تازہ ترین

لعنت ہے ہم پر اگر آج بھی ہم اقتدار کے پیچھے بھاگیں گے: عمر عبداللہ

سری نگر// نیشنل کانفرنس کے نائب صدر و سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے جمعرات کوکہا ”اگر ہم موجودہ سیاسی حالات میں بھی اقتدار کے پیچھے بھاگیں گے تو وہ ہمارے لئے لعنت ہے“۔ انہوں نے کہا” موجودہ حالات آپسی چھوٹی سیاسی لڑائیوں میں الجھے رہنے کے نہیں بلکہ ہمیں آج اپنے تشخص اور زمین کے لئے لڑائی لڑنی ہے“۔ نیشنل کانفرنس لیڈر پارٹی صدر دفتر پر ایک تقریب کے دوران اظہار خیال کررہے تھے۔ ان کا مزید کہنا تھا ” سال گذشتہ کے اوائل میں ہم سب جماعتیں الگ الگ راستوں پر چل رہی تھیں لیکن آج ہم ایک ہی پلیٹ فارم پر جمع ہونے کے لئے مجبور ہوئے ہیں“۔ عمر نے مزید کہا کہ یہاں کی سیاسی جماعتوں کو بہت پہلے متحد ہونا چاہئے تھا تاکہ حالات وہاں نہیں پہنچتے جہاں آج ہیں۔  

اراضی قوانین کی مخالفت کرنے والے اپنے ووٹ بینک کو غیر محفوظ محسوس کر رہے ہیں: جیتندر سنگھ

جموں// وزیر اعظم کے دفتر میں وزیر مملکت ڈاکٹر جیتندر سنگھ نے کہا ہے کہ نئے اراضی قوانین کے خلاف وہی لوگ آواز اٹھا رہے ہیں جو اپنے ووٹ بینک کو خطرے میں محسوس کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نئے اراضی قوانین سے جموں و کشمیر کے اقتصادی حالات مزید بہتر ہوں گے اور اعلیٰ تعلیمی ادارے بھی مزید مستحکم ہوں گے۔ نیشنل کانفرنس کے نائب صدر و سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ کے بیان کہ ’کشمیر کو فروخت کیا جا رہا ہے‘، کے ردعمل میں مرکزی وزیر نے کہا”کیا گپکار کے بنگلے برائے فروخت ہیں، کیا ان بنگلوں میں رہائش پذیر لوگ باہر کے کسی شخص کو ان میں رہنے کی اجازت دیتے ہیں“۔  

جموں کشمیر کے وسائل اور زمین کی لوٹ کی اجازت نہیں دیں گے: محبوبہ

سرینگر//سابق وزیر اعلیٰ اور پیپلز ڈیمو کریٹک پارٹی کی صدر محبوبہ مفتی نے جمعرات کو کہا کہ وہ کسی کو بھی جموں کشمیر کے وسائل اور زمین کی ”لوٹ“ کی اجازت نہیں دیں گی۔ انہوں نے اپنی رہائش گاہ پر نامہ نگاروں کو بتایا”ہم خاموش رہنے کے بجائے کسی کو بھی ہماری زمین اور وسائل لوٹنے کی اجازت نہیں دیں گے“۔ محبوبہ نے مرکز پر الزام عائد کیا کہ اُسے کشمیری عوام نہیں بلکہ یہاں کے وسائل پیارے ہیں۔ انہوں نے مرکز کو متنبہ کرتے ہوئے کہا”ہم صرف ٹویٹر سیاست دان نہیں، آج آپ نے ہمیں طاقت کے بل پر روک لیا لیکن اگلی بار ایسا نہیں ہوگا“۔ انہوں نے کہاکہ مرکز آئے دنوں نئے احکامات صادر کرکے جموں کشمیر کے لوگوں پر دباو ڈال رہی ہے۔محبوبہ نے وضاحت کرتے ہوئے کہا”اگر اُن کے پاس اتنی ہی طاقت ہے تو وہ چین کو لداخ میں بھارتی سر زمین سے کیوں نہیں نکالتے۔وہ چین کے سام

