تازہ ترین

موٹر سائیکل کی زد میں آکر 6سالہ بچہ لقمہ اجل | تھنہ منڈی میں ہسپتال انتظامیہ راجوری کیخلاف شدید احتجاج

تاریخ    20 ستمبر 2021 (22 : 01 AM)   


عظمیٰ یاسمین
 تھنہ منڈی //راجوری ضلع کے تھنہ منڈی علاقہ میں ایک چھ سالہ بچہ موٹر سائیکل کی زد میں آکر شدید زخمی ہو گیا جس کے بعد علاج معالجہ کے دوران بچے کی موت واقعہ ہو گئی تاہم مقامی لوگوں نے گور نمنٹ میڈیکل کا لج راجوری کے منتظمین کیخلاف شدید احتجاج کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ ڈاکٹروں کی لاپرواہی کیساتھ ساتھ شدید زخمی بچے کو دیگر بنیادی سہولیات بھی فراہم نہیں کی گئی ۔ لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے ہسپتال انتظامیہ کے خلاف جم کر نعرے بازی کرتے ہوئے کہا کہ اگر وقت رہتے بچے کا علاج ہو جاتا تو اس کی جان بچ سکتی تھی لیکن بدقسمتی سے ایسا نہیں ہو پایا۔ لواحقین کے مطابق ضلع ہسپتال راجوری میں بر وقت ڈاکٹروں کے نہ ملنے کی وجہ سے بچے کا علاج نہ ہو سکا۔ لواحقین نے راجوری سرنکوٹ سڑک کوبہروٹ کے مقام پر بند کر کے ضلع ہسپتال انتظامیہ کیخلاف احتجاج کیا۔ انھوں نے کہا کہزخمی بچے کو جب ہسپتال پہنچایا گیا تو اس وقت ہسپتال میںکوئی بھی ڈاکٹر موجود نہیں تھاجبکہ ملازمین کی عدم دستیابی کی وجہ سے زخمی بچے کا الٹرا سائونڈ بھی نہیں کیاجاسکا ۔انہوں نے بتایا کہ ایمبولیس بھی موجود نہیں تھی البتہ اس کو درہال ملکاں سے بلایا گیا ۔انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ بچے کو صورہ میڈیکل انسٹی چیوٹ منتقل کرنے میںہوئی تاخیر کی وجہ سے اس کی موت واقعہ ہو گئی ۔ لواحقین نے گورنمنٹ میڈیکل کالج راجوری کے عملہ پر سخت لاپرواہی برتنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ میڈیکل کالج راجوری کے منتظمین کی لاپرواہی کی وجہ سے ڈاکٹر و دیگر سٹاف ممبران نے ان کو سہولیات فراہم ہی نہیں کی ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے ہسپتال انتظامیہ کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے ۔دوسری جانب پولیس نے تھنہ منڈ ی پولیس سٹیشن میں ایک کیس درج کرتے ہوئے مزید تحقیقات شروع کر دی ہیں ۔
 

تازہ ترین