تازہ ترین

سیاہ دُھند

تاریخ    12 ستمبر 2021 (00 : 01 AM)   


کوئی مجھے رستہ دکھائے
خدا کے حجرے کا
شکایت درج کرنی ہے
اک سیاہ دھند کی
خیمہ زن ہے جو میرے آس پاس
یہ اندھیروں کے بنکر مجھے تک رہے ہیں
ان کے روزنوں سےپھوٹتی ہیں
چمگاڈروں کی لیزر کرنیں 
مجھ میں پھولوں کی وادی ہے
میں خوشبو زادہ ہوں
اور خوشبو لٹاتا  ہوں
چاندنی راتوں میں اوس کے قطرے چُن چُن کر
ململی  دھوپ سے گزارتا  ہوں
بارش کی بوندوں میں گھول کے پیتا ہوں
نئے عطر کے پودے اُگاتا ہوں
بارش کی بوندیں جو رم جھم کرتی تھیں
شہزادی کے گھنگھرو بجتے تھے
دونوں ٹوٹ گئے 
کوئی مجھے رستہ دکھائے
خدا کے حُجرے کا
شکایت درج کرنی ہے
اک سیاہ دھند کی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔!!!
 
علی شیدؔا
 نجدون نیپورہ اسلام آباد
موبائل  نمبر؛9419045087 

تازہ ترین