دنیا میں کورونا وائرس کی وجہ سے 11.73 لاکھ سے زیادہ افراد ہلاک

واشنگٹن / ریو ڈی جنیرو / نئی دہلی// دنیا میں کورونا وائرس (کووڈ-19) کی وبا کی وجہ سے اب تک 11.73 لاکھ سے زیادہ افراد ہلاک ہوچکے ہیں اور متاثرہ افراد کی کل تعداد 4.44 کروڑ کو عبور کرچکی ہے۔ جان ہاپکنز یونیورسٹی کے سائنس اور انجینئرنگ کے مرکز (سی ایس ایس ای) کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق ، کورونا وائرس سے 44482604 افراد متاثر اور 1173292افراد کو ہلاک ہوگئے ہیں۔ کورونا سے سب سے زیادہ متاثر امریکہ میں انفیکشن کی وجہ سے اب تک227673 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں اور متاثرہ افراد کی تعداد8855433 تک جا پہنچی ہے۔ ہندوستان میں ، پچھلے 24 گھنٹوں میں کورونا انفیکشن کی وجہ سے مزید 517 افراد کی موت ہوگئی ، جس سے ہلاک شدگان کی مجموعی تعداد 120526ہوگئی ، جب کہ اس وبا کے49881 نئے معاملوں کے ساتھ متاثرہ افراد کی تعداد 80.40 لاکھ سے زیادہ ہوگئی ہے۔  

ضلع گاندربل میں محکمہ پی ڈی ڈی کیخلاف احتجاج، شاہراہ پر ٹریفک میں رکاوٹ

کنگن//وسطی ضلع گاندربل میںتحصیل گنڈ کے گگن گیر علاقے میں جمعرات کومحکمہ بجلی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ ہوا جس کے سرینگر۔ لداخ شاہراہ پر ایک گھنٹے تک ٹریفک کی نقل و حمل میں خلل پڑا۔  کشمیر عظمیٰ کو ملی تفصیلات کے مطابق چونہ دجی گگن گیر علاقے میں اس وقت سرینگر ۔لداخ شاہراہ پر ٹریفک کی آمدورفت بند ہو گئی جب چونہ دجی گوجر پتی کے مرد وزن نے محکمہ بجلی کے خلاف احتجاجی دھرنا دیا ۔ مظاہرین کا کہنا تھا کہ 100گھرانوں پر مشتمل آبادی کے لئے محکمہ نے 100KV بجلی ٹرانسفارمر نصب کیا ہے اور اسی ٹرانسفارمر سے نزدیکی سی آر پی ایف کیمپ کو بھی بجلی سپلائی کی جارہی ہے جس کی وجہ سے وہاں اکثر بجلی متاثر رہتی ہے اور مقامی بستی کے لوگوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ مظاہرین کا مطالبہ تھا کہ مقامی بستی میں 250KV بجلی ٹرانسفارمر نصب کیا جائے تاکہ لوگوں کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے۔  ب

کورونا کے روزانہ معاملوں میں پھر اضافے کا رجحان،49881 نئے کیس ظاہر

نئی دہلی// کیرالہ ، مہاراشٹر اور دہلی میں کورونا وائرس کے انفیکشن کے معاملات میں اضافے کی وجہ سے ، ملک میں مسلسل دوسرے دن ان کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے اور یہ تعداد ایک دن میں 50 ہزار کے قریب پہنچ گئی ہے اور ہلاکتوں کی تعداد 500 سے بھی تجاوز کرگئی۔ جمعرات کو صحت و خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا کے 49881نئے کیس رپورٹ ہوئے ہیں اور متاثرہ افراد کی تعداد 80.40 لاکھ ہوگئی ہے۔ ایک روز قبل بدھ کے روز43843 مریضوں میں انفیکشن کی اطلاع ملی تھی ، جبکہ منگل کو یہ تعداد36470 تھی۔ پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران 56480 افراد نے وبا کو شکست دی۔ اس سے زیر علاج مریضوں کی تعداد7116سے گھٹ کر 603687ہوگئی ہے۔ وہیں 517 مریضوں کی موت کے بعد ، ہلاک ہونے والوں کی تعداد120527 ہوگئی ہے۔  

