تازہ ترین

وادی سرمائی کروٹ

پہاڑوں پر برفباری اور میدانوں میں بارشوں کا آغاز

تاریخ    23 اکتوبر 2021 (00 : 01 AM)   


اشفاق سعید

  سہ پہر24 اکتوبرسے 3نومبر تک موسم خشک رہیگا، سردی بڑھے گی

 
 سرینگر// محکمہ موسمیات کے عین مطابق وادی بھر کے میدانی علاقوں میں جمعہ کی شام سے گرج چمک کیساتھ بارشوں کا سلسلہ شروع ہوا جبکہ پہاڑی علاقوں میں ہلکی برفباری بھی شروع ہوگئی۔ محکمہ کا کہنا ہے کہ آج یعنی 24اکتوبر کی سہ پہر سے وادی کے بیشتر میدانی علاقوں میں ہلکی برفباری ہوگی جبکہ پہاڑی علاقوں میں 6انچ تک برفباری ہوسکتی ہے۔مھخمہ موسمیات کے ڈپٹی ڈائریکٹر مختار احمد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ وادی بھر کے میدانی علاقوں میں جمعہ کی شام سے ہلکی بارشوں کا سلسلہ شروع ہوا جبکہ پہاڑی علاقوں میں ہلکی برفباری ہوتی رہی۔انہوں نے کہا کہ جمعہ کی شام سے دراس، زوجیلا،منی مرگ، زانسکار، گلمرگ، سونہ مرگ، گریز ،تلیل، رازدان پاس،مژھل،نوگام سیکٹر،پیر کی گلی، مغل روڑ اورکوکر ناگ کے کپرن علاقوں میں برفباری شروع ہوئی۔انکا کہنا تھا کہ وادی کے میدانی علاقوں میں سنیچر کی شام سے بارشوں کا سلسلہ رات بھر رک رک کر جاری رہیگا اور یہی سلسلہ سنیچر بھی جاری رہیگا لیکن سنیچر کی سہ پہر سے شوپیان، سدھو،کولگام ،اننت ناگ، کپوارہ، بارہمولہ اور دیگر میدانی علاقوں میں ہلکی برفباری ہوسکتی ہے۔انہوں نے کہا کہ24 دوپہر سے موسم ٹھیک رہیگا۔ انکا کہنا ہے کہ 25اکتوبر سے3نومبر تک موسم ٹھیک رہے گا۔ڈپٹی ڈائریکٹر نے کہا کہ تین دن تک لگاتار ہلکی بارشیں اور اوپری علاقوں میںہلکی و درمیانہ درجے کی  برفباری سے درجہ حرارت میں ایک دم سے گراوٹ اائے گی اور سردی کا زور شروع ہوگا۔ادھرشہر سرینگر میں  جمعرات اور جمعہ کی درمیانی شب رواں موسم کی سرد ترین رات ریکارڈ کی گئی ۔ محکمہ موسمیات نے بتایا کہ کم سے کم درجہ حرارت  معمول سے تین ڈگری کم تھا۔ محکمہ کے مطابق گلمرگ وادی کا سر د ترین علاقہ رہا ۔ انہوں نے بتایا کہ وادی کے ساتھ ساتھ لداخ خطہ بھی شدید سردی کی لپیٹ میں ہے ۔ محکمہ موسمیات کے مطابق مغربی ہوائیں ایک مرتبہ پھر جموں کشمیر میں اثر انداز ہو گئی ہے اور موسمی صورتحال میں تبدیلی آئی ہے ۔ محکمہ موسمیات کی طرف سے جاری کی گئی ایڈوائزری  میں کہا گیا ہے کہ عام لوگ سرینگر جموں، سنتھن کشتواڑ،مغل شاہراہوں پر معلومات جانے بغیر سفر کرنے سے گریز کریں۔ایڈوائزری میں کہا گیا ہے کہ شاہرائوں پر گاڑیوں کی آمد و رفت معطل ہوسکتی ہے کیونکہ پہاڑی علاقوں میں ہلکی بارباری اور بارشیں ہونے سے پتھر گر سکتے ہیں پسیاں گر سکتی ہیں۔