برف باری سے سڑکوں پر پھسلن

ہر طرف گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں

تاریخ    24 جنوری 2021 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
 سرینگر//تازہ برفباری کے نتیجے میں سڑ کوں پر پھسلن کی وجہ سے سٹی سینٹر لالچوک کے علاوہ شہر کے مختلف علاقوں میں سنیچر کو بدترین ٹریفک جام رہا اور سینکڑوں گاڑیاں درماندہ ہوکر رہ گئیں۔ پھسلن پیدا ہونے کے بعد اگر چہ سڑکوں پرگاڑیوں کی آمد و رفت میں کافی کمی دیکھنے کو ملی،تاہم اس کے باوجود چھوٹی گاڑیوں کی نقل و حرکت کے نتیجے میں ٹریفک جام ہوا۔سرینگر،جموں شاہراہ پر بائی پاس سے لیکر قاضی گنڈ تک کئی مقامات پر ٹریفک کی نقل و حرکت کے نتیجے میں گاڑیوں کی رفتار تھم گئی اور مسافروں کو کافی وقت تک گاڑیوں میں ہی انتظار کرنا پڑا۔ اتھواجن میں ٹریفک جام کے نتیجے میں لوگ برستی برف باری کے دوران پیدل سفر کرتے ہوئے بھی نظر آئے۔ پائین شہر کے علاوہ سیول لائنز میں بھی اس کا اچھا خاصا اثر دیکھنے کو ملا،اور ریذیڈنسی روڑ کے علاوہ مولانا آزاد روڑ،ہری سنگھ ہائی اسٹریٹ،بٹہ مالو، ڈلگیٹ،قمرواری،شالہ ٹینگ،رام باغ،نٹی پورہ،بمنہ اور دیگر مقامات پر گاڑیاں ٹریفک جام میں پھنس گئیںاور منٹوں کا سفر گھنٹوں میںطے ہوا۔ سنیچر کی صبح سے ہی برفباری سے  ٹریفک کی روانی میں بہت زیادہ خلل پڑا اورسرکاری دفاتر میں بھی ملازمین کی حاضری کم رہی ۔ تجارتی و کاروباری ادارے اور عوامی نقل و حمل بھی متاثر رہی۔سول انتظامیہ کا کہنا ہے کہ سڑکوں سے برف ہٹانے کا کام جاری ہے اور لوگوں کو ہر ممکن راحت پہنچانے کے لئے ہر ایک ضلع میں ہیلپ لائن نمبرات چالو کئے گئے ہیں۔ جنوبی کشمیر میںبرف باری کی وجہ سے رابط سڑکیں برف سے ڈھک گئی ہیں اور بیشتر سڑک رابطے منقطع ہونے کے بعد آبادی اپنے گھروں میں محصور ہو کر رہ گئی ہے۔
 

تازہ ترین