کی جبکہ اسلامیہ فریدیہ اسکول میں 784 امیدوار شریک ہوئے۔ضلع ترقیاتی کمشنر کشتواڑ نے ان مراکز میں تعینات حکام کو کہا کہ امیداواروں کو امتحان کے دوران کسی قسم کی پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے اور اس بات کو یقی

پسماندہ علاقوں میں صحت و تعلیمی ڈھانچہ کی مضبوطی حکومت کی اولین ترجیح :ڈاکٹر جتندرا سنگھ

 ڈوڈہ //پسماندہ و دور افتادہ علاقوں میں صحت و تعلیمی ڈھانچہ مضبوط بنانا حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے. وزیر اعظم مودی کی قیادت میں جموں و کشمیر میں تعمیر و ترقی کا ایک نیا باب شروع ہوا ہے. ان باتوں کا اظہار وزیر اعظم دفتر میں وزیر مملکت ڈاکٹر جتندرا سنگھ نے گورنمنٹ میڈیکل کالج ڈوڈہ ایم بی بی ایس سال اول کی کلاسیں شروع ہونے کے موقع پر منعقد ایک افتتاحی تقریب سے مخاطب ہوتے ہوئے کیا. تقریب میں لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے بذریعہ ویڈیو کانفرنس شرکت کی جبکہ ایل جی کے مشیر راجیو راج بھٹناگر فائنانشل کمشنر اٹل ڈلو وزیر موصوف کے ہمراہ تھے. مرکزی وزیر مملکت نے اس موقع پر بولتے ہوئے کہا کہ ایم بی بی ایس کی کلاسوں کی شروعات ایک تاریخی قدم ہے اس سے نہ صرف مقامی طلاب بلکہ خطہ کی عوام کو بھی راحت ملے گی. انہوں نے کہا کہ جی ایم سی ڈوڈہ نہ صرف ایک ضلع بلکہ چناب ویلی کی عوام کو بہتر طبی سہولیا

رام بن کے گاندھری علاقے میں آگ کی واردات

بانہال// جمعہ کی رات رام بن کے گاندھری بلاک ہیڈکوارٹر پر آگ کی ایک ہولناک واردات میں کم از کم چھ دکانیں اور ایک رہائشی مکان  لاکھوں روپئے کے مال و اسباب سمیت جل کر راکھ ہوگئے ہیں۔ بلاک ہیڈکوارٹر کی مارکیٹ میں پیش آئے اس ہولناک واردات میں ایک آلٹو کار اور تین موٹر سائیکل بھی آگ کے شعلوں میں راکھ ہوئے۔ ضلع ہیڈکوارٹر رام بن سے آگ سے متاثرہ علاقہ گاندھری بہت دور ہے اور اس پاس کہیں فائر سروسز نہ ہونے کی وجہ سے رام بن سے فائر سروسز کی مشینری کو رابط سڑک کی تنگی کی وجہ سے تاخیر کا سامنا رہا۔ جبکہ ڈپٹی کمشنر رام بن مسرت الاسلام کی ٹویٹ کے مطابق گاندری بلاک ہیڈکوارٹر کی آگ بجھانے پہنچی ایک فائر گاڑی کو نقصان بھی پہنچا ۔انہوں واقع پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے نقصانات کا جائزہ لینے کیلئے ٹیمیں روانہ کرنے کی ہدایت دی ہے اور سنیچر کے روز ڈپٹی کمشنر رام بن مسرت الاسلام نے دیگر افسروں کے ہم

