تازہ ترین

عید میلاد النبیؐ کے سلسلے میں گاڑیوں کیلئے روٹ پلان مرتب

تاریخ    28 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
 سرینگر//عید میلاد النبیؐ کے موقعہ پر ٹریفک پولیس نے سرینگر میں داخل ہونے والی گاڑیوں اورزائرین کو حضرت بل لے جانے والی گاڑیوں کیلئے باضابطہ طور پر روٹ پلان مرتب کیا ہے تاکہ عقیدتمندوں کے علاوہ عام شہریوں اور مسافروں کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے اور ٹریفک جام سے بچا جاسکے۔ٹریفک پولیس کی طرف سے اس سلسلے میں جو پلان مرتب کیا گیا ہے اس کے مطابق شمالی،جنوبی اور وسطی کشمیر سے آنے والی گاڑیوں کو مختلف روٹ الاٹ کئے گئے ہیں ۔
شمالی کشمیر:
شمالی کشمیر سے درگاہ حضرتبل آنے والے عقیدتمندوں کی گاڑیوں کو شالہ ٹینگ سے پارمپورہ ،قمرواری ،سیمنٹ برج اور نور باغ کا راستہ اختیارر کرنے کی ہدایت دی گئی ہے جبکہ وہاں سے سکہ ڈافر،عیدگاہ،عالی مسجد،سازگری پورہ، حول،،علمگری بازار سے مل اسٹاپ اور مولوی اسٹاپ لال بازار سے ہوتے ہوئے بٹہ شاہ محلہ اور کنہ تار سے ہوتے ہوئے سر سید گیٹ کشمیر یونیورسٹی سے داخل ہوکر گاڑیوں کو کھڑا کرنے کی ہدایت دی گئی۔ واپسی پر ان گاڑیوں کو عشائی باغ کراسنگ سے ہوتے ہوئے رعناواری،خانیار،نوپورہ،ڈلگیٹ،مولانا آزاد روڑ سے ہوتے ہوئے بڈشاہ پل، فلائی اوور،بٹہ مالو،مومن آبادٹینگہ پورہ سے گزر کر بمنہ بائی پاس ،پارمپورہ اور شالہ ٹینگ سے آگے کا راستہ اختیار کرنے کی ہدایت دی گئی۔
جنوبی کشمیر:
جنوبی کشمیر سے آنی والی گاڑیوں کیلئے جو روٹ پلان مرتب کیا گیا ہے اس کی رو سے انہیں پانتہ چھوک،اتھوجن،بٹوارہ،سونہ وار،رام منشی باغ سے ہوتے ہوئے گپکار،گرینڈ پیلس کا راستہ اختیار کرنے اور بعد میںزیٹھ یار گھاٹ،نشاط،فور شور روڑ سے ہوتے ہوئے حبک کراسنگ پہنچ کر نسیم باغ میںیونیورسٹی پارکنگ میں گاڑیاں کھڑی کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔روٹ پلان کے مطابق زائرین سے بھری ان گاڑیوں کو واپسی پر نسیم باغ،حبک کراسنگ،فور شور روڑ،نشاط سے ہوتے ہوئے زیٹھ یار گھاٹ،گپکار روڑ،رام منشی باغ سے گزر کر سونہ وار،بٹوارہ اور پانتہ چھوک کا روٹ اختیار کرنے کی ہدایت دی گئی۔
وسطی کشمیر:
بڈگام سے اور اس کے نواحی علاقوں سے درگاہ حضرت بل جانے والی گاڑیوں کو حید پورہ سے ہوتے ہوئے ٹینگہ پورہ اور بمنہ بائی پاس سے گزر کر،بمنہ کراسنگ،قمرواری،سیمنٹ برج کا راستہ اختیار کر کے نورباغ،سکہ ڈافر،عیدگاہ،عالی مسجد،حول،علمگری بازار،مل اسٹاپ۔مولوی اسٹاپ لال بازار،بٹہ شاہ محلہ سے گزر کرکنہ تار پارکنگ میں گاڑیاں رکھنے کیلئے کہا گیا ہے۔بڈگام سے آنے والی گاڑیوں کی واپسی کیلئے جو روٹ پلان مرتب کیا گیا ہے اس میں ان گاڑیوں کے ڈرائیوروں کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ این آئی ٹی سے،عشائی باغ کراسنگ ،رعناواری ،خانیار،نو پورہ،ڈلگیٹ،گالف کراسنگ،ریڈیو کشمیر سے ہوتے ہوئے عبداللہ برج کا راستہ اختیار کر کے ہیٹ ٹرک،کانونٹ کراسنگ،پولیس تھانہ راجہ باغ،جواہرنگرچوک سے گزر کر جواہر نگر بنڈ،رام باغ،برزلہ پل،صدر سے ہوتے ہوئے حید پورہ اور آگے کا راستہ کریں۔
لال چوک:
 لالچوک سے حضرت بل جانے والی عقیدتمندوں کی گاڑیاں لال چوک،ایس آر ٹی سی کراسنگ،اخوان چوک سے گزر کر پولیس اسٹیشن خانیار،بہوری کدل،راجوری کدل،گوجوارہ چوک،حول سے ہوتے ہوئے علمگری بازار،مل اسٹاپ۔مولوی اسٹاپ لال بازار،بٹہ شاہ محلہ سے گزر کرکنہ تار اور این آئی ٹی پارکنگ میں داخل ہونے کی ہدایت دی گئی ہے۔روٹ پلان کے مطابق درگاہ حضرت بل سے واپسی پر لالچوک کا رخ کرنے والی گاڑیوں کو عشائی باغ کراسنگ سے گزر کر رعناواری،خانیار سے ہوتے ہوئے نوپورہ پل،خیام چوک،ڈلگیٹ سے مولانا آزاد رور کا راستہ اختیار کرنے کی ہدایت دی گئی۔
گاندربل:
گاندربل سے درگاہ حضرت بل کا رخ کرنے والی گاڑیوں کو ناگہ بل،زکورہ،حبک سے گزر کر اپنی گاڑیوں کو نسیم باغ پارکنگ میں کھڑی کرنے کی ہدایت دی گئی۔گاندربل کیلئے واپسی پر گاڑیوں کیلئے جو روٹ پلان مرتب کیا گیا ہے اس کے مطابق یہ گاڑیاں نسیم باغ سے ہوتے ہوئے،حبک،زکورہ اور ناگہ بل سے آگے کا راستہ اختیار کریں گی۔
پارکنگ پلان:
درگاہ حضرت بل میںگاڑیوں کی پارکنگ کیلئے ٹریفک پولیس نے جن جگہوں کا انتخاب کیا ہے ،اس کے مطابق شمالی اور وسطی کشمیر سے آنے والی گاڑیاں کشمیر یونیورسٹی میں انہیں سرسید گیٹ سے داخل ہونا ہوگا۔جنوبی کشمیر اور گاندربل سے آنے والی گاڑیوں کو نسیم باغ یونیوسٹی کیمپس میں بڈشاہ گیٹ سے داخل ہونا ہوگا۔رعناواری علاقہ سے آنے والی گاڑیوں کیلئے این آئی ٹی میں پارکنگ ہوگی ۔