تازہ ترین

گیند کی چمک برقرار رکھنے کے لئے اختیارات کی ضرورت:بمراھ

نئی دہلی/بین الاقوامی کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کے عالمی وبا کورونا وائرس کی وجہ سے بنائے گئے نئے گائڈ لایئنز کو لے کر ہندستانی ٹیم کے فاسٹ بولر جسپریت بمراہ نے کہا ہے کہ گیند کو چمکانے اور اس کی چمک برقرار رکھنے کے لئے گیند بازوں کو دوسرے اختیارات کی ضرورت ہے ۔آئی سی سی کی ٹیکنیکل کمیٹی نے گیند کو چمکانے کے لئے تھوک پر روک لگانے کی سفارش کی ہے جس کے بعد دنیا بھر کے تیز گیند بازوں نے اس سفارش پر اپنی رائے کا اظہار کیا ہے اور زیادہ تر تیز گیند بازوں کا خیال ہے کہ اس سے تیز گیند بازوں کے ہاتھوں سے سوئنگ اور ریورس سوئنگ جیسا ہتھیار نکل جائے گا۔بمراہ نے آئی سی سی کے انسائیڈ آؤٹ انٹرویو میں کہاکہ ایک ہی چیز جو مجھے متاثر کرتی ہے وہ ہے تھوک۔ مجھے نہیں پتہ جب ہم واپس میدان پر جائیں گے تو کون کون سی ہدایات کا ہمیں عمل کرنا ہوگا لیکن میرا خیال ہے کہ تھوک کے علاوہ کوئی دوسرا آپشن ہونا چاہئے ۔ اگر

کورونا وائرس کرکٹ کے رنگ پھیکے کردے گا: وقار یونس

کراچی/پاکستانی کرکٹ ٹیم کو بولنگ کوچ وقار یونس کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کرکٹ کے رنگ پھیکے کر دے گا اور کھلاڑیوں کو اب نئی روایات و قوانین کا عادی ہونا پڑے گا۔میڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے وقار یونس نے کہا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے ہر کھیل پر اثرات مرتب ہوں گے لیکن سب سے زیادہ فرق کرکٹ پر پڑتا دکھائی دے رہا ہے کیونکہ اس میں بال ایک ہاتھ سے دوسرے ہاتھ جاتی ہے اور بولرز اسے اپنے تھوک اور  پسینے سے چمکاتے بھی ہیں۔ انہوں نے کہا میں سمجھتا ہوں کہ سب سے زیادہ جھٹکا تو کرکٹ کو لگے گا اس کے رنگ پھیکے پڑ جائیں گے، گراؤنڈ میں کامیابی کے بعد جشن منانا ہی کھیل کا اصل حسن ہے لیکن اب بولرز وکٹ لے کر ہائی فائیو نہیں کریں گے، سروں پر ہاتھ نہیں پھیریں گے یا بیٹسمین سینچری بنا کر ایک دوسرے کے گلے نہیں ملیں گے تو یہ ایک دھچکا ہی ہے۔وقار یونس کا کہنا تھا کہ کرکٹ میں بہت زیادہ احتیاط کی ضرورت ہو گی کیونکہ