مٹن ڈیلروں کیخلاف انتظامیہ کی کارروائی کا انتباہ

تاریخ    5 مارچ 2021 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
سرینگر// امور صارفین کے ڈائریکٹر نے وادی کے مٹن ڈیلروں پر گوشت کی مصنوعی و عارضی قلت پیدا کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے ان کیخلاف انتظامیہ کی طرف سے کاروائی کاانتباہ دیا ہے۔ سرکار اور مٹن یلرئوں کے درمیان گوشت کی قیمتوں پر جاری تعطل اور وادی میں گوشت کی مصنوعی قلت پیدا کرنے کا نوٹس لیتے ہوئے محکمہ شہری رسدات ،امور صارفین و عوامی تقسیم کاری نے وادی میں گوشت کے کاروباری سے منسلک تمام پرچون کاروباریوں کو خبردار کیا غیر قانونی طریقوں سے گوشت کی تجارت اورزمینی سطح پر دکانیں بند کرکے مصنوعی و عارضی قلت پیدا کرنے کی صورت میں شاپس اینڈ اسٹیبلشمنٹ ایکٹ اور دیگر قوانین کے تحت کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔ ڈائریکٹر امور صارفین نے جمعرات کو نوٹس کے ذریعے گوشت کے پرچون کاروباریوں کو مطلع کرتے ہوئے کہا’’ اشیائے ضرورریہ قانون کے تحت ان دکانداروں کے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائے گی جو دکانیں بند کرکے گوشت کی قلت پیدا کرئنگے‘‘۔انہوں نے کہا ’’ ان دکانوں کو مسلسل طور پر بند کیا جائے گا اور تحت ضابطہ کاروائی شروع کی جائے گی‘‘۔ایسے گوشت پرچون دکانداروں کو محکمہ نے2دن کی مہلت دی ہے۔
 

تازہ ترین