اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کا سالانہ اجلاس

 سرینگر// اقوام متحدہ جنرل اسمبلی کے سالانہ اجلاس کے ایجنڈے میں کشمیر کو حل طلب تنازعہ کے طور پر شامل کرلیا گیا ہے۔ اجلاس میں پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان جموں وکشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کیخلاف آواز بلند کریںگے۔سی این ایس کے مطابق اقوام متحدہ کی75ویں جنرل اسمبلی (یو این جی اے)اجلاس میں اپنے خطاب میں پاکستانی وزیر اعظم عمران خان ایک مرتبہ پھر کشمیری عوام کے مسائل اور جموں وکشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خاتمے کے لیے عالمی برادری سے اقدام اٹھانے کا مطالبہ کریں گے۔اقوام متحدہ میں پاکستان کے مستقل نمائندے منیر اکرم نے کہا کہ وزیر اعظم پاکستان 5 اگست2019 کو اٹھا ئے گئے بھارتی اقدام، جس میں کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کردی گئی تھی، کو ختم کرنے کی کوشش کریں گے۔انہوں نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان 25 ستمبر کو اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کریں گے اور غیر قانونی فنانسنگ س

سلامتی کونسل کشمیریوں سے کئے گئے وعدے پورا کریں؛اسلامی ممالک کی تنظیم

سرینگر//اسلامی تعاون تنظیم نے اقوام متحدہ کی کونسل برائے انسانی حقوق پر فلسطین اور کشمیر سمیت دنیا کے دیگر خطوں میں مسلمانوں کے خلاف انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر موثر آواز اٹھانے کے لیے زور دیا ہے۔سی این آئی کے مطابق جنیوا میں جاری کونسل کے اجلاس میں پاکستان کے سفیر خلیل ہاشمی نے او آئی سی کی نمائندگی کرتے ہوئے بیان دیا۔ انہوں نے کہا کہ او آئی سی کو دنیا میں اسلامو فوبیا اور مذہبی عدم برداشت کے بڑھتے ہوئے واقعات پر گہری تشویش ہے۔انہوں نے فرانسیسی میگزین کی جانب سے گستاخانہ خاکوں کی اشاعت اور مذہبی کتب کو جلانے جیسے واقعات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ مذہبی جذبات کو مجروح کرنا ردعمل پر اکسانے کی کوشش ہے۔ آزادی اظہار کی آڑ میں ایسی کوششوں کو جواز فراہم نہیں کیا جاسکتا۔او آئی سی کے بیان میں بھارت کے زیر تسلط جموں و کشمیر میں بنیادی انسانی حقوق کی پامالی پر شدید تشویش کا اظہار کیا گیا

تازہ ترین