پارٹی کا احتجاجی پروگرام ناکام بنانے کیلئے سرینگر میں پی ڈی پی دفتر سیل:محبوبہ

سرینگر//پولیس نے جمعرات کو پیپلز ڈیمو کریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کے سرینگر دفتر کو محاصرے میں لے لیا۔ یہ اقدام پارٹی کے اس بیان کے بعد اُٹھایا گیا جس میں آج اراضی قوانین کی ترمیم کیخلاف احتجاج کا اعلان کیا گیا تھا۔ سابق وزیر اعلیٰ اور پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی نے پارٹی دفتر کو محاصرے میں لینے پر انتظامیہ کی مذمت کی ہے۔ محبوبہ نے ایک ٹویٹ میں کہا” پی ڈی پی کا سرینگر دفتر سیل کرکے کارکنان کو گرفتار کیا گیا ہے۔ایسے ہی ایک احتجاج کیلئے جموں میں اجازت دیدی گئی، تو یہاں اس کو ناکام بنانے کی کیا وجہ ہے؟“ یاد رہے کہ پی ڈی پی کارکنان نے گاندھی نگر جموں میں گذشتہ روز اراضی قوانین میں ترمیم کیخلاف احتجاجی مظاہرہ کیا ۔  

شمالی قصبہ سوپور میں آگ کی واردات ،تین رہائشی مکا ن خاکستر، دو کو جزوی نقصان

سرینگر//شمالی ضلع بارہمولہ کے سوپور قصبہ میں آگ کی ایک واردات میں تین رہائشی مکانوں کو شدید جبکہ مزید دو مکانوں کو جزوی نقصان ہوا۔ آگ کی یہ واردات گذشتہ شام دیر گئے قصبہ کے نہار پورہ علاقے میں پیش آئی۔ اطلاعات کے مطابق آگ غلام نبی شاہ کے دو منزلہ مکان سے ظاہر ہوئی جس نے عبد المجید شاہ اور ریاض احمد شاہ کے مکان کو بھی لپیٹ میں لیا۔  اطلاعات میں بتایا گیا ہے کہ تین مکانوں کے خاکستر ہونے کے نتیجے میں ان میں موجود لاکھوں کا سامان بھی خاک ہوگیا۔ اس واردات میں علی محمد شاہ اور بشیر احمد شاہ کے مکانوں کو بھی جزوی نقصان ہوا۔ اس دوران فائر اینڈ ایمر جنسی محکمہ کی ٹیم جائے مقام پر پہنچی اور مقامی لوگوں کی مدد سے آگ کو مزید پھیلنے سے روک لیا۔   

دہلی کے لوگوں پر کورونا وائرس اور آلودگی کی دوہری مار

نئی دہلی// ملک کی دارالحکومت دہلی کے لوگ حال میں دوہری مار جھیل رہے ہیں۔ ایک تو آب و ہوا میں آلودگی کا ’زہر‘گھلا ہوا ہے تودوسری طرف جان لیوا کورونا وائرس کے ہر روز ریکارڈ توڑ نئے معاملے سامنے آرہے ہیں۔ دارالحکومت کی ہوا میں معیار کی سطح ایک بار پھر ’بہت خراب‘ زمرے سے بڑھکر ’شدید خراب حالت‘ میں پہنچ گئی ہے۔دارالحکومت میں ہوا کے معیار کا انڈیکس (اے کیو آئی) کی سطح 400 کو پار کرگئی ہے جو سب سے زیادہ خراب مانی جانے والے زمرے میں ا?تی ہے۔ دہلی آلودگی کنٹرول کمیٹی (ڈی پی سی سی) کے آج جاری اعدادو شمار کے مطابق صبح علی پور میں اے کیو آئی 405 تو آنند وہار میں یہ سطح 401 درج کی گئی۔وزیرپور میں یہ 410 تھا۔ مرکزی آلودگی کنٹرول بورڈ(سی پی سی بی) کے مطابق جہانگیر پوری میں اے کیو آئی کی سطح 420 درج کی گئی۔لودھی روڈ پرآئی کیو یو 311،آر کے پورم میں 376 ،آ

