مینوفیکچرنگ کو فروغ دینے کیلئے رفتار اور پیمانے میں اضافہ کرنا ہوگا: وزیراعظم

نئی دہلی// (یواین آئی) وزیراعظم  نریندر مودی نے جمعہ کو ویڈیو کانفرنس کے ذریعے محکمہ برائے صنعت  اور  بین الاقوامی تجارت  اور نیتی آیوگ کے ذریعے  منعقدہ  پیدا وار سے منسلک ترغیبات (پی ایل آئی)  اسکیم سے متعلق ایک ویبنار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پچھلے 6 برسوں کے دوران  میک ان انڈیا  کی  مختلف سطحوں پر حوصلہ افزائی کرنے کے لئے متعدد کامیاب کوششیں کی گئی ہیں۔ انہوں نے  مینو فیکچرنگ کو فروغ دینے کے لئے رفتار اور پیمانے میں  اضافہ کرنے میں ایک بڑی چھلانگ لگانے کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے دنیا بھر کی مثالوں کا حوالہ دیا، جہاں ممالک نے اپنی مینو فیکچرنگ کی صلاحیتوں میں اضافہ کرکے ملک کی ترقی کی رفتار کو  تیز کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ  مینو فیکچرنگ کی صلاحیتوں میں اضافے سے ملک میں روز گار کے مواقع میں اضافہ ہوگا۔وزیراعظم

اسام اسمبلی انتخابات | بی جے پی نے 70 امیدواروں کے ناموں کا اعلان کیا

نئی دہلی// (یواین آئی) بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے جمعہ کو آسام اسمبلی کیلئے 70 امیدواروں کے ناموں کا اعلان کیا جن میں ماجولی سے وزیر اعلی سربانند سونووال اور جالوکبری حلقہ سے وزیر خزانہ ڈاکٹر ہیمنت بِشوا شرما شامل ہیں۔اس فہرست کو بی جے پی کے جنرل سکریٹری ارون سنگھ نے یہاں ایک پریس کانفرنس میں جاری کیا۔ یہاں بی جے پی ہیڈکوارٹر میں وزیراعظم  نریندر مودی کی موجودگی اور بی جے پی صدر جگت پرکاش نڈا کی زیر صدارت  پارٹی کی مرکزی الیکشن کمیٹی کی میٹنگ میں امیدواروں  کے ناموں پر  غوروفکر کیا گیا تھا۔اس اجلاس میں مرکزی وزراء امیت شاہ ، راج ناتھ سنگھ ، نتن گڈکری ، تھاور چند گہلوت ، نریندر سنگھ تومر ، بی جے پی کے تنظیمی جنرل سکریٹری بی ایل سنتوش، پارٹی کے سینئر نائب صدر وجینت پانڈا ، مدھیہ پردیش کے وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان اور پارٹی کے رہنما جویل اورون نے شرکت کی۔&nbs

ملک کی سیکورٹی اور سالمیت پر سمجھوتہ نا ممکن ، بھارت کمزور ملک نہیں | سیکورٹی اور دفاعی تیاریوںکو ایک مرتبہ پھر سے جائیزہ لیا جائے گا :راجناتھ سنگھ

سرینگر///ملک کی سیکورٹی اور سالمیت کو پہلی ترجیح قرار دیتے ہوئے وزیر دفاع راجنا تھ سنگھ نے کہا کہ بھارت پڑوسی ممالک بشمول بنگلہ دیش اور پاکستان کے ساتھ تعلقات کا نیا دور شروع کرنا چاہتا ہے جس میں امن کیلئے کوشیش کی جاسکتی ہیں۔ سی این آئی مانیٹرنگ کے مطابق دورہ گجرات کے دوران کمانڈرس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے کہا کہ بھارت کی سیکورٹی اور دفاعی تیاریوںکو ایک مرتبہ پھر سے جائیزہ لیا جائے گا ۔ انہوںنے کہا کہ ہمسایہ ممالک بھارت کو کمزور کرنے کی کوشش کر رہے ہیں تاہم ایسی کسی بھی کارورائیوں کو کامیاب نہ ہونے دیا جائے گا ۔ راجناتھ نے کہا کہ بھارت اپنے ہمسایہ ممالک کے ساتھ بہترین تعلقات کی حامی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان ہو یا بنگلہ دیش یا چین ہو سبھی ممالک کو بھارت کی خودمختاری کا احساس کرکے ہی بات چیت کیلئے ماحول سازگار کرنا ہوگا ۔انہوں نے کہا کہ بھارت پڑوسی م

