بانڈی پورہ میں کئی واٹر سپلائی اسکیمیں بیکار

سینکڑوں نفوس پر مشتمل آبادی پینے کے پانی کی قلت سے دوچار

تاریخ    5 مارچ 2021 (00 : 01 AM)   


عازم جان
بانڈی پورہ//کلوسہ ،وٹہ پورہ ، ناتھ پورہ اوردیگر ملحقہ علاقوں میں رہائش پذیر لوگوں نے جل شکتی محکمہ پر ناصاف پانی سپلائی کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ پینے کا پانی ناصاف ہونے کی وجہ سے اِن علاقوں میں بیماریوں نے جنم لیا ہے جس سے لوگوں میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔ مقامی لوگوں نے کہا کہ آرم پورہ سنروانی کے دوفلٹریشن پلانٹ بیکار پڑے ہیںجبکہ قویل بانڈی پورہ میں بھی واٹر سپلائی سکیم  بیکار رہنے سے سینکڑوں نقوس پر مشتمل آبادی پینے کے پانی سے محروم ہے۔لوگوں کا کہنا ہے کہ بستی کی خواتین کو پانی حاصل کرنے کیلئے آدھا کلو میٹر کا فاصلہ طے کرنا پڑ تاہے۔ قوئل کے ایک وفد نے بتایا کہ قوئل میں صاف پانی کی سپلائی کرنے والی سکیم جل شکتی محکمہ نے تعمیر کی ہے لیکن محکمہ کی لاپرواہی سے یہ سکیم مختصر مدت میں ہی بیکار ہوگئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگرچہ متعلقہ محکمہ سے اس سلسلے میںکئی بار رجوع کیا گیا لیکن کوئی پرسان حال نہیں۔انہوںنے اس سلسلے میں ڈپٹی کمشنر بانڈی پورہ ڈاکٹر اویس احمد سے مداخلت کی اپیل کی ۔

تازہ ترین