تازہ ترین

ہند پاک افواج میں ہونے والی گولہ باری نے آنکھ چھین لی

پونچھ//پونچھ کے سرحدی علاقے دلہان سے تعلق رکھنے والے محمد تاج نے سرحدی کشیدگی کے دوران اپنی ایک آنکھ گنوا دی جس کی وجہ سے اس کی زندگی انتہائی مشکل حالات سے گزر رہی ہے۔ 2008میں محمد تاج اپنے گھر میں تھا کہ ہندوپاک افواج میں گولہ باری شروع ہو گئی اس دوران اچانک ایک گولہ اس کے گھر کے قریب آ گر جس کی زد میں آکر محمد تاج زخمی ہو گیا۔ اس وقت ضلع ہسپتال پونچھ میں ابتدائی علاج کے بعد انھیں جموں میڈیکل کالج منتقل کیا گیا جہاں ان کی ایک آنکھ پوری طرح بیکار ہو گئی اور اس شخص کے کنبہ کی خوشیاں بھی چھن گئیں اور وہ محتاج بن کر رہ گیاہے۔ریاض نے بتایاکہ بارہ سال قبل اس کی ایک انکھ کھوگئی جس کے بعد سے وہ بیکار ہوگیا۔انہوں نے بتایاکہ وہ اپنی بزرگ والدین کے خدمت کرنے کے قابل بھی نہ رہا نہ ہی اپنے بیوی بچوں کے ضروریات پورے کر پا رہا ہے۔انہوں نے بتایاکہ آپریشن کے دوران یہ پتہ چلاکہ اس کی ایک آنکھ پور

کوٹرنکہ اور بدھل میں سرکاری زمینوں پر ناجائز قبضوں کا سلسلہ جاری

کوٹرنکہ// سب ضلع کوٹرنکا و بدھل میں محکمہ صحت کے ساتھ ساتھ شیپ ہسبنڈری،محکمہ زراعت ،محکمہ آبپاشی وفلڈ کنٹرول،محکمہ جل شکتی کی زمینیں دن بدن سکڑتی جا رہی ہیں۔معلوم ہو اہے کہ کوٹرنکہ کمیونٹی ہیلتھ سنٹر کی 17 کنال کے قریب اراضی اب سکڑ کر تین کنال کے قریب   رہ گئی ہے لیکن متعلقہ محکمہ خاموش تماشائی بنا بیٹھا ہے ۔اسی طرح شیپ ہسبنڈری بدھل کی زمین بھی سکڑ کر چند مرلے ہی رہ گئی ہے۔ شیپ ہسبنڈری کے خسرہ نمبر 1690میں تین کنال اور تین مرلہ اورخسرہ نمبر 1691 میں 14 مرلہ زمین تھی جو اب سکڑ کرایک کنال ہی رہ گئی۔محکمہ کے ملازمین نے اپنا نام پوشیدہ رکھتے ہوئے بتایا کہ ہڑپ کی گئی زمین سے متعلق تین بار کمیشن نے بھی رپورٹ پیش کی تاہم کوئی پیش رفت نہیں ہوئی۔عوام کا کہنا ہے کہ اسی طرح کوٹرنکہ اور بدھل میں سرکاری زمینوں کو ہڑپ کیا جارہا ہے اور متعلقہ محکمے ہاتھ پہ ہاتھ دھرے بیٹھے ہیں ۔لوگوں نے کہا

