تازہ ترین

موجودہ وقت میں ریورس سوئنگ بھول ہی جانا چاہئے :عرفان پٹھان

نئی دہلی//ہندوستان کے سابق فاسٹ بالر اور سرکردہ آل راؤنڈرعرفان پٹھان نے کہا ہے کہ اگر انگلینڈ اور ویسٹ انڈیز کے مابین سلامتی کے اعتبار سے محفوظ ماحول میں کھیلے جانے والے پہلے ٹیسٹ کو آئندہ کھیلے جانے والے میچوں کی مثال کے طور پر سمجھا جائے تو دنیا بھر کے فاسٹ بالرز کو ان میچوں میں ریورس سوئنگ کو بھول ہی جانا چاہئے ۔کورونا وائرس کی وبا کی وجہ سے بین الاقوامی کرکٹ کو نئے طریقوں کے ساتھ بحال کیا گیا ہے جس میں گیند کو چمکانے کے لئے تھوک کے استعمال پر پابندی عائد ہے ۔پانچویں روز مارک ووڈ اور جوفرا آرچر بولنگ کو دیکھتے ہوئے پٹھان کا خیال ہے کہ گیند بازوں کو کچھ وقت کے لئے پرانی گیند سے ریورس سوئنگ کے بارے میں بھول جانا چاہئے ۔ انہوں نے اسٹار اسپورٹس کے کرکٹ کنکٹڈ پروگرام میں کہا کہ تھوک کی تہہ موٹی ہوتی ہے اور اس کا اثر ریورس سوئنگ پر زیادہ ہوتا ہے ۔ اس وقت تک تھوک کے استعمال پر پابندی عائ

ایک پل کیلئے لگا ورلڈ کپ نکل گیا:مورگن

لندن //انگلینڈ کے عالمی چمپیئن کپتان ایان مورگن نے گذشتہ سال کے آئی سی سی ورلڈ کپ کے فائنل کو یاد کرتے ہوئے کہا کہ انہیں ایک لمحے کے لئے محسوس ہوا کہ ان کی ٹیم میچ ہار جائے گی اور ورلڈ کپ ان کے ہاتھوں سے نکل جائے گا۔انگلینڈ نے گزشتہ سال 14 جولائی کو ورلڈ کپ کے فائنل میں ایک سپر اوور میں نیوزی لینڈ کو ڈرامائی انداز میں شکست دے کر ورلڈ کپ کا اعزاز حاصل کیا تھا۔ میچ طے شدہ اوورز اور سپر اوور دونوں میں برابر رہا لیکن انگلینڈ نے باؤنڈری کاونٹ میں ٹائٹل اپنے نام کیا۔مورگن نے کہا کہ انہوں نے ورلڈ کپ کے فائنل کو کورونا کی وجہ سے لاک ڈاؤن کے دوران دیکھا تھا۔ انہوں نے کہا کہ پچھلے چار مہینوں میں بہت مشکل رہا لیکن اس دوران مجھے ورلڈ کپ کا فائنل میچ دوبارہ دیکھنے کا موقع ملا۔ میں نے اب تک تین بار فائنل دیکھا ہے اور میں نے باقی میچ آرام سے دیکھا ہے ۔عالمی فاتح کپتان کا کہنا تھا کہ جب میں نے یہ میچ

تازہ ترین