تازہ ترین

زرعی یونیورسٹی میں 21روزہ تربیتی پروگرام شروع

تاریخ    5 فروری 2021 (00 : 01 AM)   


سرینگر //شیر کشمیر یونیورسٹی برائے زرعی سائنس اور ٹیکنالوجی کشمیر نے جمعرات کو ریموٹ سینسنگ اینڈ جی آئی ایس ایپلی کیشن آف نیچرل ریسورسز مینجمنٹ پر 21 روزہ تربیتی پروگرام کا افتتاح کیا ۔اس 21روزہ تربیتی پروگرام میں یونیورسٹی آف کشمیر اور کچھ دیگر اداروں کے کل 30 طلاب حصہ لے رہے ہیں۔ڈائریکٹر ایجوکیشن اینڈ ڈین فشریز پروفیسر ایم ایچ بلخی نے اپنے افتتاحی خطاب میں کہا کہ قدرتی وسائل کی نگرانی، انتظام ،تجزیہ کیلئے ریموٹ سینسنگ اور جی آئی ایس اہم کردار ادا کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یہ ورکشاپ طلاب کو قدرتی وسائل اور  زراعت کے لئے تکنیک کا تجزیہ کرنے کا ایک موقع فراہم کرے گی۔ڈائریکٹر پلاننگ اینڈ مانیٹرنگ اینڈ پی آئی نیپ پروفیسر نذیر احمد گنائی نے اپنے خطاب میں کہا کہ جدید دور میں زراعت کو ایک اعلی قدرتی وسائل کی ضرورت ہے ، جو جی آئی ایس اور ریموٹ سینسنگ کا استعمال کرسکتا ہے۔ایچ او ڈی ارتھ سائنس پروفیسر فریدہ اختر نے پروگرام اور اس کے مقصد کا ایک تفصیلی تعارف پیش کیا۔