انگلینڈ کو آخری ٹیسٹ میں شکست

بھارت3-1 سے سیریز جیت کر ٹیسٹ چیمپئن شپ کے فائنل میں

تاریخ    7 مارچ 2021 (00 : 01 AM)   


 احمد آباد//آف اسپنر روی چندرن اشون (5/47) اور بائیں ہاتھ کے اسپنر اکشر پٹیل (5/48) کی ایک اورعمدہ کارکردگی سے ہندوستان نے انگلینڈ کونریندر مودی اسٹیڈیم میں چوتھے اور آخری ٹیسٹ کے تیسرے دن ہی ہفتہ کو اننگ اور 25 رن سے شکست دے کر چارمیچوں کی سیریز 3-1 سے جیت لی اور اس کے ساتھ ہی اس نیآئی سی سی ٹیسٹ چیمپیئن شپ کے فائنل میں جگہ بنالی، جہاں اس کا مقابلہ انگلینڈ کے تاریخی لارڈس میدان میں 18 جون سے 22 جون تک نیوزی لینڈ کے ساتھ ہوں گا۔ ہندوستان نے اپنی پہلی اننگز میں 365 رنز بنا کر 160 رن کی اہم برتری حاصل کی اور انگلینڈ کودوسری اننگز میں 54.5 اوورز میں 135 رنز پر نمٹادیا۔ ہندوستان کی ٹیسٹ تاریخ میں یہ چھٹا موقع ہے جب اس نے پہلا ٹیسٹ گنوانے کے بعد واپسی کرتے ہوئے جیت حاصل کی ہے۔ اشون نے 47 رن پر پانچ اور پٹیل نے 48 رن پر پانچ وکٹ لئے۔ ہندوستان کی پہلی اننگ میں شاندار 101 رنز بنانے والے وکٹ کیپر بلے باز رشبھ پنت کو مین آف دی میچ کا ایوارڈ ملا۔ ہندوستان چنئی میں پہلا ٹیسٹ ہار گیا، لیکن پھر واپسی کرتے ہوئے چنئی میں دوسرا ٹیسٹ  327 رنز کے بڑے فرق سے جیت لیا۔ احمد آباد میں کھیلے گئے تیسرے ڈے نائٹ ٹیسٹ میں ہندوستان نے آٹھ وکٹوں سے کامیابی حاصل کی اور احمد آباد میں چوتھے ٹیسٹ میں انگلینڈ کو اننگز سے روند دیا۔ انگلینڈ کے بلے بازوں کے پاس  دونوں ہندوستانی اسپنرز کا کوئی توڑ نہیں تھا، حالانکہ اس مقابلے کی پچ میں زیادہ ٹرن نہیں تھا، لیکن ذہنی دباو میں گھرے انگلینڈ کے بلے بازوں نے  اشون اور پٹیل کے سامنے گھٹنے ٹیک دئے۔ اشون نے 22.5 اوور میں 47 رن دے کر پانچ  اور پٹیل نے 24 اوورز میں 48 رن پر پانچ وکٹ لئے۔ اشون نے پہلی اننگ میں تین اور پٹیل نے چار وکٹ حاصل کئے تھے۔ اشون نے ڈینئل لارنس کو بولڈ کرکیانگلینڈ کی اننگ سمیٹی اور اپنا پانچواں وکٹ لیا۔ اشون کے کیریئر میں  یہ 30واں موقع تھا جب انہوں نے ایک اننگ میں پانچ وکٹ حاصل کیا۔ اشون کو سیریز میں گیند اور بلے سے عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کرنے پر مین آف دی سیریز کا ایوارڈ ملا۔اس سے پہلے آج صبح  آل راؤنڈر واشنگٹن سندر (96) اپنی پہلی ٹیسٹ سنچری سے چوک گئے، لیکن انہوں نے ایک عمدہ اننگز کھیل کر انگلینڈ کے خلاف ہندوستان کو بہت مضبوط پوزیشن پر پہنچا دیا۔ سندر نے ایک اور آل راؤنڈر اکشر پٹیل (43) کے ساتھ آٹھویں وکٹ کے لئے 107 رنز کی شراکت کی، جس سے ہندوستان کو 160 رنز کی مضبوط برتری حاصل ہوگئی۔ ہفتہ کو ہندوستان نے سات وکٹ پر 294 رن سے آگے کھیلنا شروع کیا۔ واشنگٹن سندر اور اکشر پٹیل نے 294 رنوں سے آگے کھیلتے ہوئیاہم  71 رنز کا اضافہ کیا۔  365 رنز کے اسکور پر اکشر کی شکل میں ہندوستان کا آٹھواں وکٹ گرا۔ بدقسمتی سے اکشر اپنے 43 رن کے اسکور پر رن آؤٹ ہوگئے۔ اکشر نے اپنی اننگز میں 97 گیندوں پر پانچ چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 43 رنز بنائے جبکہ سنچری کے قریب پہنچے سندر نے 174 گیندوں میں 96 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیلی۔ 365 رنز کے اسکور پر ایشانت کی شکل میں نواں اورمحمد سراج کی شکل میں ہندوستان کا دسواں وکٹ گرا اوراس کے سبب سندر اپنی پہلے ٹیسٹ سنچری سے محروم رہ گئے کیونکہ ان کے پاس کوئی ساتھی نہیں بچا۔ 
 

تازہ ترین