تازہ ترین

کاریگروں اور بافندوں کو منڈی کی سہولیات | نمائش گاہ میں 13اکتوبر سے دستکاری میلہ کااہتمام

تاریخ    12 اکتوبر 2020 (30 : 12 AM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر//وبائی مرض کرونا وائرس کی وجہ سے پریشان حال جموں و کشمیر کے کاریگروں اور بافندوںکو زیادہ سے زیادہ تعداد میں براہ راست مارکیٹنگ میں معاونت فراہم کرنے کے لئے ، محکمہ ہینڈی کرافٹس اینڈ ہینڈلوم ،کشمیر ، 13 اکتوبر سے نمائش گاہ(کشمیر ہاٹ) میں باری باری بنیاد پر دستکاری میلہ کا انعقاد کر رہی ہے۔محکمہ نے سول سوسائٹی کے ممبران ، نوجوانوں اور کامگار طبقے پر زور دیا ہے کہ وہ بڑی تعداد میں نمائش گاہ (کشمیر ہارٹ) کا دورہ کریں اور میلے کے دوران مقامی و اصلی ہینڈلوم اور دستکاری مصنوعات خریدیں تاکہ وہ اپنے رقومات کو صحیح سمت میں صرف کریں،جس کے ساتھ ہی بنکرئوں، کاریگروں اور کاروباریوں کو مدد فراہم کرنے کے عمل کو یقینی بنائیں۔ میلہ کے دوران عام لوگوں کے لئے داخلہ مفت کردیا گیا ہے۔حکومت کی جانب سے کاروباریوں اور دیگر معاشی سرگرمیوں کو مزید غیر مقفل کرنے کے اقدامات کا اعلان کرنے کے بعد یہ پہلا میلہ ہوگا۔کووِڈ- 19 وبائی بیماری کے پھیلائو کو روکنے کیلئے عائد پابندیوں کے پیش نظر رواں سال کشمیر سے دیگر ریاستوں اور بیرون ملکوں میں مشہور دستکاری اور ہینڈلوم مصنوعات کی برآمد کو شدید دھچکا لگا ہے۔ کاروباری نقصانات پر قابو پانے اور اس شعبے کی بحالی کے لئے محکمہ ہینڈی کرافٹس اور محکمہ ہینڈلوم نے ہنر مند اور مقامی افراد کو ممکنہ خریداروں کے ساتھ مربوط کرکے کاریگروں اور بافندوں تک پہنچنے کے لئے حکومت کی جانب سے شروع کی گئی’’ووکل فار لوکل‘‘(مقامی مصنوعات کو استعمال کرنے کو ترجیح)مہم کو تیز کردیا ہے۔ محکمہ نے معاشرے کے مختلف طبقات کی حوصلہ افزائی کے لئے ایک مستقل میڈیا مہم کا آغاز بھی کیا ہے تاکہ وہ کاریگروں اور بنکروںکے لئے فروخت میں اضافے اور منافع کو بہتر بنانے کے سلسلے میں حکومت کی کوششوں کی تکمیل کرسکے۔ دستکاری میلہ نمائش گاہ(کشمیر ہاٹ) میں ایک مستقل معاملہ ہوگا جس میں باری باری بنیاد پر 15 دن کے لئے کاریگروں اور بنکروں کے لئے لگ بھگ 50 اسٹالز قائم کئے جائیں گے۔ بنکروں اور دست کاروں کو مشورہ دیا گیا ہے کہ وہ پہلے آئو پہلے پائو کی بنیاد پر اسٹالوں کی بکنگ کے لئے اپنے اپنے اضلاع میں متعلقہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر سے رجوع کریں۔ وبائی بیماری کرونا وائرس کے باعث کاریگروں اور بنکروں کو کاروباری نقصانات کے پیش نظر ، محکمہ نے نمائش گاہ ( کشمیر ہاٹ) میں قائم کئے جانے والے اسٹالوں میں کرایہ  معاف کرنے کی تجویز پیش کی ہے۔جموں صوبے کے کاریگروں اور بنکروں کے علاوہ ، محکمہ نے جموں و کشمیر کے دستکاروں اور ہینڈ لوم  ڈیولپمنٹ کارپوریشن ، جے اینڈ کے ایگرو انڈسٹریز اور انڈین انسٹی ٹیوٹ آف کارپٹ ٹکنالوجی کو بھی اپنی مصنوعات کی نمائش اور فروخت کرنے کے لئے مدعو کیا ہے۔ نمائش کے دوران محکمہ کے مختلف تربیتی مراکز میں زیر تربیت دستکاروں کے تیار کردہ مصنوعات بشمول  اسکیم کے تحت تیار کردہ قالین بھی فروخت کے لئے دستیاب ہوں گے۔ دستکاری کے شعبے کی مدد کے لئے حکومت کی جانب سے اٹھائے جانے والے اقدامات کا ذکر کرتے ہوئے ، ڈائریکٹر ہینڈی کرافٹس اینڈ ہینڈلوم ، کشمیر نے عام عوام سے اپیل کی کہ وہ نمائش گاہ کا دورہ کریں اور حکومت کی ’’لوکل فار لوکل‘‘مہم کی حمایت کریں تاکہ پشمینہ اور کنی شال، ریشم کے قالین،پیپر ماشی ، تانبے کے مصنوعات ، سوزنی کڑھائی ، چین سلائی اینڈ کریویل ، آری اور اسٹپل ، زریںکے ساتھ فیرن،نمدہ کی خریداری کریں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ محکمہ مقامی کاریگروں اور بنکروں کو ٹیکنالوجی اور بازاروں کے مابین پائے جانے والے فرق کو ختم کرنے کے لئے بھرپور کوششیں کررہا ہے تاکہ کرونا وائرس وبائی مرض کے منفی اثرات کو روکنے کے لئے’’ ورچوئل‘‘ میلوں جیسے پلیٹ فارم کو بھی استعمال کرسکیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ مجازی میلوں میں دستکاری کاروبار سے جڑے افراد اور برآمد کنندگان کی شرکت کی طرف سے ملنے والا ردعمل بہت حوصلہ افزا رہا ہے کیونکہ دنیا کے تمام حصوں سے خریداروں کی بڑی تعداد کا کاروباری ردعمل موصول ہو رہا ہے۔ ڈائریکٹر نے اس اعتماد کا اظہار کیا کہ یہ شعبہ ورچوئل انداز میںمقامی مقامات سے باہر نئے بازاروں میں خریداروں تک پہنچ پائے گا۔ انہوں نے کاریگروں اور بنکروں سے بھی درخواست کی کہ وہ آگے آئیں اور کوآپریٹوز ، سیلف ہیلپ گروپس تشکیل دیں تاکہ ان کے کاروبار کو فروغ دینے کے لئے حکومت کی جانب سے اعلان کردہ مالی امداد سے استفادہ حاصل کرسکے۔
 

تازہ ترین