تازہ ترین

سرکاری محکموں میں بقایاجات سے چھوٹی صنعتیں مشکلات سے دوچار

آر پی ٹھاکُرنے سمال سکیل اِنڈسٹریز ڈیولپمنٹ کارپوریشن کا جائزہ لیا

تاریخ    5 مارچ 2021 (00 : 01 AM)   


 صنعت کاروں کی مانگوں اور مسائل کو حل کرنے پر زور 

جموں// پرنسپل سیکرٹری صنعت و حرفت کا چارج سنبھالنے کے بعد رنجن پرکاش ٹھاکر نے صنعت بھون جموں میں جے اینڈ کے سمال سکیل اِنڈسٹریز ڈیولپمنٹ کارپوریشن ( ایس آئی سی او پی ) کے کام کاج کا جائزہ لیا۔ابتداً ایس آئی سی او پی کے منیجنگ ڈائریکٹر اتول شرما نے پرنسپل سیکرٹری کو کارپوریشن کے ذریعہ انجام دی جارہی مختلف سرگرمیوں اور گزشتہ پانچ برسوں کی جانے والی کارکردگی کے بارے میں تفصیلی جانکاری دی ۔پرنسپل سیکریٹری نے سرگرمی سے متعلق کارکردگی کا جائزہ لیا اور منیجنگ ڈائریکٹر ایس آئی سی او پی سے درپیش مسائل سے متعلق اِستفسار کیا۔پرنسپل سیکریٹری کو بتایا گیا کہ مختلف ایم ایس ایم ای مصنوعات اور کلیدی تعمیراتی مواد کی فراہمی کی وجہ سے مختلف سرکاری محکموں میں بہت بڑی رقم باقی ہے جس کے نتیجے میں مقامی ایم ایس ایم ایس ایک طویل عرصے سے مشکلات کا سامنا کر رہے ہیں۔پرنسپل سیکرٹری نے یقین دِلایا کہ وہ معاملہ متعلقہ محکموں کے ساتھ اٹھائیں گے تاکہ ایم ایس ایم ای اور کارپوریشن کی رقم برآمد ہوسکے۔رنجن پرکاش ٹھاکر نے بتایا کہ وہ ایم ایس ایم ای ایس کو دستیاب بنیادی ڈھانچے کی دستیابی اور تاجروں کو درپیش مشکلات کے بارے میں معلومات حاصل کرنے کے لئے صنعتی ایسٹیٹس کا دورہ کریں گے۔اُنہوں نے منیجنگ ڈائریکٹر ایس آئی سی او پی سے کہا کہ وہ صنعت کاروں کے ساتھ قریبی رابطہ رکھیں تاکہ ان کی مانگیں اور مسائل لو کم سے کم وقت میں حل کئے جاسکیں۔پرنسپل سیکرٹری نے کارپوریشن کے افسران پر تن دہی ، محنت اور لگن کے ساتھ کام کرنے پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ وہ فائلوں / کاغذات میںطوالت دینے کے بجائے کام کے عملی نتائج پر یقین رکھتے ہیں۔ اُنہوں نے یقین دلایا کہ وہ کار خانہ داروں کے لئے ہمہ وقت دستیاب رہیں گے اور جموں و کشمیر میں صنعتی شعبے کی بہتری کے لئے کسی بھی حلقے کی جانب سے موزوں تجاویز کا خیرمقدم کریں گے۔ میٹنگ میں ایف اے اینڈ سی اے او ایس آئی سی او سی پی ، جنرل منیجر (پروجیکٹس) ، جنرل منیجر (مارکیٹنگ) ، جنرل منیجر (ہیڈکوارٹر) اور پروجیکٹ انجینئر ، سی آئی سی او پی جموں نے شرکت کی۔