ڈیوڈ رابرٹسن اور ان کے بیٹے پر پابندی | رائیل کشمیر فٹ بال کلب اورکل ہند فٹ بال فیڈریشن نے مایوسی کا اظہار کیا

تاریخ    8 مارچ 2021 (00 : 12 AM)   


یو این آئی
سرینگر// کشمیر میں کافی مقبولیت حاصل کرنے والے ریئل کشمیر فٹ بال کلب کے شائقین نے کل ہند فٹ بال فیڈریشن کی انضباطی کمیٹی کے کلب کوچ ڈیوڈ رابرٹسن اور ان کے بیٹے پر پابندی عائد کرنے کے فیصلے پر مایوسی کا اظہار کیا ہے کلکتہ میں آئی لیگ کھیلنے والی ٹیم کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لئے شائقین کلب کے ہیڈ کوارٹر کے باہر جمع ہوگئے ،جبکہ یہ کلب اس وقت ٹیبل میں چوتھے نمبر پر ہیں۔سینٹر بیک کے طور پر کھیلنے والے رابرٹسن اور ان کے بیٹے میسن رابرٹسن کو ہفتے کے روز چار میچوں کے لئے معطل کیا گیا تھا اور آئی لیگ میچ میں ریفری کے ساتھ بدسلوکی کرنے پر 2 دو لاکھ روپے جرمانہ عائد کیا گیا تھا۔ریئل کشمیر کے حامی قیصر احمد نے کہا کہ کمیٹی نے ایک سخت فیصلہ کیا ہے۔انہوں نے مزید کہا’’ ریل کشمیر ، وادی کا سب سے مقبول عام کلب ہے،اوریہ چند ہی سالوں میں ایک اعلی کلبوں میں شامل ہوا،جبکہ اس فیصلے سے ہمیں پوری طرح مایوسی ہوئی ہے۔ رئیل کشمیر کی وجہ سے آج کل کشمیر میں بہت سے بچے فٹ بال کھیل رہے ہیں،اور چونکا دینے والی بات ہے کہ ایسا فیصلہ کل ہند فٹ بال فیڈریشن کی انضباطی کمیٹی نے لیا ہے ۔ریئل کشمیر انتظامیہ نے بتایا کہ وہ پہلے ہی پابندی کو منسوخ کرنے کی اپیل کرچکے ہیں۔انہوں نے کہا ’’ہمیں امید ہے کہ کل ہند فٹ بال فیڈریشن کی انضباطی کمیٹی  بڑے مفادات کے لئے اس پر نظر ثانی کرے گی۔‘‘کمیٹی نے کہا کہ ’’کمیٹی نے ریئل کشمیر ایف سی' کے کوچ مسٹر ڈیوڈ رابرٹسن اور ان کے بیٹے مسٹر میسن رابرٹسن (جرسی نمبر 3) پر 'ریئل کشمیر ایف سی' کے چار میچوں کی معطلی کی پابندیاں عائد کردی ہیں۔
 
 

تازہ ترین