پونچھ آتشزدگی میں ہوٹل سمیت تین دکانیں خاکستر

پونچھ+بانہال//ضلع پونچھ صدر مقام پر پرانے بس میں آگ کی ایک ہولناک واردات میں تین دکانیںجل کر خاکستر ہو گئیں۔ادھرمنگل کی رات گیارہ بجے شاہراہ پر واقع قصبہ بانہال کے ناگبل علاقے میں آگ کی ایک ہولناک واردات میں تین دکانیں لاکھوں روپئے کے مال و اسباب سمیت جل کر راکھ ہوگئی ۔پونچھ پرانے بس اڈہ پر بس ٹکٹ ملنے والے کائونٹر کے قریب ویشنوڈھابے میں گیس کی پائپ لائن لیک ہونے سے دوپہر ساڑھے بارہ بجے کے قریب اچانک ڈھابے میں آگ نمودار ہوئی۔ آگ اس قدر ہولناک تھی کہ اس نے دیکھتے ہی دیکھتے ہوٹل سمیت تین دکانوں کو اپنی لپیٹ میں لیا۔ آگ لگنے کے ساتھ ہی اگرچہ محکمہ فائر اینڈ ایمرجنسی کو مطلع کیا گیا جنہوں نے جائے واردات پر پہنچ کر مقامی لوگوں کے ہمراہ آگ پر قابو پانے کیلئے کارروائی شروع کی تاہم جب تک آگ پر قابو پایا جاتا، ہوٹل اور دیگر دکانوں سمیت تین ڈھانچے جل کر خاکستر ہو گئے تھے۔ بتا یا جاتا ہے ک

ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر کی کاروائی

پونچھ// ٹریفک پولیس کے اہلکاران نے عید گاہ چوک پونچھ پر ناکہ لگا کر ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے ڈرائیوروں کے خلاف کاروائی کی اور چالان وغیرہ کئے۔ ڈی وائی ایس پی سید آفتاب حسین بخاری نے اس موقع پر کشمیر عظمیٰ سے گفتگو میں کہا کہ حادثات سے بچنے کے لئے ہر شخص کو ٹریفک قوانین کی پابندی کر نا ہو گی۔انہوں نے کہا ٹریفک قوانین پر عمل کر نے سے ہی ہم اچھے شہری بن سکتے ہیں اور ہماری مشکلات کم ہو سکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہیلمٹ استعمال نہ کر نے کی وجہ سے حادثات بڑھ رہے ہیں جن کی روک تھام کے لیے کاروائی کی جا رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ مہذب قومیں ہمیشہ ٹریفک قوانین کا احترام کر تی ہیں تاکہ معاشرے میں بد نظمی نہ پھیلے۔انہوں نے کہا کہ دیکھنے میں آیا ہے کہ روڈ حادثات میں 70 فیصد حادثات نو عمر ڈرائیورز کی وجہ سے رونما ہو تے ہیں۔انہوں نے والدین کو سختی سے ہدایت کی کہ وہ اپنے کم عمر بچوں کو ہر گز ڈ

حد بندی کمیشن پر این سی کا بھاجپاکے ساتھ میچ فکس: چوہدی ذوالفقار

 راجوری// اپنی پارٹی نائب صدر چوہدری ذوالفقار علی نے نیشنل کانفرنس پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ حد بندی کمیشن عمل سے دور رہ کر بی جے پی کوسہولت فراہم کرتی ہے۔چوہدری ذوالفقار علی نے کہاکہ ’’ ہمارا خیال ہے کہ نیشنل کانفرنس جس طرح سے حد بندی کمیشن میں شمولیت کا بائیکاٹ کیا ہے ، وہ کسی بھی علاقائی سیاسی پارٹی کی شمولیت کے بغیر اسمبلی حلقہ بندی کے ذریعے دائیں بازو کی سیاسی جماعت کو اپنی مرضی کے مطابق کام کرنے میں مدد دینا ہے۔ نیشنل کانفرنس کے موقف ،جموں و کشمیر کے بے گناہ لوگوں کے مستقبل پر ایک بار پھر سمجھوتہ ہے ‘‘۔ انہوں نے کہاکہ ’’نیشنل کانفرنس لوگوں کی توجہ ہٹانے کی کوشش کر رہی ہے جوکہ تین پارلیمانی ممبران ہونے کے باوجود جموں وکشمیر کے لوگوں کی نمائندگی کرنے میں ناکام رہی ہے،ایسا لگتا ہے کہ خفیہ طور بی جے پی کے ساتھ اِنہوں نے معاہدہ کیا ہے کہ وہ اُ

