تازہ ترین

کورونا وائرس| سی آر پی ایف افسر سمیت 18فوت

مہلوکین کی تعداد 1164، متاثرین میں متواترطور پر جموں آگے، مجموعی تعداد 74ہزار کے پار

تاریخ    30 ستمبر 2020 (00 : 02 AM)   


پرویز احمد
 سرینگر //جموں و کشمیر میں کورونا وائرس سے مزید 18افراد فوت ہوگئے۔ مہلوکین کی مجموعی تعداد 1164 ہوگئی جن میں سے 331جموں جبکہ 833کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ منگل کو50سفر کرنے والوں سمیت مزید 1081افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں۔ متاثرین کی مجموعی تعداد 74ہزار کا ہندسہ پار کرکے 74095پہنچ گئی۔ ان میں سے 29703جموں جبکہ کشمیر میں یہ تعداد 45ہزار کا ہندسہ پار کرکے 45392ہوگئی ہے۔ تازہ 1081متاثرین میں سے 441کشمیر جبکہ 640جموں صو بے سے تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر کے 441متاثرین میں سے 222سرینگر، 29بڈگام، 62 بارہمولہ،24پلوامہ، 11اننت ناگ، 22بانڈی پورہ، 36کپوارہ، 24 گاندربل،7کولگام اور4شوپیان سے تعلق رکھتے ہیں۔ جموں صوبے کے 640متاثرین میں سے 313جموں، 61راجوری، 49ادھمپور، 29کٹھوعہ، 34ڈوڈہ، 44سانبہ، 21پونچھ، 28رام بن،15ریاسی اور 46کشتواڑ سے تعلق رکھتے ہیں۔ 

18اموات

 جموں و کشمیر میں منگل کو کورونا وائرس سے مزید 18افراد فوت ہوگئے جن میں سے 7کشمیر اور 11جموں صوبے سے تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر میں فوت ہونے والے 7افراد میں سے 2سرینگر، 2بارہمولہ، ایک بڈگام، ایک اننت ناگ اور ایک کپوارہ سے تعلق رکھتا ہے۔ بارہمولہ میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ نہال پورہ پٹن کی 85سالہ خاتون سکمز صورہ میں کورونا وائرس سے فوت ہوگئی‘‘۔سینئر ڈاکٹر کا مزید کہنا تھا کہ سنگھ پورہ پٹن سے تعلق رکھنے والا55سالہ شخص بھی سکمز صورہ میں کورونا وائرس سے فوت ہوگیا ہے‘‘۔بڈگام میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ چھتر گام بڈگام سے تعلق رکھنے والا 80سالہ شخص صدر اسپتال سرینگر میں فوت ہوگیا ۔کپوارہ میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ راجوار ہندوارہ سے تعلق رکھنے والا 72سالہ شخص کورونا وائرس سے فوت ہوگیا ہے۔ جموں صوبے میں کورونا وائرس سے 11افراد فوت ہوگئے ہیں جن میں سے 6جموں، 1راجوری،3ادھمپور اور ایک رام بن سے تعلق رکھتا ہے۔ گورنمنٹ میڈیکل کالج جموں میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’مشری والا کارہنے والا 57سالہ سی آر پی ایف سب انسپکٹر ،سی آر پی ایف کا 42سالہ ہیڈ کنسٹیبلاور  پلوریہ سے تعلق رکھنے والای 59سالہ خاتون کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے نمونیا سے فوت ہوگئے‘‘۔ سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ مینڈھر پونچھ سے تعلقرکھنے والی 29سالہ خاتون، اتر پردیس سے تعلق رکھنے والا اور باری برہمنہ جموں میں عارضی طور پر رہائش پزیر 45سالہ شخص اور ادھمپور کے کد علاقے سے تعلق رکھنے والا 83سالہ شخص بھی کورونا وائرس سے فوت ہوگیا ہے۔ 

