تازہ ترین

زیر التوا سیلز ٹیکس ایمنسٹی اسکیم | ٹریڈ الائنس کا مارچ2021تک توسیع کا مطالبہ

تاریخ    12 اکتوبر 2020 (30 : 12 AM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر//کشمیر ٹریڈ الائنس نے زیر التوا سیلز ٹیکس کی ایمنسٹی اسکیم میں مارچ2021تک توسیع کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ کے این ایس کے مطابق کشمیر ٹریڈ الائنس کے صدر اعجاز شہدار نے مارچ 2021 کے اختتام تک زیر التواء سیلز ٹیکس کے بقایا جات کے لئے ایمنسٹی اسکیم میں توسیع کا مطالبہ کیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ یہ بدقسمتی کا مقام ہے کہ اس  اسکیم کو اکتوبر 2020 کے آخر تک ہی محدود کیا گیا ہے۔ اعجاز شہدار نے کہا کہ گورنمنٹ آرڈر نمبر 39-ایف ڈی آف2018 کے تحت پہلے ہی اعلان کردہ عام معافی کا دائرہ کارکا اعلان کیا گیا ،اس میں مارچ  2021تک کی توسیع کی جانی چاہیے۔شہدار نے کہا کہ اس کے علاوہ لیفٹینٹ گورنر انتظامیہ کی جانب سے ایس ٹی کونسل میں بھی ’’ جی ایس ٹی آر‘‘3بی داخل کرنے کی مارچ 2021 تک سفارش کی جانی چاہیے ۔کشمیر ٹریڈ الائنس کے صدر کا کہنا تھا کہ زیر التواء ریٹرنس بشمول تاخیر سے داخل کرنے والے فیس کو بھی تاجروں کو واپس کیا جانا چاہیے  یا ڈیلروں کے کیش لیجروں میں جمع کی جانی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ مزید برآں وہ ڈیلر، صنعتی یونٹ ہولڈر جو بروقت ٹیکس معاوضے کے لئے دعوی نہیں کرسکتے ہیں ، انہیں مارچ 2020 کے اختتام تک تمام زیر التواء کوارٹروں کے لئے دعوے داخل کرنے کی اجازت ہونی چاہئے۔  شہدارنے لیفٹیننٹ گورنر سے مطالبہ کیا کہ وہ چھوٹے تاجروں اور دکانداروں کوراحت فراہم کریں تاکہ وہ ان مشکل اوقات میں اپنے کاروبار کو بحال کرسکیں۔