تازہ ترین

جموں کشمیر میں نئے ٹریفک قوانین کا اطلاق

لائسنس،آر سی اور انشورنس کی اصل دستاویزات ساتھ رکھنے کی ضرورت نہیں

تاریخ    2 اکتوبر 2020 (00 : 02 AM)   


مدثر یعقوب
سرینگر //جموں و کشمیر میں نئے ٹریفک قوانین لاگو ہوگئے ہیں۔نئے ٹریفک قوانین کے تحت اگر گاڑی کا مالک فون یا لیپ ٹاپ میں دستاویزات دستیاب رکھ سکتا ہے تو اسے گاڑیوں کے اصل دستاویزات مثلاًڈرائیونگ لائسنس، رجسٹریشن سرٹیفکیٹ(RC) یا انشورنس کی اصل کاپی ساتھ رکھنا لازمی نہیں ہے۔ ریجنل ٹرانسپورٹ آفیسر اکرام اللہ ٹاک نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ موٹر وہیکل ایکٹ 1989میں کی گئی ترامیم جمعرات سے لاگو ہوگئی ہیں اور بنیادی تبدیلیوں میں دستاویزات ساتھ نہ رکھنا بھی شامل ہے۔ مرکزی وزارت ٹرانسپورٹ اور ہائی ویز کے مطابق ٹریفک قوانین میں تبدیلی  کے اطلاق سے، ڈیجٹائزیشن اور ڈرائیورں کو پولیس کی جانب سے ہراساں کرنے سے بچانے میں بھی مدد ملے گی۔ وزارت ٹرانسپورٹ کے مطابق ڈرائیونگ لائسنس ضبط کرنے یا ادارے کی جانب سے لائسنس منسوخ کرنے کا کام آن لائن بنیاد پرمحکمہ ازخود کرے گا اور ویب پوٹل پر ریکارڈ کو متواتر طور پر اپلوڈ کیا جائے گا۔ وزارت نے کہا کہ ٹرانسپورٹ کا ریکارد آن لائن ستیاب ہوگا جس سے ڈرائیوروں کے رویے پر بھی نظر رکھنے میں آسانی ہوگی۔ وزارت نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ گاڑیوں میں سفر کرنے والے لوگوں کے دستاویزات کی مانگ یا دستاویزات کا معائنہ کرنے والے پولیس آفیسر یا ریاستی سرکار کے افسران کو مہر اور اپنی نشاندہی ویب پورٹل پر اپلوڈ کرنی ہوگی۔ وزات نے کہا کہ اس سے  نہ صرف غیر ضروری چیکنگ سے بچاجاسکے گا بلکہ ڈرائیوروں کو ہراساں کرنے کے واقعات میں بھی کمی آئے گی۔ وزارت نے کہا ہے کہ جب بھی گاڑیوں کا معائنہ ہوگا تو ہر انسپکشن کی تفصیلات  پورٹل پر اپڈیٹ کرنی ہوگی۔ ایک سرکاری افسر نے بتایا کہ کوئی بھی شخص سرکاری آن لائن پورٹل مثلاً Digilocker یا m-parivahanپر دستیاب رکھ سکتا ہے۔افسر نے بتایا کہ گاڑیوں میں سفر کرنے والا شخص آن لائن دستاویزات معائنہ کیلئے  پیش کرسکتا ہے۔ باغات برزلہ سے تعلق رکھنے والے ایک نوجوان عاقب بٹ نے بتایا کہ ہم دستاویزات کو آن لائن دستیاب رکھنے کی سہولیات فراہم کرنے سے خوش ہیں کیونکہ اب دستیاویزات کی کاپیاںساتھ نہیںرکھنی پڑیں گی۔

تازہ ترین