ماہِ رمضاں

تاریخ    25 اپریل 2021 (00 : 01 AM)   


ہو گئے لمحے سہانے ماہِ رمضاں آگیا
کھل گئے رب کے خزانے ماہ ِرمضاں آگیا 
 
غرق ہیں محوِ عبادت تشنگی کے دشت میں 
صوم وتقویٰ کے دیوانے ماہِ رمضاں آگیا 
 
فرقتوں کو مل گئے محبوب یزداں کے طفیل
وصل کے لاکھوں بہانے ماہ رمضاں آگیا 
 
عطر سے لبریز ہیں ارض و سما کی وسعتیں 
خوشبؤں کے تانے بانے  ماہ رمضاں آگیا 
 
بس درودوں کے سلاموں، فکر کے اذکار کے
چار سو ہیں شادیانے  ماہ رمضاں آگیا 
 
بخششوں کی یوں فراوانی ہے بھر دو جھولیاں 
داغِ عصیاں ہے مٹانے  ماہ رمضاں آگیا 
 
ریگزاروں میں بلاتے ہیں علی شیداؔ تجھے
رحمتوں کے شامیانے ماہ رمضاں آگیا 
 
علی شیداؔ
 نجدون نیپورہ اسلام آباد،  
موبائل  نمبر؛9419045087
 

تازہ ترین