کشتواڑ اور گول کے پہاڑوں پر تازہ برفباری

 کشتواڑ +گول//کئی روز تک موسم خوشگوار رہنے کے بعد جمعہ کو کشتواڑ اور گول کے میدانی علاقوں میں بارشیں ہوئیںجبکہ بالائی علاقوں میں برف باری کے نتیجے میں درجہ حرارت میں معمولی کمی واقع ہوئی ہے۔ ضلع کشتواڑ کے میدانی علاقوں میں اگرچہ بہت کم بارش ریکارڈ کی گئی تاہم پہاڑوں پر ہونے والی برف باری کے نتیجے میں سفید چادر بچھ گئی ہے۔سنتھن ٹاپ ، مرگن ٹاپ پر کئی انچ تازہ برف باری ہونے کے سبب کشتواڑ سنتھن شاہراہ پر برف ہٹانے کے کام میں روکاوٹ آئی ۔حکام کا کہنا ہے کہ موسم سازگار ہونے کے بعد ہی شاہراہ پر دوبارہ کام شروع کیا جائے گا اور سڑک کو کھولنے کےلئے بھی اقدامات کئے جائیں گے۔ تازہ برفباری و بارشوں کے سبب درجہ حرارت میں نمایا کمی درج ہوئی ہے اور لوگوں نے گرم ملبوسات کا استعمال پھر سے کرنا شروع کردیاہے۔سب ڈویژں گول کے میدانی علاقوں میں بارشوں کا سلسلہ جاری ہے اور پہاڑی علاقوں میں ہلکی برف باری

سیکرٹری دیہی ترقی کا ڈوڈہ دورہ | مختلف اسکیموں کی پیش رفت کا جائزہ لیا

ڈوڈہ //سیکرٹری دیہی ترقی شیتل نندا نے جمعہ کو ڈوڈہ کا دورہ کرکے محکمہ کی زیرنگرانی چلائی جارہی مختلف اسکیموں کی پیش رفت کا جائزہ لیا اس دوران انہوں نے آفیسران کو ہدائت دی کہ وہ تعمیری کاموں میں سرعت لا کر وقت پر مستحقین کو رقومات واگذار کریں۔ سیکرٹری نے مختلف منصوبوں پر سست روی برتنے پر مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے بلاک ڈیولپمنٹ آفیسران پر ترقیاتی کاموں کو وقت پر مکمل کرنے پر زور دیا۔ میٹنگ میں ڈی سی ڈوڈہ ڈاکٹر ساگر ڈی ڈوئی فوڈے ،ڈائریکٹر دیہی ترقی جموں سدرشن کمار، ایڈیشنل سیکرٹری پران سنگھ، جائنٹ ڈائریکٹر منصوبہ بندی سبھاش چندر، اے سی ڈی ڈوڈہ پریم سنگھ ،اے سی ڈی کشتواڑ کشور سنگھ ،ڈی پی او ادریس لون، ڈی آئی او محمد اشرف وانی و دیگر آفیسران نے شرکت کی۔ سیکرٹری موصوف نے منریگا، پی ایم اے وائی و دیگر اسکیموں کے تحت جاری کاموں کا تفصیلی جائزہ لیا. انہوں نے آفیسران کو سی ڈی پنچائت کے تحت سو فی

گول میں صارفین کےلئے بجلی کا کوئی شیڈیول نہیں | ریسونگ اسٹیشن پر ریلوے کا ٹرانسفارمربھی خراب

گول //سب ڈویژن گول میں کئی روز سے بجلی کی آنکھ مچولی جاری ہے جس کے نتیجے میں لوگ کافی پریشان ہیں ۔ گول میں قائم ریسونگ اسٹیشن پر ریلوے کی جانب سے نصب کیا گیا ٹرانسفارمر ناکارہ ہوا ہے اس سے بھی بجلی کی کٹوتی ہوئی ہے ۔ گول سب ڈویژن کے صدر مقام پر قائم ریسونگ اسٹیشن سے گول، کلی مستا ، داچھن ، ڈھیڈہ وغیرہ علاقوں کو بجلی جاتی ہے جبکہ داڑم میں قائم ریلوے کمپنی کو بھی یہ بجلی سپلائی کی جاتی ہے ۔ گول میں کئی روز سے لگا تار بجلی کی آنکھ مچولی سے جہاں بازار میں پیشہ ورانہ طبقہ کافی پریشان ہے،وہیں یہاں آنے والے لوگ بھی کافی مشکلات سے دوچار ہیں کیونکہ جہاں فوٹو سٹیٹ و دوسرے کام لوگوں کو کرنے ہوتے ہیں وہیں بجلی نہ ہونے کی وجہ سے لوگوں کو کئی دنوں کا انتظار کرنا پڑتا ہے، جہاں ایک یا دو گھنٹے کام کو لگتے ہیں وہیں دن بھی لگ جاتا ہے اور یہ معلوم نہیں ہوتا کہ بجلی کب آئے گی اور کب جائے گی ۔ بجلی کا کوئی