پونچھ بس اسٹینڈ میں آتشزدگی کا واقعہ، تین دکان خاکستر

سرینگر// پونچھ کے بس اسٹینڈمیں آگ کی ایک واردات میں تین دکان خاکستر ہوگئے۔ نیوز ایجنسی جی این ایس کے مطابق موہن لال ولد باجا رام کی دکانوں سے، جو بس اسٹینڈ میں واقع ہیں، اچانک آگ نمودار ہوئی۔ بتایا جاتا ہے کہ آگ لگنے کی وجہ گیس کا رسنا تھا۔ آگ بجھانے والے عملہ نے آکر اس کو مزید پھیلنے سے روک دیا۔  

وادی ٔ کشمیر اور پیر پنچال کے درمیان واحد مغل شاہراہ مسلسل بند

  برف ہٹانے کا کام مارچ کے دوسرے ہفتے میں شروع کیا جا ئیگا:حکام  پونچھ// ضلع پونچھ کی عوام نے انتظامیہ سے تاریخی مغل شاہراہ کو جلد کھولنے کی اپیل کی ہے۔ واضح رہے کہ خطہ پیر پنچال کو وادی سے جوڑ نے والی مغل شاہراہ موسمی نا حالات کی وجہ سے سال کے چھ ماہ بند رہتی ہے جس کی وجہ سے اس سڑک پر سفر کرنے والے ہزاروں مسافروں کو کافی زیادہ مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور انہیں راجوری یاپونچھ ضلع سے وادی کی طرف چار یا پانچ گھنٹوں کا سفر دو دن میں طے کرنا پڑتا ہے جس کیلئے راجوری اور پونچھ اضلاع سے اس شاہراہ پر سفر کرنے والے لوگوں نے شہراہ کو جلد کھولنے کا مطالبہ کیا ہے۔ پونچھ سے تعلق رکھنے والے محمد شبیر نامی ایک شخص نے کشمیر عظمیٰ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ انہیں ہر دوسرے ماہ اپنے والد کی طبی جانچ کے لئے کشمیر جاناپڑتا ہے۔ان کا کہنا تھا اگر چہ وہ موسم گرما میں مغل شاہراہ سے سفر کر کے وا

پرائمری سکول چشمہ ناڑ دانش گاہ کم کھنڈر زیادہ

مینڈھر//سرحدی ضلع پونچھ کے بلاک سرنکوٹ کی پنچائت اپر سانگلہ کے گورنمنٹ پرائمری سکول چشمہ ناڑ کی حالت نہایت ہی خستہ ہے اور محکمہ تعلیم کے اعلیٰ آفیسران سکو لوں کی طرف کوئی توجہ نہیں دے رہے ہیں۔ اس سلسلہ میں سرپنچ اپر سانگلہ خادم حسین راٹھور نے بات کرتے ہوئے کہا کہ سکولوں کے معاملہ کو لیکر ہم نے کئی بار ضلع انتظامیہ و محکمہ تعلیم کے اعلی اُفیسران سے بات بھی کی لیکن سکولوں کی طرف کوئی توجہ نہیں دے رہاہے۔ان کا کہناتھا کہ سرکار بڑے بڑے وعدے کرتی ہے کہ سرکاری سکولوں میں بچوں کو بہتر سہولیات دی جائیں گی لیکن بچوں کو سکول میں نہ بیٹھنے کی جگہ، نہ کھیل کود کی، نہ بچوں کیلئے باتھ روم اور نہ ہی کچن دستیاب ہیں۔ انہوں نے متعلقہ محکمہ کے آفیسران کو تنقیدکا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ یہ سکول تین کمروں پر مشتمل ہے جو تمام غیر معیاری ہیں اور بارشوں کے دنوں میں سکول کے اندر پانی ہی پانی ہوجاتاہے جبکہ سکو

