تازہ ترین

انتظامی کونسل کی 850 میگاواٹ رتل پن بجلی پروجیکٹ کو منظوری

تاریخ    28 نومبر 2020 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
جموں//جموں کشمیر انتظامی کونسل نے یہاں منعقدہ میٹنگ میں ایک اہم فیصلے کے تحت 850 رتل پن بجلی پروجیکٹ کو منظور کیا جو این ایچ پی سی اور جے کے ایس پی ڈی سی مشترکہ طور تعمیر کریں گے۔ جے کے پی ڈی سی اور این ایچ پی سی کے اشتراک سے ایک نئی مشترکہ کمپنی جموں پن بجلی پاور کارپوریشن لمٹیڈ قائم کی جا رہی ہیں،جو 53 کروڑ روپے کی مالیت کا رتل پاور پروجیکٹ تعمیر کرے گی ۔ جے کے پی ڈی سی کا کمپنی میں حصہ 776.44 کروڑ روپے مقرر کیا گیا ہے جو حکومت ہند بطور گرانٹ فراہم کرے گی ۔ آج جو فیصلے لئے گئے ان کے تحت پروجیکٹ پر کام فوری طور شروع کیا جائے گا۔ پروجیکٹ کیلئے تمام اجازت نامے حاصل کئے گئے ہیں اور یہ پروجیکٹ 36 ماہ کے اندر مکمل ہونے کی توقع ہے ۔ پروجیکٹ سے جموں کشمیر کو ترقیاتی اور مالی فوائد حاصل ہوں گے اور مقامی نوجوانوں کیلئے روز گار کے مواقعے بھی پیدا ہوں گے ۔ جموں کشمیر میں 20 ہزار میگاواٹ  پن بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت موجود ہے جس میں سے 16000 میگاواٹ کی نشاندہی کی جا چکی ہے جبکہ ایک ہزار میگاواٹ پکل ڈول پروجیکٹ اور 624 میگاواٹ کیرو پہلے ہی چناب ویلی پاور پروجیکٹ پرائیویٹ لمٹیڈ تعمیر کر رہا ہے ۔ جے کے ایس پی ڈی سی ، این ایچ پی سی اور پی ٹی سی انڈیا لمٹیڈ کا مشترکہ پروجیکٹ 540 میگاواٹ کاور پن بجلی پروجیکٹ پر عنقریب کام شروع کیا جا رہا ہے ۔ 
 

تازہ ترین