بانہال میں ورکروں کا احتجاج یقین دہانی کے بعد ختم | فورلین ٹنل میں پولیس اہلکاروں کی طرف سے مار پیٹ کا الزام

بانہال// اپنی تعمیر کے آخری مراحل سے گزر رہے بانہال قاضی گنڈ فورلین ٹنل پر جمعرات کی رات سینکڑوں ورکر ، اسوقت ہڑتال پر چلے گئے جب ٹنل کے راستے سے کشمیر سے جموں کی طرف جانے والی ایک پولیس بس میں سوار پولیس اہلکاروں نے ٹنل کے اندر کام کر رہے ورکروں کی مبینہ طور پر مار پیٹ کی ۔ مارپیٹ کے اس واقع میں کئی ورکروں کو چوٹیں آئیں۔جمعہ کی صبح سے ہی فورلین ٹنل کے بانہال سرے پر کام چھوڑ ہڑتال اور دھرنے پر بیٹھے ورکروں کا الزام ہے کہ گزشتہ رات ایک پولیس بس ٹنل سے گزرنے کیلئے آئی اور جاری کام کی وجہ سے وہاں پڑی رکاوٹوں کو ہٹائے جانے تک بس کو رکنے کیلئے کہاگیا ،تاہم جموں کی طرف نکلنے کی جلدی کے عالم میں وہاں کام کرر ہے ورکروں کی پولیس اہلکاروں نے مارپیٹ کرنا شروع کی جس کی وجہ سے ورکر مشینری اور گاڑیوں کو وہیں چھوڑ کر بانہال کی طرف بھاگ نکلنے پر مجبور ہوئے اور آدھی رات سے ہی احتجاجی دھرنے پر بیٹھ گئے۔

جمعہ کو شاہراہ ٹریفک کیلئے بند رہی

بانہال// جمعہ کو ضروری مرمت کے پیش نظر جموں سرینگر شاہراہ، ناشری اور بانہال کے درمیانی حصے میں گاڑیوں کی آمدورفت کےلئے بند رہی اور یہ سلسلہ اکتوبر 2020 کو ایک اعلی سطحی میٹنگ میں لئے گئے فیصلے کے بعد سے مسلسل جاری ہے ۔ جمعہ کے روز ٹریفک بند رکھنے اور فورلین سڑک کا کام اگرچہ شاہراہ کے رکھ رکھاو¿ اور ضروری مرمت کے نام سے منسوب ہے ،تاہم ٹریفک بند رکھ کر جمعہ کے روز سڑک کے ا±ن مقامات پر ضروری کام انجام دیا جاتا ہے جو رواں ٹریفک کے دوران انجام دینا آسان کام نہیں ہے۔ رام بن بانہال سیکٹر میں زیر تعمیرفولین شاہراہ اگرچہ بہت ہی ابتر صورتحال سے گذررہی ہے تاہم بانہال اور ناشری ٹنل کے آر پار کئی مقامات پر سڑک کی کشادگی سے وہاں آنے والی پسیوں اور ٹریفک جام پر بہت حد تک قابو ہوگیاہے۔  

