تازہ ترین

دنیا میں کورونا کی تباہ کاریاں جاری

جنیوا/ / عالمی وبا کورونا وائرس (کووڈ ۔19) کا قہر دن بدن بڑھتا ہی جارہا ہے اور دنیا بھر میں اس سے متاثرہ افراد کی تعداد1 کروڑ 19 سے متجاوز کرگئی ہے جبکہ ہلاکتوں کی تعداد546720سے زیادہ ہوگئی ہے ۔دنیا بھر میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 1 کروڑ 19 لاکھ 54 ہزار 942 تک جا پہنچی ہے جبکہ اس سے ہلاکتیں 5 لاکھ 46 ہزار 720 ہو گئیں۔کورونا وائرس کے دنیا بھر میں 45 لاکھ 5 ہزار 864 مریض اسپتالوں، قرنطینہ مراکز میں زیرِ علاج اور گھروں میں آئسولیشن میں ہیں، جن میں سے 58 ہزار 155 کی حالت تشویش ناک ہے جبکہ 69 لاکھ 2 ہزار 358 مریض صحت یاب ہو چکے ہیں۔امریکہ تاحال کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثرہ ملک ہے جہاں ناصرف کورونا مریض بلکہ اس سے ہلاکتیں بھی اب تک دنیا کے تمام ممالک میں سب سے زیادہ ہیں۔امریکہ میں کورونا وائرس سے اب تک 1 لاکھ 33 ہزار 972 افراد موت کے منہ میں پہنچ چکے ہیں جبکہ اس سے بیمار

پاکستان میں برسراقتدار پارٹی کے 40 اراکین پارلیمنٹ واسمبلی کورونا سے متاثر

اسلام آباد// پاکستان میں برسراقتدار پارٹی کے 40 اراکین پارلیمنٹ و اسمبلی کورونا وائرس کی زد میں آچکے ہیں۔جیونیوزکے مطابق برسراقتدارپارٹی کے اراکین پارلیمنٹ اور اسمبلی کو ملا کر مجموعی طور سے 40ممبران کورونا سے متاثر ہوچکے ہیں جبکہ دو کی اس وائرس سے موت ہوچکی ہے ۔پاکستان میں کورونا وائرس کا پہلا معاملہ فروری میں سامنے آیا تھا۔ حال ہی میں ملک کے وزیرمملکت برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا اس کی زد میں آئے تھے ۔ اس سے پہلے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور وزیر ریلوے بھی وائرس کی زد میں آچکے ہیں۔ کورونا سے متاثر ہونے والوں میں پی ٹی آئی کے پندرہ اراکین پارلیمنٹ، ایک سینیٹر، باقی اراکین اسمبلی ہیں۔نیشنل اسمبلی کے اسپیکر اسد قیصر، وزیر مملکت برائے ڈرگ کنٹرول شہریار خان آفریدی اور صوبہ سندھ کے گورنر عمران اسماعیل کو بھی کورونا ہوچکا ہے ۔پاکستان کے کورونا کے تازہ اعدادوشمار کے مطابق دو لاکھ 37 ہزا

بدترین مرحلہ آنا باقی :ڈبلیو ایچ او

جنیوا// ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (ڈبلیو ایچ او) نے وارننگ دی ہے کہ دنیا بھر میں کوویڈ۔ 19 انفیکشن کا بدترین دور آنا باقی ہے ۔ڈبلیو ایچ او کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر ٹیڈروس گیبریسس نے کہا ’’انفیکشن کا قہر تیزی سے پھیل رہا ہے اور ہم واضح طور پر اس وبا کی انتہا پر نہیں پہنچ سکے ہیں۔ عالمی سطح پر اموات کی تعداد کم ہوتی دکھائی دے رہی ہے لیکن حقیقت میں صرف چند ممالک نے مرنے والوں کی تعداد کم کرنے میں اہم پیشرفت کی ہے جبکہ دوسرے ممالک میں اموات میں ابھی بھی اضافہ ہورہا ہے ۔انہوں نے کہا ’’ہم اس بیماری کے ابتدائی مرحلے سے ہی کہتے آرہے ہیں کہ یہ وائرس بہت خطرناک ہے اور ہم نے اس وائرس کو ابتداء سے ہی لوگوںکا سب سے بڑا دشمن قرار دیا ہے ۔ اس کے دو خطرناک امتزاج ہیں، اول یہ کہ یہ بہت تیزی سے پھیلتا ہے اور دوسرا یہ کہ اس سے موت ہوسکتی ہے ، اسی لئے ہم فکرمند تھے اور دنیا کو مسلسل احتی

پاکستان میں فرضی لائسنس والے 28 پائلٹ برطرف

 اسلام آباد// حکومت پاکستان نے فرضی لائسنس کی مدد سے ملک کی مختلف ایئر لائنز میں تعینات 28 پائلٹوں کو برطرف کردیا ہے ۔ وزارت اطلاعات و نشریات کے مطابق منگل کے روز وزیر اعظم عمران خان کی صدارت ہوئے کابینہ کے اجلاس میں فرضی لائسنس کی مدد سے ایئر لائنز میں خدمات انجام دینے والے پائلٹوں کے خلاف فوجداری کارروائی شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ ایک دیگر کاروائی کے تحت پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی نے دو خواتین پائلٹوں سمیت 34 مزید پائلٹوں کے لائسنس معطل کردیئے ہیں۔ معطل پائلٹوں کے لائسنس کی جانچ کے بعد کابینہ اس پر فیصلہ کرے گی۔ اس سے قبل جون میں ملک کے شہری ہوا بازی کے محکمہ نے سرکاری ایئر لائنزکمپنی پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائنز ، ایئر بلو اور سیرین ایئرسمیت کئی ایئر لاینز کے 160 پائلٹوں کے لائسنس کو مشکوک قرار دیتے ہوئے جانچ عمل مکمل ہونے تک ایئر لائنز کی انتظامیہ کوانہیں

ایف بی آئی نے چین پر جاسوسی کا الزام لگایا

واشنگٹن// امریکی خفیہ ایجنسی فیڈرل بیورو آف انویسٹی گیشن (ایف بی آئی) کے ڈائریکٹر کرس رے نے امریکہ میں جاسوسی کرنے کے لئے چین پر تنقید کرتے ہوئے اسے ملک کے مستقبل کے لئے طویل مدتی خطرہ قرار دیا۔ڈائریکٹر کرس رے نے ہاؤسٹن انسٹی ٹیوٹ میں ایک ویڈیو ایونٹ کے دوران بتایا کہ ’’ہمارے ملک کی اطلاعات اور املاک دانش اور ہماری معاشی زندگی کیلئے سب سے بڑی طویل مدتی خطرہ چین کی خفیہ اورمعاشی جاسوسی ہے ۔ یہ ہماری معاشی اورقومی سلامتی کیلئے بہت بڑا خطرہ ہے ۔‘‘انہوں نے بتایا کہ امریکہ اب اس نقطہ پر پہنچ گیا ہے جہاں ایف بی آئی روزانہ ہر دس گھنٹے میں چینی جاسوسی سے متعلق نئے معاملے کھول رہی ہے ۔ڈائریکٹر نے بتایا کہ ’’فی الحال پورے ملک میں تقریبا 5,000 سرگرم جاسوس مخالف معاملوں میں سے تقریبا آدھے چین سے متعلق ہیں اور اس وقت، چین ضروری کورونا وائرس (کووڈ۔19) تحقیقی ک

تازہ ترین