تازہ ترین

غیر حاضر رہنے کی پاداش میں 6ٹیچر نوکری سے بر خواست

تاریخ    5 دسمبر 2021 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
سرینگر// حکومت نے غیر حا ضر رہنے کی پاداش میں مزید6اساتذہ کو نوکریوں سے بر خواست کیا ہے۔ محکمہ تعلیم کی جانب سے جاری حکم نامہ  کے مطابق اویناش پنڈتا کو وزیر اعظم پیکیج  کے تحت مارچ2011میں ضلع کیڈر کپوارہ میں تعینات کیا گیا تھا،اور مذکورہ استاد نے جولائی2011میں چیف ایجوکیشن افسر کپوارہ  کے پاس تمام اسناد کے ساتھ رپورٹ کیا اور اس کے بعد واپس نہیں آئے۔آرڈر میں کہا گیا کہ اس معاملے کو27اکتوبر2021کو نامزد کمیٹی کے سامنے زیر غور لایا گیا۔آرڈر میںکہا گیاکہ کمیٹی کی جانب سے فیصلے کے تناظر میں  مذکورہ ٹیچر کوڈیوٹی سے غیر حاضر رہنے کی پاداش میں نوکری سے برطرف کیا گیا ہے۔ ایک اور علیحدہ حکم نامہ کے مطابق شاہدہ زرگر جو کہ مڈل اسکول اشٹینگو کوئل مقام بانڈی پورہ میں تعینات تھی، پہلے2016سے2017تک غیر حاضر رہی اور اپریل2021کے بعد پھر سے غیر حاضر رہی۔ حکم نامہ میں کہا گیا کہ مذکورہ استانی کو14جولائی2021کو موقعہ دیا گیا تھا کہ وہ 10دنوں کے اندر اپنے دفاع میں نوٹس کا جواب دیں۔ آرڈر کے مطابق ڈیوٹی سے غیر قانونی طور پر غیر حاضر رہنے کی پاداش میں انہیں بھی نوکری سے برطرف کیا گیا۔ نوکری سے برف ہونے والے دیگر اساتذہ میں مڈل اسکول ہاکنار،ہری گنون گاندربل میں تعینات عارف اکبر بٹ، مڈل اسکول ڈانگر پورہ زون با غات کنی پورہ میں تعینات سائمہ مشتاق فاروقی، گرلز ہائر اسکینڈری اسکول صورہ سرینگر میں تعینات اسما کوثر، اور بائز پرائمری اسکول ہانجی پورہ تارزو سوپور میں تعینات کلثومہ قادر بھی شامل ہیں۔ علیحدہ علیحدہ حکم ناموں میں کہا گیا ے’’اساتذہ کو اپنی ڈیوٹی دوبارہ شروع کرنے کے لیے کافی مواقعے فراہم کیے گئے جس سے وہ استفادہ کرنے میں ناکام رہی ۔حکم نامہ میں مزید کہا گیا ہے’’کمیٹی کے فیصلے کے مطابق اس سے قبل نومبر کے آخری ہفتے میں محکمہ سکول ایجوکیشن نے چھ اساتذہ کو فرائض سے غفلت برتنے پر برطرف کر دیا تھا۔