مہنگائی کے خلاف مہم میں راہل ،پرینکا کی شامل ہونے کی اپیل

نئی دہلی (یواین آئی) کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی اور پارٹی  کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے کہا ہے کہ حکومت عوام کو مہنگائی کے دلدل میں لگاتار دھکیل رہی ہے ، لہٰذا لوگوں کو مہنگائی کے خلاف آواز اٹھانے کے لئے پارٹی کی مہم میں شامل ہونا چاہئے۔ گاندھی نے کہا’’افراط زر ایک لعنت ہے۔ مرکزی حکومت صرف ٹیکس کمانے کے لئے عوام کو مہنگائی کے دلدل میں ڈال رہی ہے۔ ملک کی تباہی کے خلاف آواز اٹھائیں، کمپین سے جڑیئے‘‘۔ واڈرا نے کہا ’’مہنگائی پر بی جے پی حکومت کے بہانے، سردی کی وجہ سے قیمتیں بڑھیں ، گزشتہ حکومتیں قصوروار ، لوگ کم سفر کریں ، اسلئے ٹکٹ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا، پٹرول اور ڈیزل کی بڑھتی قیمتوں پر ہمارا کنٹرول نہیں ہے۔  

ہندو پاک میں تنائو خطے کیلئے خطرہ : انتونیو گوتریس

سرینگر//اقوام متحدہ نے پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی کم کرنے کے لیے کردار ادا کرنے کی ایک مرتبہ پھر پیشکش کرتے ہوئے دونوں ممالک پر زور دیا ہے کہ کشیدگی کے خاتمہ کیلئے صبر و تحمل کامظاہرہ کیا جائے ۔ترجمان اقوام متحدہ کے مطابق سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی کم کرنے کیلئے کردار ادا کرنے کی پیشکش کی ہے۔ ترجمان کے مطابق سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ نے پاک بھارت کشیدگی پر شدید تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کشیدگی کم کرنے کے لیے فوری اقدامات کریں۔انہوں نے کہا کہ ہم نے پاکستان اور بھارت دونوں پر زور دیا کہ وہ تحمل مزاجی سے کام لیں اور کسی بھی قیمت پر اشتعال انگیزی سے گریز کریں ۔سی این آئی کے مطابق بھارت اور پاکستان کو خطے کے اہم ممالک قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک کشیدگی ختم کرنے کے لئے مذاکرات کا راستہ اختیار کریں۔انہوںنے کہا کہ اقو

ہندپاک کی فوجی قیادت کے بیانات حوصلہ افزاء: سوز

سرینگر//بھارت اور پاکستان کی فوجی قیادت کی طرف سے اس خطے میں امن ، خیر سگالی اور باہمی رابطے کیلئے جو بیانات حال میں عوام کے سامنے آئے ہیں ،وہ خوش آئند اور نہایت ہی حوصلہ پرور ہیں۔ان باتوں کااظہار سابق مرکزی وزیر پروفیسرسیف الدین سوز نے ایک بیان میں کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں جہاں ایک طرف بھارت کے فوجی سربراہ ایم  ایم نروانے، نے پورے زور سے یہ بات کہی ہے کہ پاکستان کے ساتھ سرحدی معاملات پر موثر گفتگو ہونی چاہئے ، تو وہیں پاکستان کے فوجی سربراہ جنرل قمر جاوید باجوا نے اس بات پر زور دیا ہے کہ ان ہمسائیہ ملکوں کو امن اور خیر سگالی کیلئے مستحکم راستہ تلاش کرنا چاہئے۔ انہوںنے مزیدکہاکہ ایشیاء کے ان دو نیوکلیائی طاقتوں کی طرف سے یہ بیانات پورے ایشیا میں خیر سگالی اور پائیدار امن کا راستہ بحال کریںگے۔ادھردوسری طرف جموں و کشمیر ریاست کے لوگ دونوں ملکوں کی طرف سے حالیہ بیانات پر