کانگریس نے جموں و کشمیر میں زمین خریداری کے متعلق قانون میں ترمیم کی مخالفت کی

نئی دہلی// کانگریس نے جموں وکشمیر میں زمین خریداری سے متعلق قانون میں تبدیلی کرکے ملک کے ہر شہری کو وہاں زمین خریدنے کی اجازت دینے کی مخالفت کرتے ہوئے کہا ہے کہ مودی حکومت من مانی کر کے لوگوں کی منشا کے خلاف قانون مسلط کر رہی ہے۔  کانگریس کے ترجمان ابھیشیک منو سنگھوی نے بدھ کے روز پریس کانفرنس میں کہا کہ جموں و کشمیر کے تعلق سے پارٹی کا واضح موقف ہے اور پارٹی کی اعلیٰ ترین پالیسی ساز کانگریس ورکنگ کمیٹی میں اس پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ پارٹی ہمیشہ قانون مسلط کرنے خلاف رہی ہے اور جموں و کشمیر میں پارٹی اراضی سے متعلق قانون میں تبدیلی کے فیصلے کی مخالفت کرتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس جموں و کشمیر کو مرکزی کے زیرانتظام علاقہ بنانے اور وہاں زمین خریدنے کے قانون میں ترمیم کی مخالفت کرتی ہے۔ اس سلسلے میں پارٹی کے اعلی پالیسی سازکانگریس ورکنگ کمیٹی میں تبادلہ خیال کیا گیا تھا اور

راجوری میں ایل او سی کے نزدیک دھماکہ، دو فورسز اہلکار زخمی

سرینگر//ضلع راجوری میں کنٹرول لائن کے نزدیک ایک دھماکے میں بدھ کو دو فورسز اہلکار زخمی ہوگئے۔ یہ واقعہ ضلع کے تارکنڈی علاقے میں پیش آیا۔ حکام کے مطابق یہ دھماکہ مشتبہ بارودی سرنگ پھٹنے کی وجہ سے ہوا۔ اس دھماکے میں ایک بی ایس ایف اور ایک فوجی اہلکار زخمی ہوگئے جنہیں علاج و معالجہ کیلئے نزدیکی ہیلتھ مرکز پر پہنچایا گیا۔  

پولیس کا پونچھ میں بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود برآمد کرنے کا دعویٰ

جموں// پولیس نے صوبہ جموں کے ضلع پونچھ میں جنگجوو¿ں کی ایک کمیں گاہ کو تباہ کر کے بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود برآمد کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ ایس ایس پی پونچھ رمیش انگرال نے بتایا کہ ایک مصدقہ اطلاع پر پولیس اور فوج کی آر آر کی ایک مشترکہ ٹیم نے ضلع پونچھ کے مینڈھر کے کالابن علاقے کے جنگل میں منگل اور بدھ کی درمیانی شب تلاشی آپریشن شروع کیا۔ انہوں نے کہا کہ آپریشن کے دوران جنگجوو¿ں کی ایک کمیں گاہ کا پردہ چاک کیا گیا اور بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود برآمد کیا گیا۔  

ملک میں کورونا ہلاکتوں کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 20ہزار سے متجاوز

نئی دہلی// ملک میں کورونا وائرس کے کیسز میں ایک بار پھر اضافہ ہوا ہے اوریہ ایک بار پھر 40 ہزار کو عبور کرچکے ہیں اور ایک ہی دن میں اموات کی تعداد بھی 500 تک جا پہنچی ہے۔ مرکزی صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت کی جانب سے بدھ کے روز جاری تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں کوروناوائرس کے 43،893 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جبکہ ایک دن پہلے ہی یہ تعداد 36،470 تھی۔ اسی مدت کے دوران 58،439 کورونا مریضوں نے وبا کو شکست دی،جس سے ایکٹیو کیسز کی تعداد 15،054 سے گھٹ کر 6،10،803 رہ گئی۔  

شمالی کشمیر کے سوپور میں دریائے جہلم سے کمسن بچے کی لاش بر آمد

سرینگر//شمالی کشمیر کے سوپور میں بدھ کو اُس کمسن بچے کی لاش دریائے جہلم سے بر آمد کی گئی جس نے ایک ہفتہ قبل مبینہ طور خود کشی کی غرض سے دریا میں چھلانگ ماری تھی۔ حکام کے مطابق12سالہ شاہد نذر ساکن احد آبادنے21اکتوبر کو دریا میں چھلانگ لگائی تھی اور تب سے اُس کی تلاش جاری تھی۔ حکام نے مزید کہا کہ بچے کی لاش بسیار تلاش کے بعد آج صبح بر آمد کی گئی۔ لاش کو قانونی لوازمات پوری کرنے کیلئے سب ضلع اسپتال سوپور پہنچایا گیا ہے جس کے بعد اُسے آخری رسومات کیلئے لواحقین کے حوالے کیا جائے گا۔  

