تازہ ترین

بندوق تھامے نوجوانوں کو واپس لینے کیلئے تیار:جنرل راجو

تاریخ    28 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
 سرینگر//فوج کے سرینگر میں قائم 15ویںکور کے کمانڈر جنرل لیفٹیننٹ جنرل بی ایس راجو نے منگل کو جنگجوئوں کی صفوں میں شامل ہوئے نئے جنگجوئوں سے مخاطب ہوکر کہا کہ بندوق کے ساتھ تصویر کھینچنے اور ویڈیو جاری کرنے سے وہ جنگجو نہیں بن جاتے،بلکہ وہ اس کے باوجودبھی واپس آکر اپنے  اہل و عیال میں شامل ہوسکتے ہیں۔15ویں کور کے کمانڈر لیفٹنٹ جنرل راجو نے انفنٹری ڈے کے موقع پر سرینگر میں 15 ویںکور میں منتخب صحافیوں کے ایک گروپ کو بتایا،’’میرے پاس نئے بھرتی ہونے والے جنگجوئوںکے لئے ایک پیغام ہے کہ ہاتھوں میں بندوق تھامے ہوئے ایک تصویر کھینچنا اور ویڈیو جاری کرنا آپ کو جنگجو نہیں بناتا، آپ پھر بھی واپس آ سکتے ہیں اور اپنے اہل خانہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔‘‘ انہوں نے کہا کہ حال ہی میں اس سمت میں پیش رفت ہوئی ہے اور ہمیں اس محاذ پر مزید امید ہے۔انہوں نے کہا کہ حال ہی میں عسکریت پسندوں کے  ہتھیار ڈالنے کے 4 معاملے سامنے آئے ہیں لیکن اس طرح کے بہت سے واقعات ہیں۔ 15ویں کور کے کمانڈر نے کہا’’ہم بندوق تھامے نوجوانوں کو واپس لینے کے لئے تیار ہیں ۔‘‘کشمیر کے نوجوانوں کے نام اپنے پیغام میں، انہوں نے کہا’’ (کشمیر میں) صورتحال میں بہتری آئی ہے  اور نوجوانوں کو اس کا فائدہ اٹھانا چاہے۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو تعلیم پر توجہ دینی چاہئے،اور جن لوگوں نے یہ کام مکمل کرلیا ہے انہیں لازمی طور پر کاروبار میں مواقع تلاش کرنے پر کام کرنا چاہئے ، دوسروں کو سرکاری ملازمت کے لئے کوشش کرنا چاہئے یا اپنا کام شروع کرنا چاہئے۔انفنٹری ڈے کے بارے میں ، جی او سی 15کور نے کہا کہ انفنٹری ایک اہم نام ہے اور انفنٹری ڈویڑن کا سپاہی دوسری ایجنسیوںکی طرح بھی ایئر فورس اور بحریہ کے ساتھ کام کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ ‘‘انفنٹری ہر جنگ میں بہت بڑا کردار ادا کررہی ہے،میں اسے ریکارڈ میں لانا چاہتا ہوں کہ ہم کسی بھی طرح کا کام  کرنے کے اہل ہیں ۔‘‘
 

تازہ ترین