ڈی ڈی سی نشست لارنو کوکرناگ کے نتائج پر عدالتی روک

تاریخ    27 فروری 2021 (00 : 01 AM)   


عارف بلوچ
اننت ناگ//ضلع ترقیاتی کونسل نشست لارنو کوکر ناگ کے نتائج پر جموں کشمیر ہائی کورٹ نے امتناع  جاری کردیا ہے۔اس نشست پر جب انتخاب ہوا تو خواتین کیلئے مخصوص اس نشست پر گپکار الائنس کی اُمیدوار خالدہ بی بی نے اپنے حریف آزاد اُمیدوار ساجدہ بیگم کو7ووٹوں سے شکست دی ۔ لیکن اس کے بعد اسکے فوراً بعد ساجدہ بیگم نے نتائج ماننے سے انکار کیا اور دوبارہ ووٹ شماری کا مطالبہ کیا۔ ڈپٹی کمشنر اننت ناگ کی ہدایت پر دوبارہ ووٹ شماری کی گئی جس میں پہلے ہاری ہوئی امیدوارساجدہ بیگم نے گپکار اتحاد کی امیدوار خالدہ بی بی کو61ووٹوں سے شکست دی۔ ساجدہ بیگم کو کامیاب قرار دیا گیا اور اسکی نوٹیفکیشن بھی جاری کی گئی لیکن خالدہ بی بی نے نتائج کو جانبدارانہ قرار دیتے ہوئے فراڈ کا الزام لگایا اور ہائی کورٹ میں نتائج کو التوا میں ڈالنے کی درخواست کی۔ جمعہ کو ہائی کورٹ میں کیس کی سماعت ہوئی جس دوران وکلا نے اپنے دلائل پیش کئے۔خالدہ بی بی کا مطالبہ ہے کہ دوبارہ ووٹ شماری کی جائے کیونکہ انکے ووٹ رد کئے گئے ہیں۔چنانچہ ہائی کورٹ  نے نتائج پر فوری طور روک لگا دی اور کیس کی اگلی شنوائی 26مارچ کو رکھی۔واضح رہے کہ ساجدہ بیگم ،چودھری ہارون کی اہلیہ ہے جبکہ خالدہ بیگم ، چودھری ہارون کے بھائی چودھری نظام الدین کی بہو ہے۔
 
 

تازہ ترین