زچہ بچہ اسپتال اننت ناگ میں آوارہ کتوں کے کاٹنے سے 8 زخمی

تاریخ    24 جنوری 2021 (00 : 01 AM)   


عارف بلوچ
 اننت ناگ //  اننت ناگ کا زچہ بچہ اسپتال آوارہ کتوں کی آماجگاہ میں بن چکا ہے۔اسپتال کے صحن میں گذشتہ ایک ہفتے کے دوران کتوں کے کاٹنے سے 8 افراد زخمی ہوگئے ہیں۔ضلع اننت ناگ کا واحد زچہ بچہ اسپتال جو پہلے ہی غیر محفوظ قرار دیا گیا ہے، اب آوارہ کتوں کی آماجگاہ بن چکا ہے۔ ذرائع کے مطابق اسپتال کے صحن میں گذشتہ ایک ہفتے کے دوران کتوں کے حملے میں 8 افراد زخمی ہوگئے  ،جن میں 3 خواتین بھی شامل ہیں۔کتوں نے تیمارداروں کو دوران شب اس وقت اپنا نشانہ بنایا جب یہ لوگ ادویات یا دیگر ضروری سامان لانے کے لئے اسپتال سے باہر نکلے۔ اسپتال کے صحن میں ایک ڈمپنگ سائٹ بنائی گئی ہے جہاں ہر وقت آوارہ کتے منڈلاتے رہتے ہیں جس کی وجہ سے یہاں آنے والے لوگوں میں خوف و ہراس دیکھنے کو ملتا ہے۔مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ اسپتال کی عمارت پہلے ہی غیر محفوظ قرار دی گئی ہے تاہم اسپتال کو منتقل کرنے پر سبھی سیاسی و سماجی تنظیموں نے اپنے اپنے سیاسی جھنڈے گاڈ دیئے۔ پرنسپل جی ایم سی اننت ناگ ڈاکٹر شوکت جیلانی کا کہنا ہے کہ وہ اس معاملے کو دیکھیں گے اور یقین دلایا کہ اسپتال میں موجود ڈمپنگ سائٹ کو جلد ہٹایا جائے گا۔واضح رہے اسپتال پر پلوامہ، شوپیان، کولگام اور اننت ناگ اضلاع کا کافی دباؤ ہے جس کے سبب یہاں ہر روز مریضوں کا کافی رش رہتا ہے۔
 

تازہ ترین