ملک میں کورونا وائرس کے فعال کیسوں اور اموات کی تعداد میں اضافہ

نئی دہلی// ملک کی کچھ ریاستوں میں کورونا وائرس (کووڈ۔19) کے انفیکشن میں گزشتہ کچھ دنوں سے اچانک آئی شدت کے درمیان فعال کیسز میں اضافہ جاری ہے اور اس وبا سے مرنے والوں کی تعداد پھر 100 سے تجاوز کر گئی۔ مسلسل تین دنوں تک کورونا وائرس سے مرنے والے افراد کی تعداد 100 سے کم درج کی گئی لیکن گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران اس وبا سے 113 افراد کی موت ہوئی ہے۔ اس دوران صحتیاب ہونے والوں کی تعداد کم رہنے سے فعال کیسز میں 2906 کااضافہ ہوا ہے۔ دریں اثنا ملک میں اب تک ایک کروڑ 80 لاکھ پانچ ہزار 503 افراد کو کوروناکے ٹیکے لگائے جا چکے ہیں۔ مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 16،838 نئے کیسز سامنے آئے ہیں ، جس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک کروڑ 11 لاکھ 73 ہزار سے زائد ہو گئی ہے۔ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 13،819 مریض صحتیاب ہوئے ہیں ، جس سے اب

چیک بائونس کے 35لاکھ کیس زیر التوا

نئی دلی //سپریم کورٹ نے کہا ہے کہ چیک بائونس ہونے کے 35لاکھ کیس زیر التوا ہیں۔عدالت نے مرکزی سرکار کو مشورہ دیا ہے کہ وہ ان کیسوں کو مقررہ وقت پر ختم کرنے کیلئے اضافی عدالتیں قیام عمل میں لائیں۔چیف جسٹس ایس اے بوبدے کی سربراہی میں قائم کئے گئے پانچ ججوں کی بینچ نے کہا ہے کہ مرکزی سرکار کو آرٹیکل 247کے تحت حق حاصل ہے کہ چیکوں کی بے عزتی کرنے کے معاملات کو حل کرنے کیلئے این آئی ایکٹ (negotable act) کے تحت اضافی عدالتیں قائم کریں۔ پانچ ججوں کی بیچ میں جسٹس ایل نگیشور رائو، بی آر گوائی، ائے ایس بوننا اور ایس رویندر بٹ نے کہا ’’ این آئی ایکٹ  کے تحت کیسوں کی تعداد میں اضافہ ’’حیرت انگیز ‘‘ہے۔ عدالت نے مرکزی سرکار سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا ’’ آپ مزید عدالتیں قائم کرنے کیلئے نیا قانون بھی بناسکتے ہیں کہ کیسوں کا نپٹارہ مقررہ وقت پر حل کیا

عالمی یوم جنگلی حیات | تحفظ کیلئے ہر ممکن کوشش کی جانی چاہئے: وزیر اعظم

 نئی دہلی/یو این آئی// وزیر اعظم نریندر مودی نے عالمی یوم جنگلی حیات کے موقع پر جنگلی جانوروں کے تحفظ کے لئے کام کرنے والے تمام افراد کو مبارکباد دی۔بدھ کے روز ایک ٹویٹ میں مودی نے کہا کہ "عالمی یوم جنگلی حیات کے موقع پر میں ان تمام لوگوں کو سلام پیش کرتا ہوں جو جنگلی جانوروں کے تحفظ کے لئے کام کرتے ہیں۔ خواہ وہ شیر ہو ، چیتے ہو یا تیندوے، ہندوستان میں مختلف جنگلی جانوروں کی آبادی میں خاطر خواہ اضافہ ہورہا ہے۔ ہمیں اپنے جنگلات کی حفاظت اور جانوروں کی محفوظ پناہ گاہوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے ہر ممکن کوشش کرنی چاہئے۔اقوام متحدہ نے 3 مارچ ، 2013 کو  ایک قرار داد منظور کرکے اس دن کو ہر سال ورلڈ وائلڈ لائف ڈے منانے کا اعلان کیا تھا۔ اس کا مقصد دنیا بھر میں جنگلات کی زندگی اور نباتات کے بارے میں لوگوں کا  شعور اجاگر کرنا ہے۔  