منکوٹ میں پانی کی عدم دستیابی کیخلاف احتجاج

مینڈھر// سرحدی تحصیل منکوٹ میں کچھ مرد وخواتین نے پانی کے معاملہ کو لیکر محکمہ جل شکتی کے خلاف ٹائر جلاکر زوردار احتجاج کیا ۔انکا کہنا تھا کہ ہمارے محلہ میں کئی دنوں سے پانی بندہے اور متعلقہ محکمہ کے ملازمین جان بوجھ کر ہمیں پریشان کررہے ہیں اور ہمیں کئی کلومیٹردور سے پانی لانا پڑتاہے۔ احتجاج کی سربراہی چندر پرکاش اور وہاں پر موجود خواتین کررہی تھیں۔ انہوں نے تحصیل ہیڈ کوارٹر کے باہر زوردار احتجاج کرکے محکمہ جل شکتی کے خلاف نعرے بازی کی اور ٹائر جلاکر کئی گھنٹوں تک سڑک کو ٹریفک کی آمدورفت کیلئے بند کردیا ۔احتجاج کو دیکھتے ہوئے نائب تحصیلدار منکوٹ موقعہ پر پہنچے اور انہوں نے احتجاجیوں کی یقین دلیا کہ انہوں نے متعلقہ محکمہ کے آفیسران اور ایس ڈی ایم مینڈھر سے بات کی ہے۔ انہوں نے یقین دلایا ہے کہ دو تین دن کے اندر اندر پانی سپلائی کیا جائے گا جس کے بعد نائب تحصیلدار کی یقین دہانی کے بعد

چنڈیال سنگھیوٹ کا پنچائت گھر دس برسوں سے تشنہ تکمیل

مینڈھر//سب ڈویژن مینڈھر کی سرحدی تحصیل بالاکوٹ کی پنچائت چنڈیال سنگھیوٹ کا پنچائت گھر دس برسوںسے مکمل نہیں ہو سکا۔بالاکوٹ بلاک کی بی ڈی سی چیئرپرسن شمیم اختر نے کہا کہ پنچائت گھر کے معاملہ کو لیکر ہم نے کئی بار اعلی حکام سے بات کی لیکن دس سال گزرچکے ہیں کہ پنچائت گھر کا سنگ بنیاد رکھا گیا تھا لیکن دیواریں مکمل ہونے کے بعد اس پر چھت نہیں ڈالی گئی او راس پر خرچے گئے پانچ لاکھ روپے بھی ضائع ہوگئے اور وہ دیواریں اب کھنڈرات بن چکی ہیں۔ انکا کہنا تھا کہ پنچائت گھر کے معاملہ کو لیکر سرکار تحقیقات کرے اور جن ملازمین نے اس پنچائت گھر پر خرچے گئے پیسے سرکا رکے ضائع کئے ہیں انکے خلاف انکوائری کی جائے کیوں کہ پنچائت نمائندگان کو بیٹھنے کیلئے کوئی جگہ نہیں ہے اور کھلے عام گرام سبھا یا کوئی میٹنگ کی جاتی ہے۔ انکا کہنا تھا کہ دور دراز علاقہ سے تعلق رکھنے والی یہ پنچائت راجوری کی سرحد پر واقع ہے جہاں

حد متارکہ پر واقع ہائی سکول کشتی بلنوئی کا درجہ تو بڑھا لیکن عملہ نہ بڑھا

مینڈھر// سرحدی تحصیل منکوٹ کے گورنمنٹ ہائی سکول کشتی بنلوئی میں تعلیم حاصل کررہے بچوں کے ساتھ محکمہ تعلیم کے اعلی آفیسران سوتیلی ماں کا سلوک کررہے ہیں۔ 200سو سے زائد بچوں کیلئے صرف چار اساتذہ سکول میں تعینات ہیں۔گورنمنٹ ہائی سکول کشتی بنلوئی سرحد پر واقع ہے اور سرحدپر بسنے والے بچوں کیلئے سرکار نے دو سال قبل رمسا سکیم کے تحت ہائی سکول بنایا تھا تاکہ بچوں کو بغیر پریشانی تعلیم مل سکے لیکن سکول میں صرف ٹیچر گریڈ کے چار اساتذہ ہیں اور دوسو سے زائد بچے سکول میں ہیں۔ اس سلسلہ میں خاتون سرپنچ نسیم اختر نے بتایا کہ سرحد پر بسنے والے بچوں کے ساتھ سوتیلی ماں کا سلوک کیاجارہاہے کیوں کہ اگر سرکار نے کسی سکیم کے تحت سکول کا درجہ بڑھا کر ہائی سکول کیا تھا تو سکول کے اندر اساتذہ تعینات کرنے چاہئے تھے لیکن محکمہ تعلیم کے اعلی آفیسران نے ایسا نہیں کیا اور بچوں کا مستقبل متعلقہ محکمہ تباہ کررہاہے ۔ان

