تازہ ترین

پانچ دن بعد کورونا وائرس کے نئے کیس90 ہزارسے کم

نئی دہلی// ملک میں کورونا وائرس سے بگڑتے حالات کے کے درمیان راحت کی بات یہ ہے کہ وبا کے یومیہ کیسوںمیں پانچ دن کے بعد کمی آئی ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران وائرس کے 90 ہزار سے کم کیسز سامنے آئے ہیں اور یہ تعداد83،809 رہی۔ منگل کو مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 83،809 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جس سےکوروناوائرس متاثرین کی تعداد 49،30،237 ہوگئی۔ جبکہ اس سے قبل 9 ستمبر سے 13 ستمبر تک کورونا وائرس کے یومیہ نئے کیسز 90 ہزار سے زائد رہے۔  

تاریخ کا منفردپارلیمانی اجلاس شروع، وقفہ سوالات نہ نجی بل پیش ہوں گے

نئی دہلی// تاریخ کا منفرد مانسون اجلاس پیر کو شروع ہوا۔17ویں لوک سبھا کے چوتھے اجلاس کے پہلے دن کارروائی شروع ہونے پر سب سے پہلے آنجہانی اراکین اور سابق اراکین کو خراج عقیدت پیش کرنے کے ساتھ ہی ایک گھنٹے کے لئے ملتوی کردی گئی۔قریب سوا دس بجے ایوان پھر سے شروع ہوا۔اسپیکر اوم برلا نے ایک بیان میں کہا کہ غیر معمولی حالات میں ہورہے اس اجلاس میں پارلیمنٹ کی تاریخ میں ایسا پہلی بار ہوگا جب لوک سبھا کے رکن راجیہ سبھا کے چیمبر اور ناظرین کی گیلری میں بھی بیٹھیں گے جن کے ذریعہ سے ملک کے عوام پارلیمنٹ کی کارروائی دیکھا کرتے ہیں۔ یہ کوشش اور سکیورٹی انتظامات پارلیمنٹ اراکین کے درمیان جسمانی دوری بنائے رکھنے کے مقصد سے کئے گئے ہیں۔ برلا نے کہاکہ سکیورٹی پروٹروکول کے سلسلے میں اراکین کو تکلیف ہونے کی شکایتیں آئی ہیں لیکن یہ سب ان کی حفاظت کے لئے ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ ہندوستان کے 130 کروڑ

ہندوستانی نظام طب بل منظور،بینکنگ ریگولیشن (ترمیمی) بل پیش

نئی دہلی/یو این آئی/ پارلیمنٹ کے مانسون اجلاس کے پہلے دن لوک سبھا نے قومی ہندوستانی نظام طب کمیشن بل -2020 اور قومی ہومیوپیتھی کمیشن بل -2020 کو منظور کرلیا۔ دونوں بل کی منظوری کے بعد قومی کونسل برائے ہندوستانی نظام طب کی جگہ قومی کمیشن برائے ہندوستانی نظام طب اور مرکزي ہومیوپیتھی کونسل کی جگہ قومی ہومیوپیتھی کمیشن کی تشکیل کی جاسکتی ہے ۔ یہ دونوں کونسل اپنی ذمہ داریاں نبھانے میں ناکام تھیں اور وہ بدعنوانی سے متاثر تھیں۔ اس لیے اس کی جگہ کمیشن کا قیام ضروری ہوگیا تھا۔ لوک سبھا میں اپوزیشن کے اعتراضات کے درمیان کوآپریٹیو بینکوں کے ریگولیشن کے سلسلے میں ریزرو بینک (آر بی آئی) کو زیادہ اختیارات دینے کا ایک نیا بل آج پیش کیا گیا۔بینکنگ ریگولیشن (ترمیمی) بل 2020 کو ایوان میں پیش کرتے ہوئے وزیر خزانہ نرملا سیتارمن نے کہا کہ یہ بل آر بی آئی کو ضرورت پڑنے پر کوآپریٹو بینکوں کے انتظام میں تبدی