دہلی ایم سی ڈی کے ضمنی انتخاب میں

نئی دہلی /یو این آئی// عام آدمی پارٹی (عآپ) نے دہلی کی میونسپل کارپوریشن (ایم سی ڈی) کے پانچ وارڈوں  میں ہونے والے ضمنی انتخابات میں چار وارڈوں میں کامیابی حاصل کرکے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کا صفایا کردیا ہے۔ایک وارڈ میں کانگریس کے امیدوار نے کامیابی حاصل کی۔ بی جے پی ان ضمنی انتخابات میں کھاتہ بھی نہیں کھول سکی۔ ضمنی انتخابات والے پانچ وارڈوں میں سے چار پر پہلے سے ہی عآپ کا قبضہ تھا ، جبکہ ایک وارڈ بی جے پی کے پاس  تھا۔ایم سی ڈی کے پانچ وارڈوں میں 28 فروری کو ووٹنگ ہوئی تھی، جن کے نتائج کا آج اعلان کیا گیا۔ اے اے پی نے کلیان پوری ، روہنی- سی ، ترلوکپوری اور شالیمار باغ (شمال) وارڈوں میں کامیابی حاصل کی۔اے اے پی کے امیدوار دھریندر کمار نے کلیانپوری وارڈ میں 7043 ووٹوں سے کامیابی درج کی۔ عآپ کے امیدوار رام چندر نے روہنی سی وارڈ میں بی جے پی کے امیدوار راکیش گوئل کو

ملک میں کورونا کے ایکٹیو کیسز میں اضافہ

نئی دہلی/ یواین آئی//ملک میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس (کووڈ -19) کے 1،768   کیسز  کا اضافہ ہوا ہے اور اس جان لیوا وبا سے 98 اموات ہوئیں ہیں۔دریں اثنا  ملک میں اب تک ایک کروڑ 56 لاکھ 20 ہزار 749 افراد کو  اینٹی کورونا ویکسین دیئے جاچکے ہیں۔بدھ کی صبح مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری  تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 14989 نئے کیسز سامنے آئے ہیں ، جس سے متاثرین کی تعداد ایک کروڑ 11 لاکھ 39 ہزار سے زیادہ ہوگئی ہے۔ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران  13123 مریض صحت مند ہوئے  جس  سے یہ تعداد  بڑھ کر  ایک کروڑ آٹھ لاکھ 12 ہزار 44 ہوچکی ہے۔  ایکٹیو کیسز کی تعداد 1768 سے بڑھ کر 1.70 لاکھ سے زیادہ ہوگئی ہے۔ اسی عرصے کے دوران  98 مریضوں کی موت سے  اس بیماری سے مرنے والوں کی مجموعی ت

کرناٹک فیکٹری میں دھماکہ6 مزدور زخمی

منگلورو/یو این آئی// کرناٹک کے منجیشور میں پلائیووڈ فیکٹری کے بوائلر میں دھماکے سے 6 مزدور زخمی ہوگئے۔پولیس نے بدھ کے روز یہ اطلاع دی۔پولیس نے بتایا کہ منگل کی شب اس دھماکے میں زخمی ہونے والے تمام کارکن بہار سے ہیں۔  

ملک میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا کے ایکٹیو کیسز میں اضافہ

نئی دہلی// ملک میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 1768 کیسز کا اضافہ ہوا ہے اور اس جان لیوا وبا سے 98 اموات ہوئیں ہیں۔ دریں اثنا ملک میں اب تک ایک کروڑ 56 لاکھ 20 ہزار 749 افراد کو اینٹی کورونا ویکسین دیئے جاچکے ہیں۔ بدھ کی صبح مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 14،989 نئے کیسز سامنے آئے ہیں ، جس سے متاثرین کی تعداد ایک کروڑ 11 لاکھ 39 ہزار سے زیادہ ہوگئی ہے۔  

