عید کی خوشیوں سے انکار نہیں | اسراف سے اجتناب لازمی

مسلمانوں کو اللہ تعالی نے اپنی خوشیوں کے اظہار کیلئے عید الفطر اورعید الاضحی سے نوازا ہے۔عیدالفطر شوال کی پہلی تاریخ کو منائی جاتی ہے جو رمضان میں کی گئی عبادتوں کا انعام ہے جبکہ عیدالاضحی حضرت ابراہیم ؑ کی سنّت کی پیروی کیلئے ذو الحجہ کو منائی جاتی ہے۔اس عید سے قبل جانے کتنی ہی عیدیں ہم اپنی خواہشات کے مطابق منا چکے ہیں، لیکن یہ عیدبالکل ہی الگ ہے۔لاک ڈائون کے سبب ہم نے جو وقت گزرا اور گزار رہے ہیں، وہ کسی کے وہم و گمان اور خواب و خیال میں بھی نہیں تھا۔  اللہ تعالیٰ نے خوشی کے موقع پر ہر جائز اظہار کو پسند فرمایا ہے ۔عید کی خوشیاں ضرور منائیں، تیاریاں بھی خوب کریں لیکن یہ دھیان رکھنا ضروری ہے کہ جہاں اللہ نے فضول خرچی کی ممانعت کی ہے وہیں نمود و نمائش کو بھی ناپسندیدہ عمل قرار دیا ہے کیونکہ یہ معاشرے میں محرومیوں کو جنم دینے کا باعث بنتی ہیں۔جو خرچ بھی نمودونمائش، نفس کی تسکی

ندامت و عاجزی اللہ کو پیاری | توبہ عذاب ِ الٰہی سے نجات کاواحد ذریعہ

 اسلام میں توبہ کو ایک خاص مقام حامل ہے۔ توبہ گمراہی، نافرمانی و برائی سے راہ راست کی طرف لوٹ کر آنے کا ذریعہ ہے۔ یہ اللہ کی طرف پلٹ کر آنے کا راستہ ہے۔ گناہوں سے توبہ کرنا راہ نجات کی پہلی سیڑھی ہے۔ گناہوں پر نادم ہوکر توبہ کے اہتمام سے ہی کامیاب زندگی بن سکتی ہے۔ یہ اپنے خالق، مالک، کھلانے والے رب و پالن ہار سے دوبارہ ناطہ جوڑنے کا موقع دے رہا ہے۔ آج کل کے پر فتن و پر آشوب دور میں جہاں بندہ نافرمانیوں میں مست ہوتے ہوئے اپنے حقیقی مالک سے دور ہے، وہیں شیطان پے در پے ہمارے خسارے پر تلا ہوا اپنی کامیابیوں سے سر شار ہے جو یقیناً ایک مسلمان کے لیے باعث عار ہے۔ آج ہم گناہوں کی طرف بہ آسانی کھینچے ہی چلے جا رہے ہیں اور ہمیں اس کا ذرا بھی احساس نہیں ہو رہا ہے۔ قرآن و حدیث میں جابجا توبہ و استغفار کی تلقین کی گئی ہے، اور بار بار بندے سے توبہ کی طرف دعوت دی جا رہی ہے۔ مومن کی ص

تازہ ترین