تازہ ترین

چھتیس رن پر آل اؤٹ، تجربہ ہے ، کوئی داغ نہیں :وراٹ

تاریخ    24 فروری 2021 (00 : 01 AM)   


یو این آئی
احمدآباد// ہندوستانی کپتان وراٹ کوہلی نے احمدآباد میں بدھ کے روز انگلینڈ کے ساتھ پنک بال ٹیسٹ سے پہلے کہا کہ گلابی گیند عام لال گیند کے مقابلے بہت زیادہ سوئنگ ہوتی ہے ’ جسے ہم کھیلتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایڈیلیڈ میں آسٹریلیا کے خلاف پوری ٹیم کا 36 رن پر آل آؤٹ ہونا ایک تجربہ تھا، اسے داغ نہیں سمجھا جا سکتا۔ ایک سیشن میں آل آؤٹ ہونے سے پہلے ان کی ٹیم نے پہلے دو دن اچھا کرکٹ کھیلا۔ اسی طرح انگلینڈ بھی اپنے گذشتہ پنک بال ٹیسٹ میں 58 رن بنا کر آؤٹ ہوئی تھی۔ احمدآباد میں اس سے کوئی فرق نہیں پڑے گا۔ انگلینڈ کے کپتان جو روٹ نے ایک دن پہلے کہا تھا کہ وہ ہندوستان کے ایڈیلیڈ میں گلابی گیند سے 36 رن پر آؤٹ ہونے کی صورتحال کا فائدہ اٹھانے کی کوشش کریں گے ۔ وراٹ نے منگل کے روز ورچول پریس کانفرنس میں کہا،‘ کولکاتا میں 2019 میں بنگلہ دیش کے خلاف کھیلے گئے ایک میچ میں ہم نے تجربہ کیا کہ پچ کے بجائے نئی گلابی گیند کو کھیلنا زیادہ چیلنج بھرا تھا۔ اسپن واقعی آئے گی لیکن مجھے نہیں لگتا کہ نئی گیند اور تیز گیندبازوں کو نظر انداز کیا جا سکتا ہے ۔ گلابی گیند انھیں تب تک کھیل میں رکھتی ہے جب تک گیند اچھی اور چمکدار ہوتی ہے ۔ ہم کچھ چیزیں اچھی طرح سے جانتے ہیں اور ہم اس کے مطابق ہی تیاری کر رہے ہیں’۔ ہندوستانی کپتان وراٹ نے کولکاتا پنک بال ٹیسٹ کے بارے میں کہا،‘ دن کا پہلا سیشن بلے بازی کرنے کے لیے آسان تھا۔ خاص طور پر اس وقت جب سورج ڈھل جائے اور گیند زیادہ حرکت نہ کرے ، لیکن جب اندھیرا ہونے لگتا ہے ’ تب بلے بازی کرنا بہت مشکل ہو جاتا ہے ۔ روشنی بدل جاتی ہے ۔ گیند کو دیکھنا مشکل ہو جاتا ہے ۔