ملک بھر میں کورونا متاثرین کی تعداد50لاکھ کے قریب

 نئی دہلی //ملک میں کورونا وبا کے بڑھتے ہوئے قہر کے درمیان گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 92 ہزار سے زائد نئے کیسز سامنے آنے بعد متاثرین کی تعداد 48.46 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے لیکن 77 ہزار سے زائد افراد اس وبا سے صحت یاب بھی ہو ئے ہیں ۔مرکزی وزارت برائے صحت و خاندانی بہبود کی جانب سے پیر کے روز جاری اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 92،071 نئے کیسزسامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 48،46،427 تک پہنچ گئی جبکہ کورونا انفیکشن سے صحت یاب ہونے والوں کی کی تعداد 77،511 بڑھ کر 37،80،107 ہوگئی۔ اسی دوران 1136 مریضوں کی موت ہو گئی ۔ اب تک ملک میں 79،722 کورونا سے متاثرہ مریضوں کی موت ہو گئی ہے ۔صحت یاب ہونے والوں کے مقابلے میں کورونا کے نئے کیسززائد ہونے سے ایکٹوکیسز کی تعداد 13،423 بڑھ کر 9،86،598 ہوگئی ہے ۔ ملک کی محض 12 ریاستوں اور مرکزی کے زیر انتظام علاقوں میں ہی ا

فائزر کی ویکسین موثر ہے یا نہیں

نئی دہلی//کورونا ویکسین کے لئے دوسرے اور تیسرے مرحلے کا انسانی ٹسٹ کررہی امریکہ کی دواساز کمپنی فائزر کے چیف ایکزی کیٹیو افسر (سی ای او) البرٹ برلا نے کہا ہے کہ اکتوبر کے آخر تک پتہ چل جائے گا کہ ویکسین موثر ہے یا نہیں اور اگر یہ موثر ثابت ہوتی ہے تو دسمبر تک یہ امریکہ میں تقسیم ہوسکتی ہے ۔فائزر جرمنی کی کمپنی بائیواینٹیک کے ساتھ مل کر کورونا ویکسین ڈیولپ کررہی ہے ۔ فائزر کے سی ای او نے اتوار کو ایک امریکی میڈیا کو دیئے گئے انٹرویو میں کہا ہے کہ پورا امکان ہے کہ اگلے ماہ کے آخر تک کمپنی تیسرے مرحلے کے ٹسٹ دستاویز امریکہ کے فوڈ اینڈ میڈیسن اتھارٹی یعنی یو ایس ایف ڈی اے کے سامنے پیش کردے گی۔انہوں نے کہا کہ اس بات کے ساٹھ فیصد امکانات ہیں کہ اس وقت تک یہ پتہ چل جائے گی کہ ویکسین موثر ہے یا نہیں۔ اس کے بعد یہ یو ایس ایف ڈی اے کا کام ہے کہ وہ ہمیں لائسنس جاری کرتے ہیں یا نہیں۔ حالانکہ ہم

لوک سبھانے پرنب مکھرجی اور دیگر مرحوم لیڈروں کو خراج عقیدت پیش کیا

نئی دہلی//لوک سبھا نے مانسون سیشن کے پہلے روز آج سابق صدر پرنب مکھرجی ، ایوان کے رکن ایچ وسنت کمار ، کلاسیکی گلوکار پنڈت جسراج اور ایوان کے دیگر سابق اراکین کے انتقال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے انہیں خراج عقیدت پیش کیا ۔لوک سبھا اسپیکر اوم برلا نے کاروائی شروع کرتے ہی ایوان کو سابق اراکین کے انتقال کی اطلاع دی اور ان کے تعاون کا ذکر کیا۔ ایوان نے ملک کی سلامتی کے لئے شہید ہونے والے فوجیوں اور کورونا سے لڑتے ہوئے اپنی جان گنوانے والے کورونا واریئر کو بھی خراج عقیدت پیش کیا۔ انہوں نے سابق صدر پرنب مکھرجی کو پارلیمانی امور کے ماہر ، مقبول رہنما اور تمام جماعتوں میں ان کی شخصیت کے لئے احترام کے جذبے کا ذکر کیا اور کہاکہ وہ ملک کے اعظیم لیڈروں میں سے ایک تھے ۔ مسٹر مکھرجی تیز طرار مقرر، پارلیمانی امور کے ماہر تھے اور انہوں نے پانچ دہائیوں سے زیادہ کی اپنی سیاسی زندگی میں ملک کو نئی سمت دین