تازہ ترین

’گپکارگینگ‘ باز نہ آئی

زندگی تہاڑ جیل میں گزارنی ہوگی:رینہ

تاریخ    25 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


سید امجد شاہ
جموں// بی جے پی کے جموں و کشمیر کے صدر رویندر رینہ نے متنبہ کیا ہے کہ سابق وزیر اعلیٰ اور پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی جیسے سیاستدانوں کو قومی انضمام کو چیلنج کرنے سے باز نہ آنے پر پوری زندگی جیلوں میں گزارنی ہوگی۔قومی پرچم کو اپنے ہاتھوں میں تھامتے ہوئے رویندررینہ نے کہا کہ جموں و کشمیر ملک کا اٹوٹ انگ ہے اورجموں و کشمیر میں ہندوستان کے ترنگے کے سوا کوئی دوسرا پرچم نہیں اٹھا سکتا۔ ان کاکہناتھاکہ محبوبہ مفتی جیسے کچھ رہنما جن کے دل پاکستان کے لئے دھڑکتے ہیں ، ایسے رہنماؤں کو ہندوستان چھوڑ کر پاکستان چلے جانا چاہئے۔رینہ نے کہا’’اگر کوئی قومی اتحاد اور سالمیت کو چیلنج کرتا ہے تو ایسے رہنماؤں کے لئے تہاڑ جیل کے دروازے کھول دیئے جائیں گے تاکہ وہ اپنی زندگی جیلوں میں گزار سکیں‘‘۔کشمیر نشین سیاسی جماعتوں کے گپکار الائنس کو ’گینگ‘ سے تعبیر کرتے ہوئے بی جے پی کے جموں و کشمیر کے صدر رینہ نے کہا ’’اگر کسی کو جموں و کشمیر میں رہتے ہوئے مسئلے اور پریشانی کا سامنا ہے تو محبوبہ مفتی جیسے قائدین کو پاکستان جانا چاہئے‘‘۔رینہ نے پریس کانفرنس میں صحافیوں کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے کہا’’جموں و کشمیر میں رہنے کی ضرورت نہیں ہے، جموں وکشمیر ہندوستان ہے اور یہ صدیوں تک ہندوستان ہی رہے گا،جموں و کشمیر کا انضمام مکمل ہے اور ہر سال لوگ 26اکتوبر کو انتہائی خوشی کے ساتھ مناتے ہیں، اس دن جموں و کشمیر کے ہرکونے میں ہر قوم پرست اپنے گھروں پر ترنگا لہرا رہا ہے اور موٹرسائیکل ریلیاں بھی اس موقعہ پر منعقد کی جائیں گی‘‘۔ایک سوال کے جواب میں رینہ نے کہا ’’وہ (گپکار الائنس کے سیاستدان) ملک چھوڑ سکتے ہیں لیکن وہ جموں و کشمیر میں ملک دشمن ایجنڈے کو فروغ نہیں دے سکتے ، گپکار‘گینگ’کو اس کے سنگین نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا، چاہے وہ 6 سیاسی جماعتیں یا 600 سیاسی جماعتیں اکٹھا کریں ‘‘۔انہوں نے کہا کہ ان کی سازشوں کو کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا۔رینہ کاکہناتھا’’ ہم پرامن ماحول میں خلل ڈالنے نہیں دیں گے، ہم ان تمام لوگوں کو متنبہ کرتے ہیں جو قومی سالمیت کو چیلنج کرتے ہیں کہ وہ جس ایجنڈے کی پیروی کررہے ہیں اس سے باز آ جائیں یا انہیں اپنی پوری زندگی جیلوں میں گزارنی پڑے گی‘‘۔بی جے پی کے جموں و کشمیر کے صدر نے کہا ’’جموں و کشمیر کسی کی آبائی جائیداد نہیں ہے، محبوبہ مفتی جیسے سیاسی قائدین کو بھاری قیمت چکانا پڑے گی، ہمارے پاس ملک میں وزیر اعظم نریندر مودی اور وزیر داخلہ امیت شاہ ہیں اور وہ کسی کے ذریعہ ہونے والے جرائم کو برداشت نہیں کریں گے‘‘۔
 

تازہ ترین