لیفٹیٹ گورنر کا زراعت و اِمداد باہمی شعبوں میں بین ریاستی تال میل پر زور | پنجاب کے وزیراور ڈاکٹرامبیدکرچیمبرآف کامرس وفد منوج سِنہا سے ملاقی

تاریخ    5 جنوری 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
جموں//لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے زراعت اور اِمدادباہمی شعبوں کی ترقی اورفروغ کے لئے بین ریاستی تال میل پر زور دیاہے تاکہ اِن شعبوں میں تمام متعلقین کے لئے ترقی کے مواقع پید ا ہوسکے۔لیفٹیننٹ گورنر آج وزیر برائے اِمدادِ باہمی و جیلخانہ جات حکومت پنجاب سکھ جندرسنگھ رندھاوا کے ساتھ یہاں راج بھون میں تبادلہ خیال کر رہے تھے۔وزیر نے جموںوکشمیراور پنجاب کے مابین مختلف زرعی مصنوعات اور اور مارکیٹنگ کے لئے باہمی اِنتظامات کی تجویز پیش کی ۔لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ زراعت اور اس سے منسلک شعبے موجودہ حکومت کی ترجیحات میں شامل ہیں اور اس کے لئے جامع اِقدامات کئے جارہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یوٹی انتظامیہ مختلف ریاستوں کے ساتھ کام کرنے میں دلچسپی رکھتی ہے جس کے لئے زراعت ، پولٹری، ڈیری،ماہی پالن اور دیگر سرگرمیوں کے لئے کثیر السطحی معاہدے کئے جارہے ہیں ۔ انہوں نے وزیر سے کہا کہ وہ اِس ضمن میں مفصل تجویز بھیجیں ۔اُنہوں نے اُنہیں یقین دلایا کہ زراعت اور اس سے منسلک سرگرمیوں  میں اشتراک کے لئے ہرممکن کوشش کی جائے گی ۔ اُنہوں نے مزید کہا کہ جموںوکشمیر میں نئی اور سرمایہ کار دوست پالیسیوں کی وساطت سے شعبے میں ترقی کی گنجائش موجود ہے ۔لیفٹیننٹ گورنرنے جموںوکشمیر میں منافع بخش یونٹ قائم کرنے کے لئے خواہشمند سرمایہ کاروں کو یوٹی میں سرمایہ کاری کرنے کی دعوت دی۔زراعت ، باغبانی اور اِمدادِ باہمی محکمہ کے پرنسپل سیکرٹری نوین کمار چودھری اورلیفٹیننٹ گورنر کے پرنسپل سیکرٹری نتیشور کمار بھی موجود تھے۔ادھرڈاکٹر امبیڈکر چیمبر آف کامرس کا ایک وفد یہاں راج بھون میں لفٹینٹ گورنر منوج سنہا سے ملا ۔ وفد کی قیادت چیمبر کے ڈائریکٹر جنرل اندر اقبال سنگھ اتبال کر رہے تھے اور وفد کے دیگر ارکان میں بھارت بھوشن ( سابق ایم ایل اے ) ، پرکاش تنور ، سنجیو گارو ، دیو کرن سنگھ اور سچن پال شامل تھے ۔ وفد نے لفٹینٹ گورنر کو درجہ فہرست ذاتوں و قبائل ، خانہ بدوشوں اور سماج کے دیگر پسماندہ طبقوں کے فلاحی معاملات سے آگاہ کیا ۔
 

تازہ ترین