فور لین شاہراہ پرواقع شمسی پورہ کولگام کے نزدیک طاقتوردھماکہ

فوجی اہلکار ہلاک،3 زخمی، ایک کی حالت ہنوز نازک،سرکاری مڈل سکول کی عمارت کو شدید نقصان

تاریخ    28 جنوری 2021 (00 : 01 AM)   


عارف بلوچ+خالد جاوید

 

اننت ناگ+کولگام// سرینگر جموںفور لین شاہراہ پر کھڈونی کے نزدیک شمسی پورہ سبحان پورہ گائوں میں ایک طاقتور بارودی دھماکہ میں ایک فوجی اہلکار ہلاک جبکہ 3دیگر زخمی ہوئے جن مین مزید ایک کی حالت نازک بنی ہوئی ہے۔یہ واقعہ بدھ کی صبح10بجکر 15منٹ پر پیش آیا۔ واقعہ کے بعد شاہراہ پر ٹریفک کی نقل و حرکت معطل ہوئی اور مذکورہ گائوں کا محاصرہ کر کے تلاشیاں لیں گئیں۔بتایا جاتا ہے کہ 24آر آر سے وابستہ اہلکار عمومی طور پر یہاں موجود شاہراہ کے قریب ہی گائوں سے باہر گورنمنٹ مڈل سکول کی عمارت کے مین دروازہ پر ایک بینچ لگاتے تھے اور دن بھر یہاں سے گذرے والے سیکورٹی فورسز گاڑیوں کی حفاظت کیا کرتے تھے۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ فورسز اہلکاروں کا یہاں سکول بلڈنگ کے بر آمدے پر ڈیوٹی دینا ایک معمول تھا ۔ سکول کے ارد گرد کوئی دیوار نہیں ہے لہٰذا شاہراہ پر نظر رکھنے کیلئے یہ موزون جگہ بھی تھی۔بدھ کو معمول کے مطابق فوجی اہلکار ڈیوٹی سر انجام دینے کیلئے یہاں پہنچے اور انہوں نے یہاں بر آمدے پر موجود بینچ پر بیٹھنے کی جونہی کوشش کی تو غالباً اسکے نیچے نصب کیا گیا بارودی مواد پھٹ زوردار دھماکہ سے پھٹ گیا جس کے نتیجے میں سکول بلڈنگ کے بر آمدے کا اوپری چھت کا حصہ بھی تباہ ہوا اور دھماکہ سے یہاں موجود 4فوجی اہلکار شدید طور پر زخمی ہوئے جن میں سے ایک اہلکار بادامی باغ بیس اسپتال منتقل کرنے کے دوران راستے میں ہی دم توڑ بیٹھا۔جبکہ دیگر 3زیر علاج ہیں جن میں ایک کی حالت نازک بنی ہوئی ہے۔مہلوک اہلکار کی شناخت سپاہی دیپک کمارساکن کوسلی ریواری ہریانہ کے بطور ہوئی ہے ۔ زخمیوں کی شناخت حولدار سمیکا ساکن سندرگڑھ اُڈیسہ،لانس نائیک مہتی برل ساکن گروانہ اُڈیسہ اور سپاہی کان سنگھ ساکن سوگن گڑھ ناگور راجستھان کے طور پر ہوئی ہے ۔حملے کے فوراََ بعد فورسز کی اضافی جمعیت نے علاقے کومحاصرے میں لے کر حملہ آوروں کی دھر پکڑ کیلئے تلاشی کارروائی عمل میں لائی ۔فوج کے ترجمان کرنل راجیش کالیا نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ فوج کی ROPپارٹی شمسی پورہ علاقہ سے گذر رہی تھی جس دوران جنگجوئوں نے اُن پر گرینیڈ داغا جس کے آہنی ریزوں سے 4اہلکار زخمی ہوگئے جن میں سے ایک زخموں کی تاب نہ لاکر دم توڑ بیٹھا ۔
 

فائرنگ میں زخمی نوجوان

ایک ماہ 27روز بعد چل بسا

ارشاد احمد
 
سرینگر// بلال کالونی صورہ میں گزشتہ سال دسمبر میں مسلح افراد کے حملہ میں زخمی ہونے والا ایک مقامی نوجوان ایک ماہ اور 27روز کے بعدمیڈیکل انسٹیچوٹ صورہ میں دم توڑ بیٹھا۔پولیس نے بتایا کہ یکم دسمبر 2020 کو نامعلوم مشتبہ جنگجوئوں نے بلال کالونی صورہ میںنادیف حنیف خان ولد محمد حنیف کو ان کی رہائش گاہ کے باہر گولی مار کر زخمی کردیا تھا۔ جسے زخمی حالت میں میڈیکل انسٹیچوٹ صورہ منتقل کر دیا گیا ، جہاں وہ 20 روز تک زیر علاج رہا اور جراحی کے بعداسے اسپتال سے رخصت کیاگیا ۔تاہم ایک ہفتہ قبل اسکی حالت پھر سے خراب ہوئی اور انہیں تشویشناک حالت میں سکمز صورہ میں پھر سے داخل کردیا گیا جہاں بدھ کی صبح وہ چل بسا۔معلوم ہوا ہے کہ مذکورہ نوجوان تانبے کے برتن کا کاروبار کرتا تھا۔
 

زینہ پورہ کے2دیہات کا محاصرہ اور تلاشیاں

شاہد ٹاک
 
شوپیان // فورسز نے شوپیان میں قریب 4فٹ برف موجود ہونے کے باوجود2دیہات کا محاصرہ کیا اور گھرگھر تلاشیاں لیں۔تاہم کئی گھنٹوں تک تلاشیاں لینے کے بعد محاصرہ ختم کیا گیا۔ شوپیان ضلع کے زینہ پورہ علاقے کے دو گاؤں نادی مرگ اور ربن کا34آر آر، 178سی آر پی ایف اور پولیس کے سپیشل آپریشن گروپ نے بدھ کی صبح نو بجے محاصرے میں لیا اور دونوں دیہات کی ناکہ بندی کر کے گھر گھر تلاشی کارروائی شروع کی۔یاد رہے کہ شوپیان اور زینہ پورہ علاقے میں تقریباً 4فٹ برف جمع ہے۔ فورسز نے کئی گھنٹوں تک دونوں دیہات میں جنگجو مخالف آپریشن جاری رکھا لیکن اس دوران کوئی نا خوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا جس کے بعد محاصرے ختم کئے گئے۔
 

تازہ ترین