محکمہ جل شکتی کے عارضی ملازم نے تنگ آ کر خودکشی کر لی

پونچھ//محکمہ صحت عامہ(پی ایچ ای )میں عرصہ بیس سال سے عارضی ملازمت کرنے والے محمد ریاض ولد ولی محمد ساکن محلہ اعلیٰ پیر پونچھ نے گھر کے اخراجات پورے نہ ہونے پر تنگ آ کر زہر کھا کر خودکشی کر لی۔تفصیلات کے مطابق محکمہ پی ایچ ای میں تقریبا بیس سالوں سے عارضی ملازمت کرنے والے محمد ریاض ولود ولی محمد ساکن محلہ اعلیٰ پیر پونچھ نے پیر کے روز کوئی زہریلی شے کھا کر خودکشی کرنے کی کوشش کی جنھیں فورا ضلع ہسپتال پونچھ پہنچایا گیا جہاں ان کی نازک حالت دیکھتے ہوئے ڈاکٹروں نے انھیں جموں منتقل کر دیا ۔جموں میڈیکل کالج میں ڈاکٹروں کی از حد کوشش کے باوجود اس شخص نے دم توڑ دیا ۔اس دوران پولیس نے متوفی کی لعش کو ضابطے کی کارروائی اور پوسٹ مارٹم کے بعد لعش لواحقین کے حوالے کر دی۔ اس دوران پونچھ میں شام کو جل شکتی محکمہ کے ایک ڈیلی ویجر کی مبینہ خود کشی کے خلاف احتجاج کیاگیا۔مرنے والے کی شناخت فیاض احمد ولد

ضلع رام بن میں کشمیر شاہراہ پر طالبہ سکوٹی سے گر کر از جان

جموں// جموں وکشمیر کے ضلع رام بن کے رامسو علاقے میں سرینگر۔جموں شاہراہ پر گذشتہ شام دیر گئے ایک 23 سالہ طالبہ کی اسکوٹی سے گر جانے سے موت واقع ہوئی۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع رام بن کے رامسو علاقے میں شاہراہ پر طالبہ اسکوٹی سے گر کر شدید زخمی ہوگئی۔ انہوں نے بتایا کہ لڑکی جس کے سینے میں شدید چوٹیں آئی تھیں، کو بے ہوشی کے عالم میں بانہال ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اس کو مردہ قرار دیا۔  

لوہر نکہ منجھاڑی پنچایت تمام تر بنیادی سہولیات سے محروم،عوا م کااحتجاج

 مینڈھر//سب ڈویژن مینڈھر کی سرحدی تحصیل بالاکوٹ کی پنچائت لوہر نکہ منجھاڑی تمام تر بنیادی سہولیات سے محروم ہے۔ علاقہ کے مردو خواتین نے بنیادی سہولیات کو لیکر محکمہ جل شکتی کے خلاف زورداراحتجاج کرتے ہوئے نعرے بازی کی ۔سماجی کارکن راجہ وسیم خان نے کہا کہ لوہر نکہ منجھاڑی پنچائت بڑی آبادی پر مشتمل ہے لیکن بنیادی سہولیات کا نام ونشان ہی نہیں ہے۔ انہوں نے ریاستی حکومت و ضلع انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ علاقہ کے اندر دو لفٹ سکیموں کا کام کئی برسوں سے چل رہاہے لیکن محکمہ کے اعلی حکام سکیموں کی طرف توجہ نہیں دے رہے ہیں اور کام کو ادھورا چھوڑ دیا گیا ہے۔ انکا کہنا تھا کہ علاقہ کے اندر چشمے بھی بہت کم ہیں جس کی وجہ سے لوگوں کو کئی کلومیٹر دور سے پانی لانا پڑتاہے اور محکمہ کے اعلی حکام سے کئی بار کہا گیا کہ پانی کی لفٹ سکیموں کو مکمل کیا جائے تاکہ لوگوں کو پینے کا صاف پانی د

