تازہ ترین

بڑھتی ہوئی کشیدگی کے بیچ شمالی، جنوبی کوریا کے میزائل تجربے

تاریخ    16 ستمبر 2021 (00 : 01 AM)   


سیول //سیئول اور پیانگ یانگ نے فوجی اثاثوں کی نمائش کے لیے چند گھنٹوں کے فرق سے بیلسٹک میزائلوں کا تجربہ کیا ہے۔جنوبی کوریا کے صدر کے دفتر نے کہا ہے کہ اس نے آج سہ پہر کو پانی کے اندر سے لانچ کرنے والا پہلا بیلسٹک میزائل کا تجربہ کیا۔اس میں کہا گیا کہ 3 ہزار ٹن کی آبدوز سے داغے جانے والے اور مقامی سطح پر بنائے گئے میزائل نے مقررہ ہدف کو نشانہ بنانے سے پہلے طے شدہ فاصلہ مکمل کیا۔بیان میں کہا گیا کہ اس ہتھیار سے جنوبی کوریا کو ممکنہ بیرونی خطرات سے نمٹنے، اپنی دفاعی پوزیشن بڑھانے اور جزیرہ نما ریاست کوریا میں امن کو فروغ دینے میں مدد ملے گی۔اس سے قبل پیر کو شمالی کوریا نے کہا تھا کہ اس نے 6 ماہ میں اپنے پہلے ہتھیاروں کے تجربے میں ایک نیا تیار کردہ کروز میزائل کا تجربہ کیا ہے۔ماہرین کا کہنا تھا کہ شمالی کوریا کے تجربے سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ اپنے ہتھیاروں کی تعمیر کے منصوبوں کے ساتھ آگے بڑھ رہا ہے جبکہ امریکا پر دباؤ ڈالنے کی کوشش کر رہا ہے کہ وہ تعطل شدہ جوہری مذاکرات کو دوبارہ شروع کرے۔مبصرین کا کہنا تھا کہ جنوبی کوریا کے صدر مون جے ان کی حکومت، جو شمالی کوریا کے ساتھ مفاہمت کے لیے سرگرم عمل ہے، اس تنقید کا جواب دے رہی ہے کہ اس نے شمالی کوریا کے حوالے سے نرمی اختیار کر رکھی ہے۔
 

تازہ ترین