تازہ ترین

مغربی بنگال انتخابات | سی اے پی ایف کی مزید 71 کمپنیاں تعینات کرنے کا فیصلہ

تاریخ    12 اپریل 2021 (00 : 12 AM)   


یو این آئی
نئی دہلی// مغربی بنگال میں اسمبلی انتخابات میں جاری تشدد کے پیش نظر وزارت داخلہ نے سنٹرل آرمڈ پولیس فورس (سی اے پی ایف) کی اضافی 71 کمپنیاں فوری طور پر تعینات کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ پرامن اور آزادانہ انتخابات کو یقینی بنایا جاسکے۔ وزارت داخلہ نے یہ فیصلہ ہفتے کے روز لیا۔ وزارت داخلہ نے ریاست میں تشدد کے حالیہ واقعات کو مدنظر رکھتے ہوئے  الیکشن کمیشن آف انڈیا  (ای سی آئی) کی درخواست کے بعد یہ قدم اٹھایا ہے۔مرکز نے ریاست مغربی بنگال میں پر امن اور آزادانہ انتخابات سے پہلے ہی سی اے پی ایف کی 1،000 کمپنیاں تعینات کی تھیں ، اورانہیں ہی نیم فوجہ دستوں کے نام سے جانا جاتا ہے۔گذشتہ روزمغربی  بنگال کے چیف سکریٹری ، ہوم سکریٹری اور پولیس ڈائریکٹر جنرل نے اس سلسلے میں وزارت داخلہ کو ایک فیکس بھیجا، جس میں الیکشن کمیشن نے مرکز سے سی اے پی ایف / ریاستی آرمڈ پولیس (ایس اے پی) / انڈیا ریزرو بٹالین کی  مزید 71 کمپنیاں بنگال اسمبلی الیکشن 2021 کے لئے تعینات کرنے کی درخواست کی ہے۔ ہفتہ کے روز اسمبلی انتخابات 2021 کے لئے مغربی بنگال میں الیکشن کمیشن کی سفارشات کی تعمیل میں سی اے پی ایف کے علاوہ 71 کمپنیاں تعینات کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔وزارت کے مکتوب کے مطابق ، 71 اضافی بٹالین میں سنٹرل ریزرو پولیس (سی آر پی ایف) کی 12 کمپنیاں ، بارڈر سیکیورٹی فورس (بی ایس ایف) کی 33 ، انڈو تبت بارڈر پولیس (آئی ٹی بی پی) کی 13  اور چار کمپنیاں شامل ہوں گی۔ . سنٹرل انڈسٹریل سیکیورٹی فورس (سی آئی ایس ایف) اور شستر سیما بل (ایس ایس بی) کی نو کمپنیاں اس میں شامل ہوں گی۔سی اے پی ایف کی 71 کمپنیوں کی تعیناتی کے ساتھ مغربی  بنگال میں انتخابات کیلئے  کل 1،071 کمپنیاں  سی اے پی ایف ، ایس اے پی اور آئی آر بٹالین  دستیاب ہوں گی۔یواین آئی
 

تازہ ترین