بہار انتخابات کا پہلا مرحلہ، 71 اسمبلی نشستوں کیلئے ووٹنگ کا آغاز

پٹنہ//بہار میں پہلے مرحلے میں اسمبلی کی 71 نشستوں کے لئے سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان کورونا انفیکشن کی روک تھام کے لئے سخت ہدایات پر عمل کرتے ہوئے ووٹنگ بدھ کی صبح 7 بجے سے شروع ہوگئی۔  ریاستی الیکشن آفس کے مطابق ان 71 اسمبلی حلقوں میں 31380 پولنگ بوتھوں پر صبح 7 بجے پولنگ شروع ہوگئی ہے۔  کورونا دور میں ملک کے پہلے بڑے انتخابات میں رائے دہندگان اور انتخابی کارکنوں کے کورونا وائرس سے بچاو¿ کے لئے وسیع تر انتظامات کیے گئے ہیں۔  تمام پولنگ اسٹیشنوں پر سینی ٹائزر ، دستانے اور ماسک کا انتظام کیا گیا ہے۔ پولنگ اسٹیشن میں داخل ہونے سے پہلے تمام ووٹرز کے ٹمپریچر کی اسکیننگ کی جارہی ہے۔  

جموں کشمیر اور لداخ کے لوگوں کے حقوق پر بڑا حملہ:عوامی اتحاد برائے گپکار اعلامیہ

سرینگر//عوامی اتحاد برائے گپکار اعلامیہ نے منگل کو جموں کشمیر کی زمین سے متعلق قوانین میں ترمیم کو ”غیر آئینی“ قرار دیتے ہوئے اس کوجمو ں کشمیر اور لداخ کے لوگوں کے حقوق پر”بڑا حملہ“ قرار دیا۔  فورم کے ترجمان سجاد لون نے کہا ”یہ جموں کشمیر اور لداخ کے لوگوں کے حقوق پر بڑا حملہ ہے۔فورم اس کا ہر محاذ پر مقابلہ کرے گا“۔  انہوں نے مزید کہا”یہ اُن ہزاروں مجاہدین آزادی اور کسانوںکی تذلیل ہے جنہوں نے شخصی راج کیخلاف جد و جہد کی ۔یہ آرڈر آئینی جمہوری اُصولوں کی ایک اور کھلم کھلا خلاف ورزی ہے“۔ یاد رہے کہ آج مرکزی وزارت داخلہ نے جموں کشمیر اور لداخ کی زمین سے متعلق قانون کو نوٹیفائی کیا جس کی رو سے اب کوئی بھی غیر مقامی شہری یہاں کی زمین خرید سکتا ہے۔تاہم اس میں ذرعی زمین کو شامل نہیں کیا گیا ہے۔  

مرکز کے ہاتھوں جموں کشمیر برائے سیل:لینڈ لا نوٹیفائی کرنے پر عمر و محبوبہ کا سخت رد عمل

سرینگر//سابق وزرائے اعلیٰ عمر عبد اللہ اور محبوبہ مفتی نے منگل کو جموں کشمیر و لداخ کی زمین سے متعلق قانون کو نوٹیفائی کئے جانے کیخلاف سخت رد عمل ظاہر کرتے ہوئے اس کو ”مرکز کے ہاتھوں جموں کشمیر کی سیل“ سے تعبیر کیا۔ اپنے ایک ٹویٹ میںعمر نے لکھا” جموں کشمیر کی زمین سے متعلق ناقابل قبول ترامیم۔اب تو ڈومیسائل کی علامتی بندش کو بھی ختم کیا گیا۔اب جموں کشمیرسیل پر ہے“۔ محبوبہ نے بھی اپنے ایک ٹویٹ میں ایسے ہی سخت رد عمل کا اظہار کیا۔ انہوں نے لکھا” زمینوں سے متعلق جاری نوٹیفکیشن حکومت ہند کی طرف سے جموں و کشمیرکے لوگوں کے اختیارات ختم کرنے، جمہوری حقوق سے محروم رکھنے اور وسائل پر قبضہ کرنے کے سلسلے کی ایک اور مذموم کوشش ہے۔دفعہ370کو منسوخ کرنے اور وسائل کی لوٹ کے بعد ان زمینوں کی کھلے عام فروخت کیلئے راہ ہموار کی گئی“۔ قابل ذکر ہے کہ آج مرکزی و

