اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں کشمیر پر اردغان کا تبصرہ | دوسرے ممالک کی خودمختاری کا احترام کریں :بھارت

تاریخ    24 ستمبر 2020 (00 : 02 AM)   


یواین آئی
نئی دہلی// ہندوستان نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں کشمیر کے تعلق سے دیئے گئے ترکی کے بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اس کا بیان ناقابل قبول ہے اوراسے دوسرے ممالک کی خودمختاری کا احترام کرنا سیکھنا چاہئے۔ہندوستان نے ترکی کے صدر رجب طیب اردوگان کی طرف سے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی  ( یواین جی اے ) اجلاس کے دوران منگل کے روز کشمیر سے متعلق کئے گئے تبصرے کو یکسر مسترد کرتے ہوئے اسے دوسرے ممالک کی خودمختاری کا احترام کرنے کی نصیحت کی۔ اقوام متحدہ میں ہندوستان کے مستقل مندوب ٹی ایس تری مورتی نے کہا ،’’ ہم نے ہندوستان کے زیر انتظام علاقہ جموں و کشمیرپر ترکی کے صدر کا تبصرہ دیکھا۔ وہ ہندوستان کے اندرونی معاملات میں مداخلت کررہے ہیں اور یہ ہمارے لئے مکمل طور پر ناقابل قبول ہے‘‘۔ تری مورتی نے کہا کہ ترکی کو دوسرے ممالک کی خودمختاری کا احترام کرنا سیکھنا چاہئے اور اپنی پالیسیوں پر زیادہ توجہ دینی چاہئے۔اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اعلی سطحی اجلاس کے دوسرے روز ترک صدر نے کہا،’’ مسئلہ کشمیر ، جو جنوبی ایشیا کے استحکام اور امن کے لئے بھی اہم ہے ، اب بھی ایک سلگتا ہوا مسلہ ہے۔ اس سے پہلے درج بیان میں ، اردوگان نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کو بات چیت کے ذریعے حل کرنا  ضروری ہے‘‘۔گذشتہ ہفتے بھی ہندوستان نے داخلی معاملات پر تبصرہ کرنے کے لئے انسانی حقوق کونسل کے 46 ویں اجلاس میں پاکستان ، ترکی اور اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) کی کھینچائی کی تھی۔
 

تازہ ترین