 حکومتی بیان

حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے بلیٹن میں بتایا گیا ہے کہ نوول کورونا وائرس کے74,095معاملات سامنے آئے ہیں جن میں سے17,414سرگرم معاملات ہیں ۔ اَب تک55,517اَفراد صحتیاب ہوئے ہیں۔ جموں وکشمیر میں کوروناوائرس سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد1,164تک پہنچ گئی ،جن میں سے 833کا تعلق کشمیر صوبہ سے اور331کاتعلق جموں صوبہ سے ہیں۔اِس منگل کو مزید1,250شفایاب ہوئے ہیںجن میںجموں صوبے کے615اور کشمیر صوبے کے 635اَفراد شامل ہیں ، جن کو جموں و کشمیر کے مختلف ہسپتالوں سے رُخصت کیا گیا۔بلیٹن میں مزید کہا گیا ہے کہ اَب تک 16,00,606ٹیسٹوں کے نتائج دستیاب ہوئے ہیں جن میں سے  29؍ستمبر2020ء کی شام تک 15,26,511نمونوں کی رِپورٹ منفی پائی گئی ہے ۔علاوہ ازیں اَب تک5,73,200افراد کو نگرانی میں رکھا گیا ہے جن کا سفر ی پس منظر ہے اور جو مشتبہ معاملات کے رابطے میں آئے ہیں۔ اِن میں14,281اَفراد کو ہوم قرنطین میں رکھا گیا ہے جس میں سرکار کی طرف سے چلائے جارہے قرنطین مراکز بھی شامل ہیں ۔17,414  اَفراد کوآئیسولیشن میں رکھا گیا ہے جبکہ52,052اَفراد کو گھروں میں نگرانی میں رکھا گیا ہے۔اِسی طرح بلیٹن کے مطاب4,88,289اَفرادنے 28روزہ نگرانی مدت پوری کی ہے۔
 

 کورونا وائرس کا بڑھتا پھیلائو تشویشناک 

 دارالخیر کی طرف سے آ کسیجن بنک قائم 

نیوز ڈیسک
 
سرینگر//دارالخیر میرواعظ منزل نے کووِڈ -   19کی قہر انگیز عالمی وبا کے پھیلائو خاص طور پر جموںوکشمیر میں اس خطرناک وائرس کے پھیلائوپر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے لوگوں پرپھر زور دیا ہے کہ وہ حتی المقدور طبی ہدایات اور رہنماخطوط کاخصوصی طور پر خیال رکھتے ہوئے خود بھی اس مرض سے بچے اور اپنے سماج اور عوام کو بچانے میں اپنا دینی ،ملی اور انسانی و اخلاقی فریضہ انجام دیں۔ایک بیان کے مطابق دارالخیر میرواعظ منزل اپنے قیام کی مدت سے لیکر آج تک مسلسل آفات سماویہ و ارضیہ اور ناگہانی مصائب و آلام کا شکاربلا امتیاز افراد اور کنبوں کی ہر ممکن مدد کرتا آیا ہے۔ چنانچہ کورونا وائرس کی مہلک وبا کے آغاز سے ہی دارالخیر میرواعظ منزل سرگرم عمل ہے اور اس مرض کے شکار اور متاثرین کو امداد اور ریلیف پہنچانے اور انکے بچائو کیلئے اکسیجن بینک قائم کیا ہے اور مزید اکسیجن کنسنٹریٹر خریدے ہیں اور مزید خریداری کا عمل جاری ہے۔جبکہ ایک آکسی جن کنسنٹریٹرکی قمیت کم از کم 60,000 روپے آتی ہے جس کیلئے دارالخیر کوایک خطیر رقم کی ضرورت ہے۔اس مرحلے پر مالی مشکلات اور دشواریوں کے باوجود دارالخیر میرواعظ منزل تمام صاحب حیثیت اور صاحب خیر حضرات سے اپیل کرتا ہے کہ وہ اس نیک مقصد اور خدمت خلق کے خالص عمل کو انسانیت کے جذبے کے تحت بڑھاوا دینے اور قیمتی انسانی جانوںکو بچانے کیلئے آگے آئیں اور اس نیک کام میں حسب حیثیت بڑھ چڑھ کر حصہ لیکر اجر دارین حاصل کریں۔اپنی سہولت کے تحت جموںوکشمیر اور بیرون ممالک کے حضرات دارالخیر کے اکائونٹ نمبر 0086010100003534  اور IFSC No: JAKAO BULBUL جموں کشمیر بنک راجوری کدل سرینگر میں جمع کراسکتے ہیں۔