تازہ ترین

ملک میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 94.62 لاکھ

نئی دہلی// ملک میں کورونا انفیکشن کے نئے معاملوں میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے اور مختلف ریاستوں اور مرکز کے زیرانتظام علاقوں میں صحت مند افراد کی تعداد میں مسلسل اضافے کی وجہ سے زیر علاج مریضوں کی تعداد میں زبردست کمی واقع ہوئی ہے۔ اس کی شرح کم ہوکر 4.60 فیصد ہوگئی ہے۔ مرکزی وزارت صحت و خاندانی بہبود کے مطابق ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 31118 نئے کیس سامنے آئے ہیں اور متاثرہ افراد کی تعداد 94.62 لاکھ ہوگئی ہے۔ اس عرصے کے دوران41945 مریض صحتمند ہوگئے اور اس کے ساتھ ہی مستقل طور پر صحت یاب ہونے والوں کی تعداد 88.89 لاکھ تھی۔ اسی عرصے میں ، مزید 482 مریضوں کی ہلاکت کے ساتھ اموات کی تعداد بڑھ کر 1،37،621 ہوگئی ہے۔  

کورونا مخالف ویکسین تیار کرنے والی3 کمپنیاں

نئی دلی//پیر کو وزیر عظم نریندر مودی نے کورونا وائرس مخالف ویکسین تیار کرنے والے تین کمپنیوں کے نمائندوں کے ساتھ ایک ورچوول میٹنگ کی اور کمپنیوں کے نمائندوں پر زوردیا ہے کہ وہ تیار ہونے والے ویکسینوں کے بارے میں لوگوں کو آسان اور عام فہم زبان میں زیادہ سے زیادہ جانکاری فراہم کریں۔وزیر اعظم کے دفتر سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ میٹنگ کے دوران وزیر اعظم نے ویکسین کی تقسیم اور دیگر معاملات کے حوالے سے کمپنیوں کے نمائندوں سے مشورے طلب کئے ہیں۔ وزیر اعظم نے تمام محکمہ جات کے افسران کو ہدایت دی ہے کہ وہ ویکسین تیار کرنے والے کمپنیوں کے مسائل جلد حل کرے تاکہ کمپنیوں کی جانب سے ویسکین تیار کرنے کی کوششیںکامیاب ہوسکیں اور وہ ملک کے ساتھ ساتھ پوری دنیا کی مدد کرسکیں۔  مودی نے پیر کو جن کمپنیوں کے نمائندوں سے بات کی ،ان میں پونے میں واقع جینوا بائیوفرماسیوٹیکلز لمیٹڈ حیدرآباد کی بائیوولوجی

بھارت نے مسئلہ کشمیرپر اسلامی ممالک تنظیم کی قراردادمستردکردی

 سرینگر//مسئلہ کشمیر پراسلامی ممالک کی تنظیم کی طرف سے پاس کی گئی قراردادکو بھارت نے مسترد کرتے ہوئے واضح کیا ہے کہ بھارت کے داخلی معاملات میں اسلامی ممالک کی تنظیم کو مداخلت کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔بھارت نے کہا کہ جموں کشمیر بھارت کااٹوٹ انگ ہے اور ہمیشہ رہے گا۔ سی این آئی کے مطابق بھارت نے اتوار کے روز نائیجر میں ایک اجلاس کے دوران جموں و کشمیر کے بارے میں غلط اور غیر تصدیق شدہ حوالہ جات پیش کرنے پر اسلامی ممالک کی تعاون تنظیم ’او آئی سی‘ کی سخت نکتہ چینی کی ۔نائیجر میں ایک اجلاس کے دوران اسلامی ممالک کی تعاون تنظیم ’او آئی سی‘ کی طرف سے منظور کی جانے والی قرار دادوں میں جموں و کشمیر کے بارے میں غلط اور غیر تصدیق شدہ حوالہ جات پیش کئے گئے جس پر بھارت نے اس تنظیم کی سخت الفاظ میں تنقید کی اور کہا کہ جموں و کشمیر بھارت کا ایک اٹوٹ اور لازمی حصہ ہے۔ بھارت

