تازہ ترین

بنگلہ دیش: سیلاب سے20افراد ہلاک

۔36ہزار افراد محفوظ مقامات پر منتقل

تاریخ    1 اگست 2021 (00 : 01 AM)   


 ڈھاکہ //جنوبی مشرقی بنگلہ دیش میں مون سون بارشوں کے باعث سیلاب اور لینڈ سلائیڈنگ کے باعث دیہاتوں میں مقیم 3 لاکھ سے زائد افراد پھنس گئے جبکہ 6 روہنگیا مہاجرین سمیت 20 افراد ہلاک ہوگئے۔بنگلہ دیش اور میانمار کے سرحدی علاقے میں میانمار لگ بھگ 10 لاکھ روہنگیا مہاجرین کیمپوں میں مقیم ہیں اور یہ خطہ پیر سے ہونے والی موسلادھار بارشوں سے شدید متاثر ہوا ہے۔ کاکس بازار میں سیلاب کے باعث تقریباً 3 لاکھ 6 ہزار افراد پھنسے ہوئے ہیں جبکہ 70 گاؤں ڈوب چکے ہیں۔حکام کا کہنا ہے کہ تقریباً 36 ہزار افراد کو اسکولوں اور سائیکلون شیلٹرز منتقل کردیا گیا ہے۔مضافاتی جھیلوانجا یونین کے کونسلر ٹیپو سلطان کا کہنا تھا کہ 'متعدد گھروں میں پانی بھر چکا ہے اور گزشتہ تین روز سے ہزاروں افراد گھروں میں محصور ہو کر رہ گئے ہیں جبکہ تمام سڑکیں بلاک ہیں'۔رواں ہفتے کے آغاز میں طوفان کے باعث بنگلہ دیش نے کاکس بازار میں کیمپوں سے 10 ہزار روہنگیا مہاجرین کا انخلا کیا تھا۔امدادی عملے کا کہنا تھا کہ روہنگیا مہاجر کیمپوں میں کورونا وائرس کے تیزی سے بڑھتے ہوئے کیسز کے باعث لاک ڈاؤن نافذ ہے اور پابندیوں کی وجہ سے امدادی کارروائیاں متاثر ہو رہی ہیں۔