امریکی وزیر خارجہ اور دفاع کی قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوول سے میٹنگ

نئی دہلی// امریکی وزیر خارجہ مائک پومپیو اور وزیر دفاع مارک ایسپر نے منگل کو یہاں قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوول سے ملاقات کی اورحکمت عملی کی اہمیت کے حامل مسئلوں اور چیلنجوں پر تفصیلی سے غور و خوض کیا۔ ہندوستان امریکہ ٹوپلس ٹو میٹنگ میں حصہ لینے آئے دونوں امریکی وزیر میٹنگ شروع ہونے سے پہلے ساو¿تھ بلاک پہنچے جہان ڈوول نے ان کا خیر مقدم کیا۔ سرکاری ذرائع نے میٹنگ کو ’بےحد تخلیقی‘ قرار دیتے ہوئے یہاں بتایا کہ سلامتی ،استحکام اور اصولوں پر مبنی علاقائی اور عالمی سکیورٹی کے ماحول کو یقینی بنانے کے مقصد سے ہر شعبہ میں صلاحیت بڑھانے کےلئے دونوں ملکوں کے درمیان حکمت عملی کی شراکت داری کو آگے بڑھانے کے سلسلے میں بحث ہوئی۔ قومی سلامتی کے مشیر اور دونوں امریکی وزرا کے درمیان یہ میٹنگ ایسے وقت میں ہوئی ہے جب مشرقی لداخ میں ایکچوو¿ل لائن آف کنٹرول پر ہندوستا

جنوبی ضلع پلوامہ میں ریچھ کے حملے میں4شہری زخمی

سرینگر//جنوبی ضلع پلوامہ کے روہمو گاوں میں منگل کو ریچھ نے حملہ کرکے چار شہریوں کو زخمی کردیا۔ نیوز ایجنسی کے این او کے مطابق ریچھ آج صبح سویرے نمودار ہوکر چار افراد پر حملہ آور ہو،ا اور چاروں کو زخمی کردیا جن میں ایک خاتون بھی شامل ہے۔ زخمی شہریوں کو پبلک ہیلتھ سینٹر روہمو پہنچایا گیا جہاں سے اُنہیں ضلع اسپتال پلوامہ منتقل کیا گیا۔ زخمی شہریوں کی شناخت عبد الاحد ڈار، اشفاق احمد ڈار، عمر گل اور تاجہ بیگم ساکنان روہمو کے طور ہوئی ہے۔ دریں اثناءمقامی لوگوں نے اُنہیں ایمبولینس فراہم نہ کئے جانے پر پی ایچ سی روہمو کیخلاف احتجاج کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ایمبولینس کی عدم دستیابی کے باعث اُنہیں سبھی زخمیوں کو پرائیویٹ گاڑیوں میں پلوامہ پہنچا نا پڑا۔  

کنگن میں پانی کی عدم دستیابی کیخلاف لوگوں کا احتجاج،لیہہ۔سرینگر شاہراہ پر ٹریفک میں خلل

کنگن//وسطی ضلع گاندربل کے چکی پرنگ کجپارہ کنگن میں پینے کے پانی کی عدم دستیابی کے خلاف لوگوں نے منگل کو سرینگر ۔لیہہ شاہراہ پر احتجاجی دھرنا دیکر گاڑیوں کی آمدورفت میں خلل پڑا۔  چکی پرنگ کجپارہ کنگن کے مردو زن نے سرینگر۔ لداخ شاہراہ پر محکمہ جل شکتی کے خلاف احتجاجی دھرنا دیا جس کے نتیجے میں شاہراہ پر ٹریفک کی آمدورفت ایک گھنٹے تک متاثر رہی۔  مظاہرین کا کہنا تھا کہ ان کی بستی میں گذشتہ بیس دنوں سے پینے کے پانی کی شدید قلت ہے اور لوگ مجبور ہوکر مضر صحت پانی استعمال کرنے پر مجبور ہیں جس کی وجہ سے یہاں مہلک بیماریاں پھوٹ پڑنے کا خطرہ لاحق ہے۔  کنگن پولیس نے جائے وقوع پر جاکر احتجاجی مظاہرین کو یقین دلایا کہ ان کے اس مسلے کو جلد حل کیا جائے گا جس کے بعد انہوں نے پرامن طور پر دھرنا ختم کیا اور شاہراہ پر ٹریفک بحال ہوگیا۔