سرما کے چھ ماہ منقطع رہنے والے سب ڈویژن مڑواہ میں تمام دفاترمقفل

کشتواڑ//ضلع کشتواڑ کے دورافتادہ علقہ سب ڈویژن مڑواہ میں بیشتر سرکاری دفاتر گزشتہ کئی دہائیوں سے اپنا کام کاج ضلع ہیڈکوارٹر سے چلارہے جسکے سبب اس علاقہ کی عوام کو معمولی کام کیلئے بھی ضلع ہیڈکوارٹر کا رخ کرنا پڑتا ہے۔ اگرچہ علاقہ کی عوام نے متعدد مرتبہ سرکاری دفاتر کا کام کاج مڑواہ سے چلانے کیلئے درخواستیں دیں تاہم عملی طور کچھ نہیں ہوا اور یہ دفاتر من مانے طور ضلع صدر مقام سے ہی اپنا کام چلانے کو ترجیح دیتے رہے ۔ سب ڈویژنل مجسٹریٹ مڑواہ محسن رضا نے اسی ماہ کی 13 کو سب ڈویژن کے دفاتر کا اچانک دورہ کیا تھا جس دوران 10 دفاترو کوبند پایا گیاجن میں ویٹر نری ڈسپنسری نواپاچی،سی ڈی پی او مڑواہ،تحصیل سپلائی دفتر،ایچ ڈی او دفتر ،ایس ڈی اے او دفتر، سوشل ویلفیئر دفتر، زیڈ ای او دفتر،پرنسپل ہائر اسکینڈری سکول ،رینج افسر فارسٹ رینج و شیپ و وول ڈیولپمنٹ دفتر مڑواہ شامل تھے۔جبکہ دیہی ترقی دفتر مڑواہ م

کشتواڑ سنتھن شاہراہ یکم مارچ کو قابل آمد ورفت ہوگی

جموں//کشتواڑ سنتھن شاہراہ یکم مارچ تک قابل آمدورفت ہوجائے گی جبکہ ڈکسم مرگن ٹاپ شاہراہ کے16کلومیٹر حصہ سے برف ہٹانا ابھی بھی باقی ہے ۔ڈپٹی کمشنر اننت ناگ انشول گارگ نے ڈی سی آفس اننت ناگ میں مرگن و سنتھن ٹاپ سڑکوں کو کھولنے کا جائیزہ لینے کے لئے متعلقہ افسران کا اجلاس طلب کیا۔اجلاس کو بتایا گیا کہ گائورن سے مرگن ٹاپ تک 24 کلو میٹر سڑک کی لمبائی میں سے 08 کلو میٹر کو صاف کرلیا گیا ہے۔ ڈی سی نے پی ایم جی ایس وائی اور ایم ای ڈی محکموں کے ایگزیکٹیو انجینئروںکو ہدایت کی کہ وہ اپنے افراد اور مشینری کو متحرک کریں تاکہ مرگن ٹاپ کی طرف جانے والی سڑک کی باقی لمبائی سے برف کو صاف کیا جائے ۔یہ بھی بتایا گیا کہ ان 24 کلومیٹر میں سے 14 پر تار کول بچھا ہے اور باقی 10 کلو میٹرپر اس سال تارکول بچھائی جائے گی۔سنتھن ٹاپ کی حیثیت کا جائزہ لیتے ہوئے ڈی سی کو بتایا گیا کہ 1 سے 2 کلومیٹر سڑک کی لمبائی پر 2

ڈوڈہ میں دلخراش سڑک حادثہ ، کنبہ کا واحد کمائوجاں بحق

ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع میں پیش آئے دلدوز سڑک حادثہ میں ایک نوجوان جاں بحق ہوا ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق منگل کی صبح ساڑھے نو بجے کے قریب چلی سے گندوہ آرہی ایک نئی ایکو گاڑی سنوارہ کے نزدیک ڈرائیور کے قابو سے باہر ہو کر آٹھ سو فٹ نیچے گہری کھائی میں جا گری جس کے نتیجے میں سجاد حسین ولد محمد حسین وانی ساکنہ سنوارہ (28)موقع پر ہی ہلاک ہوا۔ اس حادثہ کے فوراً بعد مقامی لوگ و پولیس کی ٹیم موقع پر پہنچی اور مذکورہ نوجوان کی جسد خاکی کو کھائی سے نکالا۔اس دوران ڈاکٹروں نے طبی لوازمات مکمل کرکے آخری رسومات ادا کرنے کے لئے اسے وارثین کے سپرد کیا گیا۔بتایا جاتا ہے کہ مذکورہ نوجوان گھر کا واحد کمانے والا تھا ور اپنے پیچھے بزرگ والدین، دو چھوٹے بھائی، اہلیہ و ایک بیٹا چھوڑ گیا۔اس حادثہ پر مختلف سیاسی و سماجی شخصیات نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے غمزدہ خاندان کے ساتھ تعزیت کی ہے۔نہوں نے متاثرہ کنبوں کو معقو

تازہ ترین