وزیر اعظم کا سمندری شعبے میں ملک کو خود انحصار بنانے پر زور

 نئی دہلی // ( یواین آئی ) وزیر اعظم نریندر مودی نے سمندری شعبے میں ملک کو خود  انحصار بنانے پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ اعظیم ساحلی علاقوں کی وجہ سے سمندری پیداوار کے شعبے میں ترقی  کے  وسیع امکانات ہیں  ، اس لئے  پوری صلاحیت سے ان کا استعمال کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ مودی  نے منگل  کے روز  یہاں تین روزہ  ’ میری ٹائم انڈیا  کانفرنس  2021‘ کے دوران ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستان کی تہذیبیں ملک کے وسیع و عریض سمندری حدود میں پروان چڑھی ہیں جس نے ہماری  خوشحال سمندری  تاریخ کو ہزاروں  برسوں سے   سمندری  ساحلوں   کے ذریعے  د نیا سے  جوڑے رکھا  ، اس لئے   اس روایت کو   اب پوری طاقت کے ساتھ مزید خوشحال ہونے کی ضرورت ہے۔ انہ

راجناتھ نے آر آر اسپتال میں کورونا ویکسین لگوائی

نئی دہلی//(یو این آئی) وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے فوج کے ریسرچ اینڈ ریفرل (آر آر) اسپتال میں کورونا کی ویکسین لگوائی۔ویکسین لگوانے کے بعد سنگھ نے ٹوئٹ کرکے خود اس کی معلومات دی۔ انہوں نے ویکسین لگواتے ہوئے اپنی فوٹو بھی شیئر کی۔انہوں نے کہا کہ مجھے آج آر آر اسپتال میں کورونا ویکسین کی پہلی ڈوز دی گئی۔ اس ٹیکہ لگانے کی مہم سے ملک کو کورونا سے پاک بنانے کا عزم مضبوط ہوا۔ ویکسین پوری طرح محفوظ ہے اور اسے لگوانے کا عمل بھی آسان ہے۔ایک دیگر ٹوئٹ میں ا نہوں نے لکھا کہ میں ملک کے ڈاکٹروں اور سائنسدانوں کو سلا م کرتا ہوں جنہوں نے بہت کم وقت میں ویکسین تیار کرلی ہے۔ میں ٹیکہ لگانے کے لئے آر آر اسپتال کے طبی عملہ کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔ میں تمام اہل لوگوں سے ٹیکہ لگوانے کی درخواست کرتا ہوں جس سے ملک کورونا سے پاک ہوسکے۔

پرینکا نے چائے بیلٹ میں ووٹروں سے بات چیت کی

گوہاٹی //(یواین آئی) کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے منگل کو آسام میں اپنی انتخابی مہم کے دوسرے دن یہاں چائے باغات کے مزدوروں سے ملاقات کی اوران کے ساتھ چائے کی پتیاں توڑیں۔ واڈرانے ریاست کے دورے کے دوسرے روز وشوناتھ چریالی ضلع کا دورہ کیا اور چائے کے باغات میں کام کرنے والی خواتین سے ملاقات کی۔انہوں نے کہا ، "چائے باغات کے مزدوروں اور ان کی سادہ  زندگی سچائی کی ایک مثال ہے۔ میں آپ کے حقوق کے لئے لڑوں گی  اور ہر پلیٹ فارم پر آپ کی آواز بلند کروں گی۔  ’’ واڈرا نے کہا کہ چائے کے باغات میں کام کرنے والے مزدور آسام اور ملک کی ملکیت ہیں۔ کانگریس ہمیشہ ان کی حفاظت کو یقینی بنانے اور ان کے معیار زندگی کو بہتر بنانے کے لئے جدوجہد کرے گی۔آسام میں اسمبلی کی 126 سیٹوں میں سے 40 پر چائے کے باغات میں کام کرنے والے مزدوراور ان کے مالکان ووٹوں کے پیش

ملک میں کورونا سے مرنے والوں کی یومیہ تعداد 100 سے کم ، فعال کیسوں میں بھی کمی

نئی دہلی// کچھ ریاستوں میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا کے کیسز میں ہوئے اچانک اضافہ کے بعد راحت کی بات یہ ہے کہ ملک بھر میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا سے ہونے والی اموا ت کی تعداد اور فعال کیسز دونوں میں کمی واقع ہوئی ہے۔ مسلسل چھ دن تک کورونا وائرس سے مرنے وا لوں کی تعداد 100 سے زائد رہنے کے بعد گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ان میں کمی درج کی گئی ہے اور ان کی تعداد کم ہوکر 91 رہ گئی ہے اور اسی دوران نئے کیسز کے مقابلے میں صحتیاب ہونے والے افراد کی تعداد زیادہ رہنے سے پانچ دن بعد فعال کیسز میں کمی آئی ہے۔ دریں اثنا ملک میں اب تک ایک کروڑ 48 لاکھ 54 ہزار 136 افراد کو کورونا ٹیکے لگائے گئے ہیں۔  