راجوری کے سکولوں میںبیت الخلاء تو بن گئے لیکن استعمال نہ ہوسکے

تھنہ منڈی// ضلع راجوری میں محکمہ ایجوکیشن کی طرف سے سرکاری اسکولوں میں طلبہ کے لئے بیت الخلا تعمیر کئے جنکے عوض فنڈز فراہم نہیں کئے جسکی وجہ سے سرکاری سکولوں میں زیر تعلیم طلبا کو کافی مشکلات کا سامنا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ضلع راجوری میں سال 2019-20 میں زیر تعلیم طلبہ و طالبات کی سہولت کے لئے پرائمری اسکول چرالی زون ڈھونگی، پرائمری اسکول چنی زون لوہر ہتھل،پرائمری اسکول کھر دینوں گجراں زون بلجرالاں، پرائمری اسکول ستھلا نگروٹہ زون بلجرالان، پرائمری اسکول لوہر ڈھکیاں زون تھنہ منڈی، پرائمری اسکول کنون والا زون بلجرالاں،پرائمری اسکول سجی بگلہ،پرائمری اسکول پٹیلی،پرائمری اسکول بیگو ہ ناڑہ زون تھنہ منڈی،پرائمری اسکول سحل،پرائمری اسکول چریالہ زون ڈنڈیسر،پرائمری اسکول سحر،پرائمری اسکول دھریاں،پرائمری اسکول جھنگڑ ھ زون نوشہرہ، مڈل اسکول اکھڑ زون موگلہ اور پرائمری اسکول راجدھانی زون تھنہ منڈی میں

بدھل شوپیاں سڑک کا کام جلد شروع کیا جائے

کوٹرنکہ//بدھل شوپیاں سڑک کی تعمیر کا مطالبہ کرتے ہوئے سماجی کارکن و سرپنچ محمد فاروق انقلابی نے لیفٹنٹ گورنر انتظامیہ سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ 26 جولائی 2018 اس سڑک کا سروے ہوا تھا جسکی کل مسافت 94.26 کلو میٹر تھی۔انہوں نے کہا کہ اس سڑک کے تعمیر کے لیے محکمہ تعمیرات عامہ نے جو ڈی پی آرتیار کی ہے اسمیں 597.24 کروڑ روپے کی رقم خرچ ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ سابقہ حکومت کے دوران مارچ 2018 میں سڑک کا سروے کروایا گیا تھا تا ہم حکومت کے گر جانے کی وجہ سے سارے تعمیری کام ٹھنڈے بستہ میں چلے گئے۔ انہوں کہا کہ ضلع راجوری اور ریاسی اضلاع کے لیے فائدہ مند ثابت ہوگی ۔انہوں نے کہا کے اس سڑک کے تعمیر ہونے   سے سیاحت کو کافی فروغ حاصل ہوگا اور پڑھے لکھے بے روز گار نو جوان کو فائدہ حاصل ہوگا۔ فاروق انقلابی نے کہا کہ بدھل سے شوپیاں کے درمیان آنے والا علاقہ پہلگام ،سونہ مرگ، گل مرگ سے ہزار گناخو

سرحدی گائوں ڈھوکری میں ترسیلی لائنیں آویزاں،لوگ برہم

پونچھ//سرحدی ضلع پونچھ کے سرحدی گائوں ڈھوری میںبجلی کی ترسیلی لائنیں پرانے اور بوسیدہ لکڑی کے کھمبوں اور سبز درختوں کیساتھ آویزاں ہیں۔نائب سرپنچ کمال دین نے محکمہ بجلی کے اعلی ملازمین و ریاستی گورنرر انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ان کے گائوں میں بجلی کی ترسیلی لائین  پرانے  بوسیدہ پولوں  پر لٹک رہی ہے جو کسی بڑے خطرے کا اعلان کر رہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ گائوں میں سڑک سے گزرتی ہوئے ترسیلی لائین اتنی نیچے ہے کہ کسی بھی ش خص کا ہاتھ اس سے لگ سکتا ہے ۔ انہوںنے  بتایا کہ گائوں کے عوام بہت بار متعلقہ محکمہ کے افسروں سے بجلی  کے نئے پول نسب کرنے کا مطالبہ کر چکے ہیں لیکن انہوں نے کوئی توجہ نہیں دی ۔انہوں نے الزام لگایا کہ محکمہ زمینی سطح پر کوئی کام نہیں کررہاہے ۔ ممبر پنچایت محمد اکبر کا کہنا تھا کہ لوگ کرایہ وقت پر دے رہے ہیں لیکن بجلی کی علاقہ کے اند

