تازہ ترین

کیوبا میںکاستروخاندان کا دورِ قیادت ختم | راؤل کاسترو کمیونسٹ پارٹی کی سربراہی سے مستعفی

تاریخ    18 اپریل 2021 (00 : 01 AM)   


یو این آئی
لندن //کیوبا کے رہنما راؤل کاسترو نے کہا ہے کہ وہ کمیونسٹ پارٹی کی سربراہی سے مستعفی ہو رہے ہیں، اس کے ساتھ ہی کیوبا میں باضابطہ قیادت کے دور کا اختتام ہو رہا ہے جو ان کے بھائی فیدل کاسترو اور ملک کے 1959 کے انقلاب کے ساتھ شروع ہوا تھا۔ 89 برس کے راؤل کاسترو نے حکمراں پارٹی کی آٹھویں کانگرس کے آغاز کے موقعے پر اپنی تقریر مستعفی ہونے کا اعلان کیا۔راؤ کاسترو نے مزید کہا کہ ملک کے مستقبل اور اپنے مشن کی تکمیل کے حوالے سے پراعتماد ہیں۔ان کی تقریر کا ایک حصہ سرکاری ٹیلی ویژن پر نشر ہوا جس میں انہوں نے کہا کہ جب تک وہ زندہ ہیں وہ اپنے ملک، انقلاب اور سوشلزم کی پہلے سے کہیں زیادہ طاقت کے ساتھ دفاع کریں گے۔راؤل کاستروں نے یہ نہیں کہا کہ وہ کس کی اپنے جانشین کی حیثیت سے توثیق کریں گے تاہم انہوں نے اس سے قبل اشارہ دیا تھا کہ 60 برس کے میگوئل دیاز کینل کو سربراہی دینے کے ہامی ہیں۔ میگوئل دیاز کینل ملک کے صدر ہیں۔کیوبا کی سرکاری خبر ایجنسی کی جانب سے جاری کردہ تصویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ راؤ کاسترو سبز رنگ کا لباس پہنے ہوئے ہیں اور ان کے ساتھ میگوئل دیاز کینل کانگرس میں داخل ہو رہے ہیں۔کاسترو کی ریٹائرمنٹ کا مطلب ہے کہ چھ دہائیوں سے زیادہ عرصے میں پہلی دفعہ کوئی کاسترو معاملات میں کیوبا کے شہریوں کی باضابطہ رہنمائی نہیں کرے گا۔