تازہ ترین

دسویں جماعت میں بہتر کارکردگی

تاریخ    28 فروری 2021 (00 : 01 AM)   


اونتی پورہ پولیس نے ہونہار طلاب کی حوصلہ افزائی کی

اونتی پورہ/سید اعجاز//اونتی پورہ پولیس نے ترال ، اوونتی پورہ اور پانپور علاقوں کے اُن طالب علموں کی حوصلہ افضائی کی جنہوں نے دسویں جماعت  کے امتحان کے نتائج میں 99 اور 100 فیصد نمبرات حاصل کئے۔اس سلسلے میں ایک تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میںایس ایس پی اونتی پورہ طاہر سلیم مہمان خصوصی تھے اورایس ڈی پی او اونتی پورہ ، ڈی وائی ایس پی ڈی اے آر اونتی پورہ ، ایس ڈی پی او پانپور اور دیگر اعلیٰ افسران نے شرکت کی۔ طاہر سلیم نے امتحان میں اعلیٰ پوزیشن حاصل کرنے والوں میںحوصلہ افزائی کیلئے انعامات تقسیم کئے گئے ۔جن طلاب کو انعامات سے نوازا گیا اُن میں عنم ملک ،ایمن جان ، مسکان شفیع ، لبنا مشتاق ، مینو اشرف ، زاہد شفیع ڈار ، منتظر مشتاق ، جاذب جاوید ڈار ، بازلہ جان ، مہورا ارشاداور زینب حکیم شامل ہیں۔ایس ایس پی نے طلباء اور ان کے والدین کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے انہیںعمدہ کارکردگی پر مبارکباد پیش کی ۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ وہ دوسرے طلاب کو بھی ترغیب دیں گے۔ 
 
 

ترال کی طالبہ کی شاندار کارکردگی

ترال/سید اعجاز//ترال کے کئی طالب علموں نے دسویں جماعت کے امتحان میںشاندار کار کردگی کا مظاہرہ کیا ہے جن میں پانزولرگام سے تعلق رکھنے والی ایک طالبہ مینو اشرف دختر محمد اشرف مالی اعتبار سے کمزورہونے کے باوجود بہترین کار کردگی کا مظاہرہ کیا۔مذکورہ طالبہ  نے498نمبرات(99.6فیصد) حاصل کئے ۔طالبہ کا والد ایک غریب مزدورہے ۔کشمیر عظمیٰ سے بات کرتے ہوئے مینو اشرف نے بتایا کہ وہ اول سے آٹھویں جماعت تک مقامی گورنمنٹ مڈل سکول اور اسکے بعد IEMHSلرگام میں دو سال تک زیر تعلیم رہیں ۔انہوں نے بتایاکہ چند اساتذہ مدد اور رہنمائی کر تے رہے ۔انہوں نے کہاکہ جو جب بھی وقت ملا، خودپڑھائی پر توجہ دی۔اپنے والدین اور اساتذہ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے مینو نے بتایا’’میں نے بہت زیادہ محنت کی تھی اورمجھے یقین تھا کہ نتائج اچھے ہوں گے‘‘۔انہوں نے کہا ’’آئی اے ایس افسر بننا میرا خواب ہے اور اس کو پانے کے لئے میں سخت محنت کروں گی‘‘ ۔مذکورہ طالبہ کے والدمحمد اشرف چوہان نے بتایا ’’میں مزدوری کر کے اپنی بچی کو پڑہا رہا ہوں‘‘۔انہوں نے سرکار خاصکر محکمہ تعلیم سے اپیل کی کہ اُس کے گھریلو حالت مدنظررکھ کراُس کی بیٹی کو مزید تعلیم حاصل کرنے کیلئے مدد کی جائے تاکہ وہ اپنے خواب شرمندئہ تعبیر کر سکے ۔
 
 

۔50ہزارروپئے اور2سال کا اسکالر شپ 

 دہلی پبلک سکول کاگاندربل کی طالبہ کوفراہم

گاندربل/ارشاد احمد//دہلی پبلک اسکول سرینگر کی جانب سے گاندربل کی ہونہار اور محنتی طالبہ کو دسویں جماعت میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے پر نقد پچاس ہزار روئے انعام اور دو سال کی مکمل اسکالرشپ فراہم کرنے کا اعلان کیا گیا۔پروینہ ایوب ساکنہ لٹہ وازہ کرہامہ گاندربل جس نے گھریلو مشکلات کے باوجود دسویں جماعت کے امتحانات میں 500 میں 490 نمبرات حاصل کرکے اپنا، والدین، سکول ،اساتذہ اور ضلع کا نام روشن کیا۔پروینہ ایوب کی تین بہنیں ہیں جو ایک کمرے پر مشتمل ٹین کے شیڈ میں گزر بسر کرتی ہیں۔مالی طور پر کمزور ہونے کے باوجود ایک ٹین کے عارضی کمرے میں پروینہ ایوب نے تمام مشکلات کو برداشت کیا اور ثابت قدمی،کوششوں اور محنت سے دسویں جماعت میں 490 نمبرات لیکر ثابت کیا کہ غریبی کامیابی حاصل کرنے سے نہیں روک سکتی ہے۔صنفی مساوات کی حوصلہ افزائی اور خواتین کو بااختیار بنانے کے رواج کو برقرار رکھتے ہوئے اسکول ہر سال ایک ہونہار طالب علم کو 50000 روپے نقد انعام دیتا ہے۔ انعام اور وظیفے کا اعلان کرتے ہوئے چیئرمین دہلی پبلک سکول  وجے دھرنے کہا’’ہم حصول علم اوراُن کے خوابوں کی پرورش کے لئے خود کو ذمہ دار محسوس کرتے ہیں ، ہم کسی بھی حالت میں وسائل کی کمی کی وجہ سے ان کے خواب ضائع نہیں ہونے دیں گے‘‘۔ پروینہ ایوب کی کامیابی مزید حوصلہ افزائی کی مستحق ہے اور اس کی مزید پرورش کے لئے ایک بہترین پلیٹ فارم مہیا کیا گیا ہے۔
 

تازہ ترین