تازہ ترین

سرینگرجموںشاہراہ پر سیکورٹی میں اضافہ، گاڑیوں کی چیکنگ تیز

ٹرک ڈرائیور ہنوز روپوش ، گاڑی کا جعلی اندراج ہوا،کٹھوعہ داخلے کے 11راستے بند

تاریخ    21 نومبر 2020 (00 : 01 AM)   


سید امجد شاہ
جموں// نگروٹہ میں بن کے مقام پر مسلح جنگجوئوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین مقابلے کے ایک روز بعد جموں سرینگر اور جموں پٹھانکوٹ شاہراہ پر سیکورٹی کے سخت انتظامات کردیئے گئے ہیں۔ سیکورٹی فورسز نے کٹھوعہ، سانبہ اور جموں اضلاع سے مختلف مقامات پر گاڑیوں کی چیکنگ تیز کردی جبکہ تحقیقاتی اداروں نے گذشتہ روز سے ٹرک کے مفرور ڈرائیورکی بڑے پیمانے پر تلاش شروع کررکھی ہے۔ایس ڈی پی او نگروٹہ پروپکار سنگھ نے اس حوالے سے بتایا’’ڈرائیور ابھی بھی فرار ہے ، ہمیں پتہ چلا ہے کہ ٹرک جو جنگجوئوں کی نقل و حمل کے لئے استعمال ہواتھا، کا جعلی رجسٹریشن نمبر تھا‘‘۔پولیس ذرائع نے بتایاکہ تحقیقات آگے بڑھ رہی ہے اورسیکورٹی ایجنسیاں شاہراہ پر مختلف مقامات سے سی سی ٹی وی فوٹیج کی جانچ کر رہی ہیںجبکہ تفتیشی ایجنسیاں کشمیر میں مقیم سیکورٹی اہلکاروں کے ساتھ ہم آہنگی پر بھی کام کر رہی ہیں۔اس دوران مفرور ٹرک ڈرائیور کی تلاش کیلئے بڑے پیمانے پر کارروائی شروع کی گئی ہے ۔ پولیس نے نیم فوجی دستے کے ساتھ لکھن پور سے شروع ہونے والی جموں سرینگر اور جموں پٹھانکوٹ شاہراہ پر گاڑیوں کی چیکنگ کو مزید تیز کیاہے۔خاص طور پر کشمیر جانے والی تمام گاڑیوں اور ٹرکوں کی جانچ پڑتال کی جارہی ہے۔ لکھن پور، کٹھوعہ اور سانبہ کے دیگر حصوں میں خصوصی ناکے قائم کئے گئے ہیں۔ پولیس اور نیم فوجی دستوں اور عام شہریوں کی شمولیت کے ساتھ سرحدی علاقوں میں گشت میں بھی اضافہ کیا گیا ہے۔دریں اثنا، ضلع کٹھوعہ میں داخل ہونے والے 13 مقامات میں سے صرف 2 سڑکیں یعنی اٹل سیٹو اور لکھن پور کھولی گئی ہیں اور 11 دیگر مقامات کو بند کردیا گیا ہے۔ایک اعلیٰ عہدیدار نے بتایا’’بغیر جانچ پڑتال کے داخلے کا کوئی امکان نہیں ،ہم نے جموں پٹھانکوٹ شاہراہ پر اضافی ناکے قائم کئے ہیں اور بڑے پیمانے پر چیکنگ کا آغاز ہواہے‘‘۔قابل ذکر ہے کہ19 نومبر کی صبح سیکورٹی فورسز کے ذریعہ بن نگروٹہ میں ہونے والے ایک مقابلے میں 4 جنگجو مارے گئے جن کی تحویل سے بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود بھی برآمد ہوا۔