نئے زرعی قوانین کے خلاف کسانوں کا احتجاج جاری،بات چیت سے انکار | قومی شاہراہوں کو بند کرنے کی وارننگ ،ملک میں اشیا ضروریہ کے بحران کا خدشہ

نئی دلی //زرعی قوانین کے خلاف ملک کے بڑے حصوں میں کسانوں کا احتجاج زور پکڑتا جارہا ہے۔ پنجاب ، ہریانہ ، دہلی ، راجستھان اور اترپردیش کے کسانوں کا احتجاج جاری ہے۔ دہلی میں کسان احتجاج پر بضد ہیں۔کسانوں کے لیڈروں نے وارننگ دی ہے کہ اگر ان کے سبھی مطالبات تسلیم نہیں کئے گئے تو دہلی کے اہم ہائی ویز جام کرکے مد و رفت پوری طرح سے بند کردیں گے۔ غازی باد ، گروگرام اور فریداباد کو دہلی سے جوڑنے والے ہائی ویز کو بلاک کرنے کی وارننگ سے حکومت اور دہلی پولیس محکمہ میں کھلبلی مچ گئی ہے۔قومی دارالحکومت دہلی میں کسانوں کے جاری احتجاج و مظاہرہ سے فکر مند بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے صدر جے پی نڈا ، وزیر داخلہ امت شاہ اور وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر نے دیر رات میٹنگ کی ، جبکہ دوسری جانب کسان تنظیموں نے حکومت سے بات چیت کیلئے کسی بھی شرط کو ماننے سے انکار کردیا ہے ۔نڈا ، شاہ اور تومر نے کسانوں کی حکم

کسان ملک کی طاقت :راہل | زرعی مخالف قوانین کو رد کیا جائے

نئی دہلی// کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے کسان کو ملک کی طاقت قرار دیتے ہوئے زرعی مخالف تینوں قوانین کو رد کرنے کا مطالبے کیا اور کہا ہے کہ حکومت کو دہلی میں ڈیرا ڈالے کسانوں کے مطالبے پر غور کرتے ہوئے ان قوانین کو رد کرنا چاہئے ۔مسٹر راہل گاندھی نے پیر کو یہاں جاری ایک ویڈیو پیغام میں کہا ہے کہ ملک کا کسان سیاہ زرعی قوانین کے خلاف سردی میں اپنا گھر، کھیت چھوڑ کر دہلی تک آپہنچا ہے اور ملک کے لوگوں کو حق اور ناحق کے درمیان اس جنگ میں کسان کے ساتھ کھڑا ہونے کی ضرورت ہے ۔  

کوویڈ19 | ملک میں متاثرین کی تعداد 94.31لاکھ ہوگئی | شفایاب ہونے والوں کی تعداد میںبتدریج اضافہ

نئی دہلی//ملک میں کورونا وائرس کو شکست دینے والے مریضوں کی تعداد میں لگاتار اضافہ سے اس کی تعداد بڑھ کر 88 لاکھ سے زیادہ ہوگئی ہے جبکہ فعال کیسز ڈیڑھ فیصد سے بھی کم ہوکر پونے پانچ فیصد رہ گئے ہیں۔مرکزی وزارت صحت و خاندانی بہبود کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں کورونا وائرس کے 38،772 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جس سے متاثرین کی مجموعی تعداد 94.31 لاکھ ہوگئی۔ اسی عرصے کے دوران 45،333 مریض صحتمند ہوئے جس سے اس کی مجموعی تعداد 88.47 لاکھ سے زائد ہوگئی۔ ایکٹیو کیسز میں 7004 عدد کی کمی کے ساتھ یہ تعداد 4.46 لاکھ رہ گئی۔ اسی عرصے میں مزید 443 مریضوں کی ہلاکت کے ساتھ اموات کی تعداد بڑھ کر 137139 ہوگئی ہے ۔ملک میں کورونا سے شفایابی کی شرح 93.81 فیصد ایکٹیو کیسز کی شرح 4.74 اور اموات کی شرح 1.45 فیصد ہے ۔ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ریاست مہاراشٹر میں سب سے زیادہ (1097) فعال کیسز رپورٹ ہوئے ، اور