بدھل میں ٹاٹا موبائل حادثہ کا شکار

کوٹرنکہ// بدھل راج نگر سے اپر گھبر جارہی  ٹاٹا موبائل حادثہ کا شکار ہوگئی۔ ٹاٹا موبائل زیر نمبر Jk11B۔ 468 اوور لوڈنگ ہونے کی وجہ سے سڑک کے کنارے لڑھک گئی۔مقامی لوگوں نے بتایاکہ ٹاٹا موبائل میں ڈرائیور سمیت کل 6 لوگ بھی موجود تھے جو بال بال بچ گئے وہیں مقامی لوگوں نے موقع پر پہنچ کر بچائو کاروائی شروع کی۔؟   

زونل ایجوکیشن افسر ہرنی نے سکولوں کا دورہ کیا

مینڈھر//زونل ایجوکیشن افسر ہرنی نے سنیچر کو کئی سکولوں کا دورہ کرکے وہاں صورتحال کا جائزہ لیا ۔اس دوران انہوں نے کلاسوں میں جاکر بچوں سے کئی سولات بھی پوچھے اور اساتذہ سے مخا طب ہوکر کہا کہ کوئی بھی استاد ان دنوں سکول سے غیر حاضر نہیں رہے گا کیوں کہ کویڈ 19میں سکول کئی مہینوں تک بند رہے جس سے بچوں کی پڑھائی کافی حد تک ضائع ہوئی ۔ انہوں نے گورنمنٹ مڈ ل اسکول کانگڑہ کا دورہ کیا جہاں پر کئی کلاسوں میں جاکر انہوں نے استاتذہ کی موجودگی میں بچوں کا ٹیسٹ لیا اور کئی سوالات بھی پوچھے۔ البتہ انہوں نے اساتذہ کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ آپ لوگ ہرروز سکول آتے ہو اور میں نے دیکھا کہ بچوں نے مجھے جواب بھی دیا۔ اس دوران انہوں نے مزید کئی سکولوں میں اچانک چھاپے بھی مارے اور اساتذہ سے کہا جو بھی ٹیچر غیر حاضر رہے گا، اس کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔  

پی ڈی ڈی کیجول لیبر ورکرس یونین سرکل راجوری پونچھ کا احتجاج

پونچھ// محکمہ بجلی میں عارضی بنیادوں پر کام کرنے والے عارضی ملازمین نے پی ڈی ڈی کیجول لیبر ورکرس یونین سرکل راجوری پونچھ کے بینر تلے اپنے مطالبات کو لے کر سنیچر کے روز ضلع پونچھ کے صدر مقام پر احتجاج کیا۔ احتجاجیوں کے مطالبات میں ان کی نوکریوں کی مستقلی اور منیمم ویجز ایکٹ پر عمل درآمد خاص طور پر قابل ذکر ہیں۔ مظاہرین نے اس دوران جم کر نعرے بازی کی ۔احتجاجی مظاہرے کے شرکاء نے کہا کہ حکومت کی طرف سے ان کو مستقل کرنے کا اعلان ایک مذاق کے سوا کچھ بھی نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ کی خدمت کرنے میں وہ کوئی کسر باقی نہیں چھوڑتے ہیں جس کے عوض انہیں حقیر تنخواہ دی جاتی ہے وہ بھی دو سال سے بند ہے۔انہوں نے کہا کہ تنخواہ نہ ملنے کی وجہ سے نہ گھر کا چولھا جلتا ہے نہ قرض کی ادائیگی ہوتی ہے۔سرکل صدر کیجول لیبر ورکرس یونین سرکل راجوری پونچھ چوہدری عبدالغنی جاگل نے کہا کہ اگر حکومت نے اب بھی ا ن کے