تازہ ترین

سرینگر میں4جنگجو اور15بالائی زمین ورکر سرگرم: آئی جی پی

کھیل سرگرمیاں نوجوانوں کو جنگجوئیت اور منشیات سے دور رکھنے کا بہتر عمل

تاریخ    16 ستمبر 2021 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
سرینگر//انسپکٹر جنرل پولیس کشمیرزون وجے کمار نے کہا ہے کہ شہر سرینگر میں 4جنگجو اور 15 بالائی ورکر سرگرم ہیںجن پرکڑی نظر رکھی جارہی ہے۔انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ کھیل کود کی سرگرمیوں سے نوجوانوں کو منشیات اور ہتھیار اٹھانے سے باز رکھنے میں مدد ملے گی۔ بدھ کو انڈورسپورٹس ہال پولو گرائونڈ سرینگرمیں تائیکانڈو چمپئن شپ تقریب کے حاشیہ پر نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے وجے کمار نے کہاکہ’’ ابھی بھی سرینگر میں 4 جنگجو اور15بالائی ورکرسرگرم ہیں جن پرپولیس اور فورسز کی نگاہ ہے اور ان کا پتہ ٹھکانہ جاننے کیلئے کارروائی کی جارہی ہے۔ انہوںنے کہاکہ یہ جنگجو یا تو پکڑے جائینگے یا فورسز کے ساتھ تصادم آرائی میں مارے جائینگے‘‘۔وجے کمار نے کہاکہ ’’ہم نے گزشتہ برس اگست میں کہا تھا کہ سرینگر میں کوئی جنگجو موجود نہیں ہے لیکن بعد میں ستمبر کے پہلے ہفتے میں عباس نامی جنگجو ضلع کولگام سے یہاں آیا اور اس کے بعد مزید7 نوجوانوںنے جنگجوئوں کی صفوں میں شمولیت کی اسکے علاوہ10سے 15بالائی زمین ورکر بھی کام کررہے ہیں‘‘۔ انہوں نے کہا کہ ان میں سے 5 جنگجوئوں کو اب تک مارا گیا ہے اور عسکریت پسندی کے گراف میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے۔خانیار میں حالیہ حملے کے بارے میں جس میں ایک پولیس سب انسپکٹر ہلاک ہوا تھا ، آئی جی پی نے کہا کہ یہ ایک بزدلانہ عمل تھا۔ انہوں نے کہا کہ جنگجو عقب سے حملہ کر رہے ہیں اور بھاگ رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ’ ہٹ اینڈ رن ‘(مارو اور بھاگو)نہیں بلکہ ایک بزدلانہ عمل ہے ۔ آئی جی پی نے کہا کہ اسی طرح کے حملہ جنگجوئوں نے برزلہ میں بھی کیا تھا،تاہم پریشان ہونے کی کوئی بات نہیں کیونکہ پولیس اور فورسز ان کے پیچھے ہیں۔گرینیڈ حملوں میں اچانک اضافے کے بارے میں وجے کمار نے کہا کہ وہ تین دن سے کسی کام کے لیے دہلی میں تھے اس لئے انہیں اس کا علم نہیں۔انہوںنے کہاکہ میں افسروں کیساتھ میٹنگ کرکے ان حملوںکے بارے میں جانکاری حاصل کروں گا۔منشیات کے متعلق پوچھے جانے پر انہوں نے کہا کہ منشیات کے خلاف ہم لڑ رہے ہیں اور اس میں والدین کا تعاون بھی ضروری ہے اور ہم سب مل کر اس کے خاتمے کے لئے لڑیں گے۔وجے کمار نے کہاکہ کھیل سرگرمیاں اور ٹورنامنٹ نوجوانوں کو عسکریت پسندی اور منشیات سے دور رکھنے کیلئے ضروری ہے، ہم مزید کھیل سرگرمیاں شروع کرینگے جبکہ کورونا وائرس ابھی پوری طرح ختم نہیں ہوا ہے‘‘۔وجے کمار نے بتایا کچھ لڑکیاںبھی منشیات کا ستعمال کر رہی ہیں ۔ انہوںنے مزید کہاکہ ’’کھیل سرگرمیوں سے نوجوانوں کی شخصیت میں نکھار آتا ہے ، یہ ایک الگ پہلو ہے اور کھیل سرگرمیاں نوجوانوں کو غلط راستے پر چلنے سے روکتی ہیں‘‘۔
 
 

۔12برسوں سے روپوش

 سابق جنگجو کشتواڑ میں گرفتار :پولیس 

جموں/یو این آئی/ پولیس نے جموں وکشمیر کے ضلع کشتواڑ میں بارہ برسوں سے فرار ایک سابق جنگجو کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا ہے ۔ایک پولیس ترجمان نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ ایک مصدقہ اطلاع پر کارروائی کرتے ہوئے پولیس پوسٹ جوالا پور کی ایک خصوصی ٹیم نے سب انسپکٹر معین خان کی قیادت میں مختلف مشتبہ مقامات پر چھاپے مارے اور مفرور شخص کو گرفتار کیا۔انہوں نے بیان میں کہا کہ گرفتار شدہ کی شناخت نذیر احمد گورسی ولد نور محمد گورسی ساکن بدھر بونجواہ کشتواڑ کے بطور کی ہے جو سابق جنگجو تھا۔بیان میں کہا گیا کہ گرفتار شدہ جنگجو کو سیشن کورٹ کشتواڑ کے سامنے پیش کیا گیا اور عدالت کی ہدایات پر اس کو عدالتی حراست میں رکھا گیا ہے ۔
 

تازہ ترین