تازہ ترین

کورونا وائرس | فعال کیسز کم ہوکر تقریباً دو لاکھ رہ گئے

نئی دہلی // ملک میں کورونا انفیکشن کے نئے معاملات میں کمی کا سلسلہ جاری ہے اور فعال کیسز کم ہوکر دو لاکھ کے قریب رہ گئے ہیں جبکہ اس کی وجہ سے ہونے والی یومیہ اموات کی تعداد دوسرے دن بھی 150 سے نیچے رہی۔مرکزی وزارت صحت کی جانب سے منگل کی صبح جاری اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران انفیکشن کے 10064 نئے کیسز سامنے آئے ، جس سے متاثرین کی تعداد ایک کروڑ پانچ لاکھ 81 ہزار ہوگئی ہے ۔ اس دوران 17411 مریض بازیاب ہوئے جس سے کورونا سے ٹھیک ہونے والے افراد کی تعداد ایک کروڑ دو لاکھ 28 ہزار 753 ہوگئی اور فعال کیسز کو 7484 کم ہوکر 200528 رہ گئے ہیں۔گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 137 مریض فوت ہوئے جس کے بعد اموات کی تعداد ایک لاکھ 52 ہزار 556 ہوگئی ہے ۔ اس سے قبل پیر کے روز مرنے والوں کی تعداد 145 رہی۔ملک میں بازیابی کی شرح 96.66 فیصد ہوگئی ہے اور فعال کیسوں کی شرح گھٹ کر 1.90 رہ گئی ہے جبکہ ام

حکومت، کسان تنظیموں کے مابین میٹنگ آج

نئی دہلی// زرعی اصلاحاتی قوانین اور فصل کی کم از کم امدادی قیمت کو قانونی درجہ دینے کے مطالبے کے حوالے سے حکومت اور کسان تنظیموں کے مابین  (منگل) کو ہونے والی میٹنگ اب بدھ کو ہوگی۔ پہلے یہ میٹنگ 19 جنوری سے منگل کے روز طے تھی۔ وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر کے قریبی ذرائع کے مطابق اب یہ میٹنگ 20 جنوری کو ہوگی۔ کسان تنظیم گذشتہ 55 دنوں سے دہلی کی سرحد پر اپنے مطالبات کے حوالے سے دھرنا مظاہرہ کر رہے ہیں۔ کسان تنظیموں اور حکومت کے مابین نو دور کی بات چیت ہو چکی ہے لیکن کوئی ٹھوس فیصلہ نہیں ہوا ہے ۔ حکومت زرعی اصلاحاتی قوانین میں ترمیم کرنا چاہتی ہے جبکہ کسان تنظیم قانون واپس لینے کے مطالبہ پر اڑے ہوئے ہیں۔   

مودی کا سورت حادثے پر اظہار رنج و غم

نئی دہلی// وزیراعظم نریندر مودی نے گجرات کے شہر سورت میں ایک ٹرک حادثے میں لوگوں کے مارے جانے پر تکلیف کا اظہار کیا ہے ۔ مسٹر مودی نے منگل کے روز ٹویٹ کیا،‘سورت میں ایک ٹرک حادثے میں لوگوں کی موت المناک ہے ۔ ہلاک ہونے والوں کے اہل خانہ کے ساتھ میری تعزیتیں۔ اس حادثے میں زخمی ہونے والے افراد کے جلد صحتیاب ہونے کی دعا کرتا ہوں’۔ وزیراعظم نے ہلاکتوں کے اہل خانہ کو دو دو لاکھ اور زخمیوں کے لیے 50 ہزار روپئے کی امداد کا اعلان کیا ہے ۔ قابل ذکر ہے کہ سورت میں ایک سڑک کنارے سونے والے 15 دہاڑی مزدوروں کی ایک ٹرک سے کچلے جانے کے سبب موت ہو گئی ۔  

ملک کا کسان مودی سے زیادہ سمجھدار :راہل گاندھی

نئی دہلی//کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے تینوں زراعتی قوانین کو رد کرنے کے کسانوں کے مطالبے کو پورا نہ کرنے پر وزیر اعظم نریندر مودی کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہاہے کہ وہ مذاکرات کے بہانے انہیں تھکانا چاہتے ہیں لیکن احتجاج کرنے والے کسان مودی سے زیادہ سمجھدار ہیں اور وہ تھکنے یا گمراہ ہونے والے نہیں ہیں اور نہ ہی کسی کے بہکاوے میں آنے والے ہیں۔راہل گاندھی نے منگل کے روز یہاں پارٹی ہیڈ کوارٹر پر ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ مودی حکومت کسانوں کو آہستہ آہستہ ختم کرنا چاہتی ہے ۔ لیکن کسان مودی حکومت کی اس پالیسی کو سمجھ چکے ہیں، اس لیے وہ سڑکوں پر اتر آئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وہ کسانوں کی تحریک میں ان کی مدد کیلئے ان کے ساتھ کھڑے ہیں۔