تازہ ترین

بحریہ کیلئے54تارپیڈو کی خریداری

بھارت کاامریکہ کے ساتھ معاہدہ

تاریخ    23 اکتوبر 2021 (00 : 01 AM)   


نئی دہلی//وزارت دفاع نے بحریہ کے لیے 423 کروڑ روپے کی لاگت سے امریکہ سے ایم کے 54 تارپیڈو کی خریداری کا معاہدہ کیا ہے ۔وزارت دفاع کے ایک ترجمان نے کل یہاں بتایا کہ معاہدہ غیر ملکی فوجی فروخت کے زمرے کے تحت کیا گیا ہے ۔ یہ تارپیڈو بحریہ کے جاسوسی طیارے پی-8I کے لیے خریدے جا رہے ہیں۔یہ تارپیڈو کسی بھی جنگی جہاز ، ہیلی کاپٹر یا ہوائی جہاز سے فائر کیا جا سکتا ہے اور یہ پانی کے اندر بھی اہداف کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے ۔ہندوستان نے گزشتہ سال اس خریداری کی منظوری دی تھی۔ادھر برطانوی بحریہ کے سربراہ ایڈمرل سر ٹونی رڈاکن کل ہندوستان کے تین روزہ دورے پر یہاں پہنچے اور صبح نیشنل وار میموریل میںجاں بحق فوجیوں کو خراج عقیدت پیش کیا۔ اس کے بعد وہ بحریہ کے سربراہ ایڈمرل کرمبیر سنگھ سے ملنے کے لیے ساؤتھ بلاک پہنچے ۔ اس سے قبل انہیں ساؤتھ بلاک کے لان میں گارڈ آف آنر پیش کی گئی۔ایڈمرل رڈاکن کا ممبئی میں بحریہ کی مغربی کمانڈ کا دورہ بھی طے ہے جہاں وہ چیف آف کمانڈ ، وائس ایڈمرل آر ہری کمار سے بھی بات چیت کریں گے ۔ اس دوران وہ برطانوی بحریہ کے طیارہ بردار جہاز ملکہ الزبتھ کا بھی دورہ کریں گے جو یہاں مشترکہ فوجی مشقوں میں حصہ لینے کے لیے آئے ہوئے ہیں۔دونوں ممالک نے دوطرفہ تعلقات کو 2004 میں اسٹریٹجک پارٹنرشپ میں تبدیل کر کے ایک نئی جہت دی تھی۔ اس کے بعد دونوں ممالک کے وزرائے اعظم کے دوروں نے انہیں مزید تقویت دی۔ 4 مئی کو دونوں وزرائے اعظم نے ایک ورچول کانفرنس میں حصہ لیا تھا اور دونوں نے دوطرفہ تعلقات کو ایک جامع اسٹریٹجک پارٹنرشپ میں تبدیل کرنے کے لیے 'روڈ میپ 2030' اپنایا۔