تازہ ترین

ضلعی اور صوبائی سطح پر بھرتیاں ختم کرنیکا مرکزی فیصلہ | چیلنج کرنے والی عرضی پر مرکز و یوٹی سرکاروں کو نوٹس

تاریخ    12 اپریل 2021 (00 : 12 AM)   


ڈی اے رشید
سرینگر//ہائیکورٹ نے جموں و کشمیر میں ضلعی اور صوبائی سطح پر بھرتیوں کو ختم کرنے والے مرکزی حکومت کے حکم کو چیلنج کرنے والی ایک درخواست پر مرکزی وزارت داخلہ اور جموں و کشمیر کی حکومت سے جواب طلب کیا ہے۔ جسٹس علی محمد ماگرے کی سربراہی والے بنچ نے درخواست کی سماعت کے دوران حکومت ہندکو مرکزی داخلہ سکریٹری کی وساطت سے جبکہ ، جموں و کشمیر حکومت کو چیف سکریٹری ، کمشنر سیکرٹری عمومی انتظامی محکمہ ، کمشنر سیکریٹری سماجی بہبود ، چیئرمین وسیکریٹری سروس سلیکشن بورڈ کے ذریعہ نوٹس جاری کی۔اسسٹنٹ سالسٹر جنرل طاہر شمسی نے وزارت امور داخلہ کی جانب سے نوٹس قبول کی۔ رخواست پر اعتراضات 29 اپریل تک دائر کئے جانے ہیں۔ درخواست دہندگان جو شیڈول ٹرائب (گوجر اور بکروال برادری ، پہاڑی زباں بولنے والے لوگوں،جموں کشمیر میں حقیقی کنٹرول لائن پر رہنے والے لوگوں  کے زمرے کے ممبر ہونے کا دعوی کرتے ہیں)،نے نمائندے ہونے کی حیثیت سے ایڈوکیٹ عاطر جاوید کاوسئہ کے ذریعے میں عدالت میں درخواست دائر کی ہے۔ انہوں نے جموں وکشمیرتنظیم نو (ریاستی قوانین کی موافقت) آرڈر ، 2020 ،جس کو مرکزی وزارت داخلہ نے  جموں و کشمیر کے مختلف موجودہ قوانین میں موافقت اور ترمیم کیلئے منظور کیا ہے،کو چیلنج کیا ہے۔درخواست گزاروں نے عرض کیا ہے کہ اس حکم کی تعمیل کرتے ہوئے  دفعہ 6 کی شق (2) ، دفعہ 7 کی شق (2 (اور جموں و کشمیرسیول غیر مرکوزیت و بھرتی ایکٹ مجریہ 2010 کی دفعہ 13 کو خارج کردیا گیا تھا۔ان کا کہنا ہے کہ اس اخراج ، ضلع او صوبائی رہائش جو جموں و کشمیر کے مختلف سرکاری محکموں میں ضلعی اور ڈویژنل کیڈر کے عہدوں پر تقرری کے لئے پہلے سے ضروری ہے کا خاتمہ کردیا گیا ہے۔درخواست گزاروں کا موقف ہے کہ اس کارروائی سے ان کے مفادات متاثر ہوئے ہیں کیونکہ ان کا تعلق جموں و کشمیر کے پسماندہ اضلاع سے ہے،اور حکومت کے صوبائی اور ضلعی کیڈر عہدوں پر ملازمت اور بھرتی کے معاملات میں مساوات سے محروم رہتے ہیں۔ ان کا دعویٰ ہے کہ یہ حکم ان کے بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔ عرض گزارجموں و کشمیرسیول غیر مرکوزیت و بھرتی ایکٹ مجریہ 2010 کی دفعہ 6 اور 7  شیڈول ٹرائب (گوجر اور بکروال برادری ، پہاڑی زباں بولنے والے لوگوں،،جموں کشمیر میں حقیقی کنٹرول لائن پر روہنے والے لوگوں کیلئے بحالی چاہتے ہے۔