وزیر اعظم نے کورونا ٹیکہ لگوایا

نئی دہلی //وزیر اعظم نریندر مودی نے آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز جا کر کورونا وائرس ویکسین کی پہلی خوراک لی ۔ کورونا کی دوسری لہرکے بیچ وزیر اعظم نریندر مودی پیر کی صبح ایمزگئے اور انہو ں نے کورونا کا پہلا ٹیکہ لگوایا جس کے ساتھ ہی یکم مارچ سے کورونا ویکسین کاٹیکہ لگانے کادوسرا مرحلہ شروع ہوا ۔وزیر اعظم نریندر مودی نے اس تعلق سے فیس بک پوسٹ کے ذریعہ خود یہ اطلاع دی۔ اس پوسٹ میں انہوں نے لکھا ہے ’’ایمس میں کووڈ19 ٹیکہ کی پہلی خوراک میںنے لی، ہمارے ڈاکٹروں اور سائنسدانوں نے کوویڈ کے خلاف عالمی لڑائی کو مضبوط کرنے کے لئے کم وقت میں کام کیا ہے،جو ویکسین لینے کے اہل ہیں میں ان سب اپیل کرتا ہوں کہ وہ ٹیکہ لگوائیں،ساتھ ہی ہم سب کو مل کرہندوستان کو اس وائرس سے پاک ملک بناناہے‘‘۔

مرکز کے اختیارات چیلنج | سپریم کورٹ میں عرضی مسترد

نئی دہلی//سپریم کورٹ نے انڈین پولیس سروس (آئی پی ایس) افسروں کو ڈیپوٹیشن پر بلانے کے مرکزی حکومت کے اختیارات کو چیلنج کرنے والی عرضی مسترد کر دی ہے۔ جسٹس ایل ناگیشور راؤ کی سربراہی میں بینچ نے مغربی بنگال کے رہنے والے اور پیشے سے ایک وکیل ابو سہیل کی عرضی ایک مختصر سماعت کے دوران مسترد کر دی۔ مغربی بنگال کے تین آئی پی ایس افسران کو مرکزی ڈیپوٹیشن پر بلانے کے بعد مرکزی اور ریاستی حکومت میں کھینچ تانی ہے۔عرضی گزار نے انڈین پولیس سروس (کیڈر) رولز 1954 کے رول6 (1) کی آئینی جوازیت کو چیلینج کیا تھا ، جس کے تحت آئی پی ایس افسران کو ڈیپوٹیشن پر بلانے کا مرکز کو اختیار ہے۔    

زراعت میںتحقیق اور ترقی کیلئے زیادہ کردار ادا کرنا چاہئے: وزیراعظم

 نئی دہلی// (یو این آئی) وزیر اعظم نریندر مودی نے زراعت میں تحقیق اور ترقی کے لئے نجی شعبے میں زیادہ سے زیادہ شراکت کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ مودی نے پیر کو زراعت اور کسان بہبود سے متعلق بجٹ کی فراہمی کے موثر نفاذ کے بارے میں منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نجی شعبے پر اعتماد بڑھنے سے کاشتکاروں کے اعتماد میں بھی اضافہ ہوگا۔ اب کاشتکاروں کو یہ اختیارات دینا ہوں گے جس میں وہ صرف گندم اور دھان کی کاشت تک ہی محدود نہیں ہیں۔ آپ نامیاتی کھانے سے متعلق  سلاد سبزیوں کو اگانے کی کوشش کر سکتے ہیں۔ اس طرح کی بہت ساری فصلیں ہیں جن کی کاشت کی جاسکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ سی ویڈ (سمندری سوار) اور بیج ویکس  کے لئے بازار تلاش کرنے کی ضرورت ہے۔ ویبنار میں زراعت ، دودھ ، ماہی گیری ، سرکاری ، نجی اور کوآپریٹو سیکٹر کے اسٹیک ہولڈرز اور دیہی معیشت کو مالی اعانت فراہم کرنے والے بینکوں